02:53 pm
تقریر اور ٹویٹ سے پہلےعمران خان  کا دماغی ٹیسٹ لازمی قراردیا جائے

تقریر اور ٹویٹ سے پہلےعمران خان کا دماغی ٹیسٹ لازمی قراردیا جائے

02:53 pm

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کاکہناہے کہ کسی بھی ٹوئٹ اورتقریرسے پہلے عمران خان کادماغی معائنہ لازمی قراردیاجائے۔وزیراعظم عمران خان کے بیان پرردعمل کااظہارکرتے ہوئے مسلم لیگ ن کی
ترجمان مریم اورنگزیب کاکہناتھاکہ کسی بھی ٹوئٹ اورتقریرسے پہلے عمران خان کادماغی معائنہ لازمی قراردیاجائے ،جھوٹے ٹوئٹس اورخطاب ،22کروڑ عوام کے ملک کے ساتھ اس سے سنگین مذاق نہیں ہوسکتا،حکومت کی بے عملی اورنالائقی کی وجہ سے ملک میں سماجی مسائل میں اضافہ ہورہاہے اورغربت مہنگائی اورلاقانونیت سے سماجی سطح پرملک مفلوج ہورہاہے،ترجمان ن لیگ نے کہاکہ جھوٹے معاشی اعشاریئےاوراعدادوشمارپیش کرکے عمران خان عوام کواپنی طرح پاگل سمجھتے ہیں ،اصل معاشی اعشاریئے عوام کی دہائیاں ،چیخیں اورجھولیاں اٹھااٹھاکردی جانے والی بددعائیں ہیں ،ملک مسائلستا بن گیالیکن نالائق وزیراعظم اورکرائے کے ترجمانوں کاواحدمسئلہ اورتوجہ صرف نواز شریف اورشہباز شریف ہیں ،اصل معاشی اعشارئیے یہ ہیں کہ 15 روپے کی روٹی اور 20 روپے کا نان ہے۔مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ عمران خان ذہنی عدم استحکام کا شکار ہیں، ان کی حکومت کا کوئی وژن اور سمت نہیں، جھوٹ پہ ملک چلایا جارہا ہے، اسٹیٹ بینک کے مطابق 2020 میں بھی 14 فیصد مہنگائی برقرار رہے گی، 2020 میں بھی ترقی کی شرح دو سے اڑھائی فیصد رہے گی، سچ یہ ہے کہ نالائق حکومت نے ایک سال میں تاریخی 11 ہزار ارب کا قرض لیا، سچ یہ ہے کہ ایک سال میں گیس 200 فیصد اور بجلی 100 فیصد سے زائد مہنگی کی گئی۔ترجمان نے کہا کہ معاشی حقائق یہ ہیں کہ نالائق حکومت کے ایک سال میں فی کس آمدنی میں 11 فیصد کمی ہوچکی ہے، ایف بی آر نے برآمدکنندگان کے 75 ارب روپے کے ری فنڈ روک لئے، ری فنڈ روکنے کے باوجود ایف بی آر چار ماہ میں ریکارڈ167 ارب ٹیکس وصولی کے خسارے کا شکار ہے، اپنا ہدف پورا نہ کرسکا، مصنوعی طورپر فارن ایکسچینج ریزورز بڑھنے کی وجہ وہ سرمایہ ہے جو زیادہ شرح سود کی لالچ میں نفع کمانے والوں نے لگایا ہے، اسی بناءپر گروپس کی شکل میں سرمایہ کاری میں اضافہ ہوا کیونکہ زیادہ شرح سود کی وجہ سے غیرملکی بنکوں نے سرمایہ رکھوایا ہے۔