04:50 pm
ملکی سیاست میں ڈرامائی موڑ ،مولاناکی چوہدری شجاعت سے ملاقات ،کیاپیغام پہنچادیا

ملکی سیاست میں ڈرامائی موڑ ،مولاناکی چوہدری شجاعت سے ملاقات ،کیاپیغام پہنچادیا

04:50 pm

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستان مسلم لیگ ق کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین کچھ دنوں سے علیل ہیں اورجہاں مختلف سیاسی رہنما ان کی عیادت کررہے ہیں وہیں مولانافضل الرحمٰن نے بھی ان سے ملاقات کی اورا س موقع پرچوہدری شجاعت نے جمعیت علمائے اسلام ف کوسیاست میں درواز ے رکھنے کامشورہ دیاہے اورکہاکہ سیاست میں درواز ے کبھی بندنہیں کیےجاتے اس موقع پرمولانا نے کہاکہ
ملک کوآ پ کی سیاسی بصیرت کی ضرورت ہے ،ملاقات میں اسپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی بھی موجود تھے۔ بتایا گیا ہے کہ مولانا فضل الرحمان کی چودھری شجاعت حسین اور اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الٰہی سے 40 منٹ تک ملاقات جاری رہی۔ملاقات میں سیاسی صورتحال اور آزادی مارچ سے متعلق تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس موقع پر سربراہ جے یوآئی ف مولانا فضل الرحمان نے آزادی مارچ کے معاملے پر کھل کربات کی۔مولانا فضل الرحمان نے چودھری شجاعت سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملک کو آپ کی سیاسی بصیرت کی ضرورت ہے۔ ملاقات میں چودھری برادران نے آزادی مارچ سے متعلق اپنا مئوقف حکومت کے خدشات بھی مولانا فضل الرحمان کو کھل کربیان کیے۔چودھری شجاعت حسین نے کہا کہ سیاست میں مذاکرات کے دروازے کھلے رکھنے چاہئیں۔ دوسری جانب آج مسلم لیگ ن نے بھی باضابطہ آزادی مارچ میں شرکت کا اعلان کردیا ہے۔صدر ن لیگ شہبازشریف سے آج اُن کی رہائشگاہ پر جے یوآئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے ملاقات کی، جس میں سیاسی صورتحال، ملکی مسائل اور آزادی مارچ سے متعلق لائحہ عمل پر مشاورت کی گئی۔ ملاقات کے بعد شہبازشریف نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ 31 اکتوبر کو آزادی مارچ کیلئے جلسہ کرنے کا اعلان کردیا، جلسے میں اپنے اگلے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے، پارٹی قائد نوازشریف کی ہدایت پر ن لیگ آزادی مارچ میں بھرپور شرکت کرے گی، جلسے میں پاکستان زندہ باد کہیں گے اور کشمیریوں کے حقوق کی بات کریں گے۔