05:09 pm
پاکستان نے مستونگ دہشتگرد حملے میں ملوث بھارتی جاسوسوں کا سراغ لگالیا، دہشتگرد کاروائی کے بعد کس ملک فرار ہوگئے

پاکستان نے مستونگ دہشتگرد حملے میں ملوث بھارتی جاسوسوں کا سراغ لگالیا، دہشتگرد کاروائی کے بعد کس ملک فرار ہوگئے

05:09 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان نے دہشتگردی میں ملوث بھارت کے مزید دو جاسوسوں کا سُراغ لگا لیا۔ ذرائع وزارت داخلہ کے مطابق بھارتی جاسوس دہشتگردی کی واردات کے بعد افغانستان فرار ہوگئے تھے۔ پاکستان نے بھارتی جاسوسوں کی شناخت کے لیے افغانستان اور ایران کو خطوط لکھ دئے۔ ذرائع وزارت داخلہ نے بتایا کہ بھارتی جاسوس 13 جولائی کو مستونگ میں دہشتگردی کے حملے میں ملوث ہیں۔سوامی آسیم آننداورگو بند پارٹ ایران سے بلوچستان آئے، مستونگ میں دہشتگردی کروائی۔ یاد رہے کہ اس سے قبل بھارت کا ایک جاسوس پاکستان کی حراست میں ہے۔ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو 3 مارچ 2016ء کو بلوچستان سے گرفتار کیا گیا۔
کلبھوشن یادیو تسلیم کر چکا ہے کہ وہ بھارتی خفیہ ایجنسی ''را'' کا ایجنٹ ہے جسے پاکستان میں دہشت گردی اور تخریب کاری کے لئے بھیجا گیا تھا ۔جس کے بعد اس کے خلاف باضابطہ مقدمہ چلایا گیا۔ پاک فوج کے فیلڈ جنرل کورٹ مارشل کے ذریعے کلبھوشن یادیو کا ٹرائل ہوا اور 10 اپریل 2017ء کو جُرم ثابت ہونے پر بھارتی جاسوس کو سزائے موت سنائی گئی۔ 25 دسمبر 2017ء کو پاکستان نے انسانی ہمدردی کی بنیاد پر کلبھوشن یادیو سے اس کی والدہ اور اہلیہ کی ملاقات بھی کروائی۔ کلبھوشن کے بیانات کی بارہا تردید کرنے کے بعد 8 مئی 2017ء کو بھارت نے عالمی عدالت انصاف سے رجوع کرکے کلبھوشن یادیو کی سزا پر عمل درآمد روک کر اس کی رہائی کامطالبہ کیا۔جبکہ سزائے موت کے خلاف کلبھوشن یادیو نے رحم کی اپیل کی بھی تھی۔ کلبھوشن یادیو کا حال دیکھ کر بھارت کے کئی جاسوسوں نے بغاوت بھی شروع کر دی تھی۔ دنیا کے کئی ممالک میں مذموم مقاصد کے لیے تعینات بھارتی خفیہ ایجنسی ''را '' کے جاسوس خوف اور مایوسی کا شکار ہو کر اچانک غائب ہونا شروع ہوگئے تھے۔

تازہ ترین خبریں