08:36 am
سفاک ملزم نے 3سالہ بچے کو قتل کر کے پھینک دیا اور جگہ بھول گیا

سفاک ملزم نے 3سالہ بچے کو قتل کر کے پھینک دیا اور جگہ بھول گیا

08:36 am

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) جسے الله رکھے اسے کون چکھے سفاک ملزم نے اپنی طرف سے 3سالہ بچے کو قتل کر کے کماد کے کھیتوں میں پھینک دیا اور جب پکڑا گیا تو بچے کو پھینکنے والی جگہ ہی بھول گیا مگر سلام ہے پنجاب پولیس کے افسران اور جوانوں کو جنہوں مسلسل چھ گھنٹے رات کی تاریکی میں بنیادی وسائل موجود نہ ھونے کے باوجود بغیر رکے اور تھکے کھیتوں میں سرچ آپریشن جاری رکھا اور بچے کو شدید زخمی حالت میں ڈھونڈ لیا جوکہ بظاہر نامکن نظر آتا ہے مگر پنجاب پولیس نے ممکن بنا دیا شاباش پنجاب پولیس آپ نے یورپی اور مغربی ممالک کی پولیس کی مثالیں دینے والوں کو بہترین عملی جواب دیا ہے
ٹوبہ ٹیک سنگھ۔ موزخہ 6/10/19 کو رات 8 بجے تھانہ سٹی ٹوبہ ٹیک سنگھ کے علاقہ بخشی پارک سے ایک 3سالہ بچہ محمد حسن اغوا ھو گیا ہے وقوعہ کی اطلاع پر SHOتھانہ سٹی ٹوبہ انسپکٹر غلام شبیر اور DSP/SDPO صدر سرکل ٹوبہ نعیم عزیز سندھو فوری طور پر موقعہ پر پہنچے اور بچے کی تلاش شروع کی DPO ٹوبہ وقار قریشی جوکہ اس وقت پیر محل میں تھے وقوعہ کی اطلاع پا کر فوراً موقعہ پر پہنچے اور بچے کے اغوا کا فوری طور پر مقدمہ نمبر 691/19 درج کر لیا DPOٹوبہ کی نگرانی میں DSP/SDPO صدر سرکل ٹوبہ نعیم عزیز سندھو، SHO سٹی ٹوبہ انسپکٹر غلام شبیر، SHO صدر ٹوبہ SI غلام عباس، SHO تھانہ رجانہ انسپکٹر ممتاز پر مشتمل ایک ٹیم تشکیل دی چونکہ ابتدائی طو پر پولیس کے لیے یہ بلکل اندھا کیس تھا لیکن پولیس نے اپنے ذرائع اور انٹیلی جینس کی اطلاعات اور کچھ مبہم شواہد کی بنیاد پر ایک مشکوک لڑکے حماد صدیق قوم موچی جوکہ اغوا ھونے والے کی گلی میں ہی رہتا تھا حراست میں لیا تو اس نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ وہ بچے کی پھوپھی سے محبت کرتا ہے اور اس سے شادی کرنا چاہتا ہے لیکن لڑکی کے گھر والے شادی کے لیے نہیں مان رہے تھے اس لیے میں نے لڑکی کے گھر والوں کو سبق سکھانے کی خاطر بچے کو اغوا کر کے اسکا گلا گھونٹ کر مار دیا ہے اور بچےبکو شہر سے دور چار کلو میٹر کے فاصلے کماد کے کھیتوں میں پھینک دیا ہے اور میں اب صحیح طور پر اس جگہ کی نشاندہی نہیں کر سکتا اس پر ٹوبہ پولیس نے کھیتوں میں مسلسل چھ گھنٹے تک جاری رہنے والا انتھک سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ چھ گھنٹے کی جدوجہد کے بعد شہر سے 5/6 کلو میٹر دور چک نمبر 323ج ب قیام پور کے قریب کھیتوں سے بچے کو شدید زخمی حالت میں برامد کر لیا جس کی کوئی کوئی سانس چل رہی تھی ایک بازو بھی اس سفاک درندے کے تشدد سے ٹوٹا ہوا تھا پولیس نے بچے کو فوری طور پر DHO ہستال ایمرجنسی وارڈ میں منتقل کر دیا۔چونکہ معصوم بچے کا اغوا ایک سنگین وقوعہ تھا جس کی وجہ سے شہر بھر میں خوف و ہراس تھا ملزم کی فوری گرفتاری اور بچے کی برآمدگی کے لیے بہترین سرچ آپریشن کرنے پر شہریوں نے DPO ٹوبہ اور ان کی ٹیم کو خراج تحسین پیش کیا

تازہ ترین خبریں