07:30 pm
پیر کو لاہور ہائی کورٹ   مریم نواز کی درخواست ضمانت پر سماعت کرے گی

پیر کو لاہور ہائی کورٹ مریم نواز کی درخواست ضمانت پر سماعت کرے گی

07:30 pm

لاہور(آن لائن)پاکستان مسلم لیگ (ن)کے صدر شہباز شریف نے لاہور ہائیکورٹ کی جانب سے ان کے بھائی نواز شریف کی طبی بنیادوں پر ضمانت منظور ہونے پر کہا ہے کہ یہ پوری قوم کے لیے خوشی کی ایک خبر ہے۔لاہور ہائیکورٹ سے نواز شریف کی ضمانت منظور ہونے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شہباز شریف کا کہنا تھا کہ نواز شریف اس وقت بڑی شدید قسم کی بیماری میں مبتلا ہیں،
ڈاکٹرز کی ٹیم پورے اخلاص سے نواز شریف کا علاج کر رہی ہے۔اس موقع پر انہوں نے عدالت عالیہ، وکلا، کارکنان اور قوم کا شکریہ بھی ادا کیا۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز کی جانب سے نواز شریف کو ڈینگی ہونے کے امکان کو مسترد کردیا گیا اور ساتھ ہی یہ بھی بتایا گیا کہ نواز شریف جو دل کی ادویات لیتے ہیں اس کا بھی اس سے کوئی تعلق نہیں۔شہباز شریف کا کہنا تھا کہ میری پوری قوم سے درخواست ہے کہ وہ نواز شریف کی صحت کے لیے دعا کریں۔مسلم لیگ (ن)کے صدر کا کہنا تھا کہ پیر کو لاہور ہائی کورٹ نواز شریف کی صاحبزدای مریم نواز کی درخواست ضمانت پر سماعت کرے گی، لہذا میری قوم سے درخواست ہے کہ وہ ان کے لیے بھی دعا کریں۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی زوجہ اس دنیا سے چلی گئیں، اب ان کی بیٹی ہے جنہوں نے بیمار والد کی تیمار داری کرنی ہے اور ایک بیٹی کی طرح ان کا ساتھ دینا ہے۔خیال رہے کہ لاہور ہائیکورٹ نے چوہدری شوگر ملز کیس میں سابق وزیراعظم اور پاکستان مسلم لیگ (ن)کے تاحیات قائد نواز شریف کی طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت منظور کی تھی۔عدالت عالیہ کے جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے مسلم لیگ(ن)کے صدر شہباز شریف کی جانب سے سابق وزیراعظم نواز شریف کی چوہدری شوگر ملز کیس میں قومی احتساب بیورو (نیب)کی حراست سے طبی بنیادوں پر رہائی کے لیے دائر درخواست پر فیصلہ سنایا تھا۔عدالت نے مختصر فیصلے میں کہا تھا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف اس کیس میں ایک کروڑ روپے کے 2 ضمانتی مچلکے جمع کروائیں۔قبل ازیں لاہور ہائیکورٹ میں شہباز شریف نے درخواست دائر کی تھی، جس میں استدعا کی گئی تھی کہ نواز شریف کی طبیعت تشویشناک حد تک خراب ہے لہذا ان کو رہائی دی جائے تاکہ ان کا مکمل علاج ہوسکے۔یاد رہے کہ 21 اکتوبر کو نواز شریف کی صحت اچانک خراب ہونے کی اطلاعات سامنے آئی تھیں جس کے بعد انہیں لاہور کے سروسز ہسپتال منتقل کردیا گیا تھا۔مسلم لیگ (ن)کے قائد کے پلیٹلیٹس خطرناک حد تک کم ہو گئے تھے جس کے بعد انہیں ہنگامی بنیادوں پر طبی امداد فراہم کی گئی تھیں۔سابق وزیر اعظم کے چیک اپ کے لیے ہسپتال میں 6 رکنی میڈیکل بورڈ تشکیل دیا گیا تھا جس کی سربراہی ڈاکٹر محمود ایاز کر رہے ہیں جبکہ اس بورڈ میں سینئر میڈیکل اسپیشلسٹ گیسٹروم انٹرولوجسٹ، انیستھیزیا اور فزیشن بھی شامل ہیں۔بعد ازاں اس میڈیکل بورڈ میں نواز شریف کے ذاتی معالج سمیت مزید کچھ ڈاکٹرز کو بھی شامل کرلیا گیا تھا۔

تازہ ترین خبریں

پی ڈی ایم کا اجلاس آج اسلام آباد میں ہوگا،آصف زرداری کی شرکت متوقع

پی ڈی ایم کا اجلاس آج اسلام آباد میں ہوگا،آصف زرداری کی شرکت متوقع

وفاقی وزیر داخلہ نے پولیس اہلکاروں پر فائرنگ کا نوٹس لے لیا

وفاقی وزیر داخلہ نے پولیس اہلکاروں پر فائرنگ کا نوٹس لے لیا

خواتین کو مساوی حقوق دینا بے نظیر بھٹو کا خواب تھا،بلاول بھٹو زرداری

خواتین کو مساوی حقوق دینا بے نظیر بھٹو کا خواب تھا،بلاول بھٹو زرداری

’’وجود زن سے ہے تصویر کائنات میں رنگ‘‘

’’وجود زن سے ہے تصویر کائنات میں رنگ‘‘

پاکستان کی تعمیر و ترقی میں خواتین نے روشن کردار ادا کیا،شبلی فراز

پاکستان کی تعمیر و ترقی میں خواتین نے روشن کردار ادا کیا،شبلی فراز

خواتین انتخابی عمل میں شریک ہو کر جمہوری عمل کو آگے بڑھاتی ہیں: چیف الیکشن کمشنر

خواتین انتخابی عمل میں شریک ہو کر جمہوری عمل کو آگے بڑھاتی ہیں: چیف الیکشن کمشنر

سی ٹی ڈی نے تخریب کاری کی منصوبہ بندی ناکام بنادی، 5 دہشت گرد ہلاک

سی ٹی ڈی نے تخریب کاری کی منصوبہ بندی ناکام بنادی، 5 دہشت گرد ہلاک

کورونا نے پھرسر اٹھا لیا: تعلیمی ادارے بند ہونے لگے

کورونا نے پھرسر اٹھا لیا: تعلیمی ادارے بند ہونے لگے

عثمان بزدار کا ملتان و تونسہ کا ہنگامی دورہ، ناقص کارکردگی پر متعدد افسران معطل کردیئے

عثمان بزدار کا ملتان و تونسہ کا ہنگامی دورہ، ناقص کارکردگی پر متعدد افسران معطل کردیئے

کشمیر میں عورت ہونا سب سے بڑا جہاد ہے، مشال ملک

کشمیر میں عورت ہونا سب سے بڑا جہاد ہے، مشال ملک

پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج خواتین کا عالمی دن

پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج خواتین کا عالمی دن

آرمی چیف کا عالمی دن کے موقع پرخواتین کو خراج تحسین

آرمی چیف کا عالمی دن کے موقع پرخواتین کو خراج تحسین

 پی ٹی آئی کے دور ارکان اسمبلی عمران خان کو ووٹ نہیں دینا چاہتے تھے،مریم نواز

پی ٹی آئی کے دور ارکان اسمبلی عمران خان کو ووٹ نہیں دینا چاہتے تھے،مریم نواز

مسلم لیگ (ن) کی قیادت پارٹی رہنمائوں سے بدسلوکی کے واقعے پر غصے میں ہے، مریم نواز

مسلم لیگ (ن) کی قیادت پارٹی رہنمائوں سے بدسلوکی کے واقعے پر غصے میں ہے، مریم نواز