10:48 am
وزیراعظم کے دورے کے بعد پاک امریکہ تعلقات میں بہتری آنے لگی

وزیراعظم کے دورے کے بعد پاک امریکہ تعلقات میں بہتری آنے لگی

10:48 am

واشنگٹن (نیوز ڈیسک) پاک امریکا سفارتی تعلقات میں بہتری آنے لگی ہے۔ امریکا نے پاکستانی سفارتکاروں پر عائد پابندی اٹھا لی۔اس حوالے سے میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ امریکا نے پاکستانی سفارتکاروں کی نقل و حرکت پر عائد پاپندیاں ختم کر دی ہیں۔دفتر خارجہ اور واشنگٹن میں پاکستانی سفارتکاروں کو فیصلے سے باضابطہ طور پر آگاہ بھی رک دیا گیا ہے۔امریکا نے اس فیصلے سے پاکستان کو بھی آگاہ کر دیا ہے۔
واضح رہےکہ پاکستان کی جانب سے غیر ملکی شہریوں اور سفارتکاروں پر فاٹا، کراچی اور بلوچستانکے کچھ علاقوں کا سفر اختیار کرنے پر دہشت گردی کے خطرے کے پیش نظر پابندی عائد کی گئی تھی۔اس ضمن میں پاکستان میں موجود امریکی مشن تک رسائی حاصل کرنے والے افراد کو بھی کڑی حفاظتی نگرانی اور شناخت کے عمل سے گزرنا پڑ رہا تھا ،ْ پاکستان کا کہنا ہے کہ ان اقدامات کا مقصد صرف غیر ملکی مشن اور ان کے ملازمین کی حفاظت کو یقینی بنانا ہے۔دوسری جانب امریکا کی جانب سے پاکستان میں موجود سفارتکاروں اور امریکی مشن کے گھر اور دفاتر میں بلائے گئے مہمانوں پر بھی اسی قسم کی حفاظتی پابندیوں کا اطلاق کرنے کے سبب تشویش کا اظہار کیا گیا تھا۔ :امریکی وزارت خارجہ کے ایک سینیئر عہدیدار نے تصدیق کی تھی کہ امریکہ میں یکم مئی سے پاکستانی سفارتکاروں کی نقل وحرکت محدود کردی جائے گی اور وہ اپنے تعینات کردہ مقام سے 40 کلو میٹر کی حدود میں رہیں گے۔ایک انٹرویومیں امریکہ کے معاون نائب وزیرِ خارجہ برائے سیاسی امور تھامس شینن نے کہا تھا کہ امریکہ نے یہ پابندی پاکستان کی جانب سے امریکی سفارت کاروں کی بلا اجازت نقل و حرکت پر عائد پابندی کے جواب میں لگائی ہے۔انہوں نے کہا کہ سفارت کاری میں اس طرح کے اقدامات معمول کی بات ہیں۔انہوں نے بتایا کہ پاکستان میں تعینات امریکی سفارت کاروں کو اپنے مقام سے دور سفر کرنے سے قبل پاکستان کی حکومت کو مطلع کرنا پڑتا ہے جس کے جواب میں امریکہ نے بھی اپنے ہاں تعینات پاکستانی سفارت کاروں کا اس کا پابند کیا ہے کہ وہ بغیر بتائے سفر نہ کریں۔

تازہ ترین خبریں