06:50 am
ن لیگ کا آئی جی پنجاب سے مستعفی ہونے کا مطالبہ

ن لیگ کا آئی جی پنجاب سے مستعفی ہونے کا مطالبہ

06:50 am

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک) مسلم لیگ (ن)کی رہنما عظمیٰ بخاری نے آئی جی پنجاب سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کردیا۔ انہوں نے کہا آئی جی پنجاب پولیس جیسا محکمہ چلانے کے مزید متحمل نہیں رہے، آئی جی پنجاب پاکستان کے سب سے بڑے صوبے میں امن و امان قائم رکھنے میں ناکام ہو گئے۔ آئی جی پنجاب کو اخلاقی طور پر خود ہی مستعفی ہو جانا چاہیے۔عظمیٰ بخاری کا کہنا تھا کہ پنجاب پولیس بے گناہ شہریوں کے لئے جلاد کا روپ دھار چکی، ایک ہفتے کے دوران پنجاب میں 10سے زائد پولیس گردی کے واقعات سامنے آچکے، دو دن پہلے بابا فرید کے مزار پر پولیس نے زائرین پر لاٹھی چارج کیا،
زائرین پر لاٹھی چارج وی آئی پی شخصیت کو بہشتی دروازے سے داخل کرنے پر کیا گیا، گزشتہ روز بھی نشے میں دھت ایس ایچ او نے بزرگ شہری کو تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ن لیگ پنجاب پولیس کے نازی ازم کی شدید مذمت کرتی ہے۔ پاکستان کے ہٹلر وزیر اعظم نے پنجاب پولیس کو بھی شہریوں کے لئے نازی فورس بنادیا۔ادھر مسلم لیگ(ن)لاہور کے صدر و رکن قوم اسمبلی محمد پرویز ملک اور جنرل سیکرٹری ورکن پنجاب اسمبلی خواجہ عمران نذیر وایڈیشنل سیکرٹری اطلاعات عامرخان نے کہا ہے کہ حکمران ایسی اوچھی حرکتوں سے اپنی نالائقی، ووٹوں کی چوری اور نااہلی نہیں چھپا سکتے اور نہ ہی میاں نواز شریف کی طرح11ہزار میگاواٹ بجلی پیدا کرسکتے ہیں۔ان کہا کہنا تھا کہ 13ماہ کے اندر آپ کی حکومت نے کشمیریوں کا سودا کیا، عوام پر مہنگائی کے پہاڑ توڑ دئیے ،غریب کے لئے ایک وقت کی روٹی بھی مشکل ہو گئی۔ان خیالات کا اظہار گزشتہ روز انہوں نے لاہورمیں مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

تازہ ترین خبریں