01:32 pm
ایٹمی حملے کے جواب میں پاکستان کتنی دیرمیں بھارت کے کن کن شہروں کوتباہ کرسکتاہے

ایٹمی حملے کے جواب میں پاکستان کتنی دیرمیں بھارت کے کن کن شہروں کوتباہ کرسکتاہے

01:32 pm

اسلام آباد(ویب ڈیسک )ڈی جی آئی ایس پی آرمیجرجنرل آصف غفورنے وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کے ہمراہ کشمیرکے تازہ صورت حال کے حوالے سے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ کہ پاکستانی فوج اس وقت اپنی مغربی سرحد پر امن کی تکمیل کے لیے پرعزم ہے اور وہاں ہماری توجہ مرکوز ہے، آپ کو اعتماد ہونا چاہیے کہ ہمارا ہمیشہ خطرہ مشرقی سرحد سے ہوتا ہے اور یہیں دیکھا ہے اور اگر یہاں کوئی مرحلہ آیا تو ہم یہاں بھی موجود ہوں گے اور چپے چپے کی حفاظت کریں گے۔جب ان سے سوال کیا گیا
کہ پاکستان کتنی دیر میں بھارت کے کتنے شہر ایٹمی حملے کے جواب میں تباہ کر سکتا ہے تو اس پر پاک فوج کے ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ معاملہ سنجیدہ ترین نوعیت کا ہے، اس پر بھارت نے جو بات کی ہے وہ ان کا اپنا موقف ہے، لیکن ایسے موضوع پر بات کرنا قبل از وقت ہوگا۔اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا کہ قومی کو اپنی مسلح افواج کی صلاحیتوں پر بھروسہ ہونا چاہیے۔مشرقی سرحد سے نمٹنے کے لیے مسلح افواج کے پاس صلاحیت موجود ہے جس کا نمونہ قوم نے 27 فروری کو دیکھا، تاہم اگر وہ ہمیں پھر بھی آزمانا چاہتے ہیں تو انہیں خوش آمدید کہتے ہیں۔میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر پاکستانیوں نے بھارتی پراپیگنڈے کو آؤٹ پلے کیا جس پر میں پاکستانی سوشل میڈیا صارفین کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔

تازہ ترین خبریں