03:34 pm
چاروں صوبوں میں جہاں جہاں لوگ بیٹھے ہیں وہ راستے کھول دیں اوراب۔۔۔۔مولانافضل الرحمٰن نے حکومت کوبڑاجھٹکادیدیا

چاروں صوبوں میں جہاں جہاں لوگ بیٹھے ہیں وہ راستے کھول دیں اوراب۔۔۔۔مولانافضل الرحمٰن نے حکومت کوبڑاجھٹکادیدیا

03:34 pm

نوشہرہ (ویب ڈیسک)جے یوآئی کے سربراہ مولانافضل الرحمٰن نے کہاہے کہ بڑی شاہرائوں کوبندکردیاگیاہے ،کارکن رات کودھرنانہ دیں مجھے پتاہے کہ سڑکیں بندہونےسے عوام کی مشکلات میں اضافہ ہوتاہے ،نوشہرہ میں دھرناسے خطاب کرتے ہوئے مولانانےکہاکہ ملک کی اہم شاہرائوں کوبندکردیاگیاہے ہم نے یوم سیاہ مناکرکشمیریوں سے اظہاریکجہتی کیاہے ،حکومتی دیوارگرچکی ہے اوراب آخری جھٹکادیناباقی ہے ،
انہوں نے کہاہے کوئٹہ اورچمن کے راستے بندہیں ،اسلام آبادکوآنیوالےراستے بھی بندہیں ۔شاہراہ قراقرم اور شاہراہ سوات بند ہے ، ہم پور ا پاکستان بند کرسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم پر امن طریقے سے تبدیلی چاہتے ہیں اور ناجائز حکومت کوچلتا کرناچاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب بھی راستے میں بڑا پتھر پڑا ہوا ہوتو لوگوں کو مشقت اٹھانا پڑتی ہے اور اس وقت بڑا پتھر حکومت ہے، ناجائز حکومت کوہم نے ہٹاناہے ، ہم ملک کو لیبیا، شام یا افغانستان نہیں بناناچاہتے۔مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ حکومت کے درخت کی جڑیں کاٹ دی گئی ہیں، گرتی ہوئی دیوار کوایک دھکا اور دینا ہے ۔ انہوں نے کا رکنوں کومخاطب کرتے ہوئے کہا کہ 24گھنٹے میں آپ کی دعوت پر پورا پاکستان بند ہوگیا ہے ، دھرنا کے شرکاءسے گزارش ہے کہ دھرنادن میں جاری رکھیں ، رات میں دھرناجاری نہ رکھیں جب سڑکیں بند ہوں تو عوام کی مشکلات بڑھ جاتی ہیں۔چاروں صوبوں میں جہاں جہاں لوگ بیٹھے ہیں راستے کھول دیں ، صبح پھر بیٹھ جائیں۔

تازہ ترین خبریں