06:28 pm
لیکن سکولوں میں کتنے ہزار آرہے ہیں، ہولناک رپورٹ

لیکن سکولوں میں کتنے ہزار آرہے ہیں، ہولناک رپورٹ

06:28 pm

کراچی(آن لائن) احتساب عدالت نے محکمہ تعلیم سندھ میں کروڑوں روپے کرپشن کا جرم ثابت ہونے پر سابق ڈائریکٹر اسکولز عبدالوہاب عباسی کو سات سال قید اور ایک کروڑ روپے جرمانے کی سزا سنادی اور ضمانت منسوخ کرکے فوری گرفتاری کا حکم بھی دے دیا۔ کراچی کی احتساب عدالت میں محکمہ تعلیم میں کروڑوں روپیکرپشن کیس کی سماعت ہوئی، سماعت میں کروڑوں روپے کرپشن کا جرم ثابت ہونے پر سابق ڈائریکٹر اسکولز عبدالوہاب عباسی کو سات سال قید کی سزا سنادی گئی۔حکم نامے کے مطابق مجرم کو ایک کروڑ روپے جرمانہ بھی بھرنا ہوگا۔احتساب عدالت نے عبدالوہاب عباسی کی ضمانت منسوخ کر کے ان کی فوری گرفتاری کا بھی حکم دیا،
جس پرنیب حکام ایکشن میں آگئے۔نیب ریفرنس میں کہا گیا تھا کہ عبدالوہاب عباسی نے محکمہ تعلیم میں غیر قانونی بھرتیاں کیں، ملزم نے قومی خزانے کو بھاری نقصان پہنچایا۔یاد رہے وزیر تعلیم سندھ سردار شاہ نے محکمہ تعلیم میں سیاسی مداخلت کا اعتراف کرتے ہوئے کہا تھا کہ محکمہ تعلیم کے گریڈ 14 کے اساتذہ کے بین الاضلاعی تبادلے پر پابندی ہے، حیدرآباد میں ہزاروں اساتذہ سرپلس ہیں، دیہات کے اسکولز میں کوئی ٹیچر پڑھانے کو تیار نہیں ہے۔اس سے قبل وزیر تعلیم سندھ نے انکشاف کیا تھا کہ صوبے میں ایک لاکھ اساتذہ ایسے ہیں جو پڑھانے کے لیے اسکول جاتے ہی نہیں ہیں ، سندھ میں اسکولوں میں صرف 34 ہزار اساتذہ پڑھاتے ہیں، جب کہ تعداد ایک لاکھ 34 ہزار ہے۔

تازہ ترین خبریں