03:21 pm
گرتی ہوئی دیوارکوآخری دھکادینے کی تیاریاں ،حکومت گرانے کے لیے نیا فیصلہ،جے یوآئی نے بڑااقدام اٹھالیا

گرتی ہوئی دیوارکوآخری دھکادینے کی تیاریاں ،حکومت گرانے کے لیے نیا فیصلہ،جے یوآئی نے بڑااقدام اٹھالیا

03:21 pm

لاہور(ویب ڈیسک)اپوزیشن کی رہبرکمیٹی نے حکومت کے خلاف ہرجمعے کوملک گیرمظاہروں کافیصلہ کیاہے ،جے یوآئی رہنماعبدالغفورحیدری نےکہاکہ حکمران آزادی مارچ سے ہل چکے ہیں ،اب گرتی دیوارکوایک دھکادیناہوگا۔تفصیلات کے مطابق اپوزیشن کی رہبرکمیٹی کی جانب سے یہ فیصلہ کیاگیاہے کہ ہرجمعہ کوحکومت کے خلاف ملک گیرمظاہرے ہوں گے ،ائیونڈمیں میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے
جےیوآئی کے مرکزی رہنماعبدالغفورحیدری نےمتحدہ اپوزیشن کے کارکنوں سے تحریک کومضبوط بنانےکی اپیل کی ہے، اس موقع پر ان کاکہنا تھا کہ کہ حکمران آزادی مارچ سےہل چکےہیں،اب گرتی ہوئی دیوارکوایک دھکااوردیناہوگا۔حکمرانوں نے غریب کا جینا حرام کر دیا ہے ہرطرف مہنگائی سے عوام کی چیخیں سنائی دے رہی ہیں، موجودہ حکمرانوں کو ناجائز طور پر عوام پر مسلط کیا گیا ہے، قوم اب دھاندلی کی گورنمنٹ کو مزید برداشت نہیں کرسکتی۔دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پبلک اکائونٹس کمیٹی کے چیئرمین کا انتخاب سیاسی ماحول مزید گرم ہونے کا امکان، حکومت نے اپوزیشن کے لئے میدان خالی نہ چھوڑنے پر مشاورت شروع کر دی۔ذرائع کے مطابق حکومت نے اپنا امیدوار لانے پر سوچ بچار شروع کر دیا ہے، پشاور سے رکن اسمبلی نور عالم خان پی اے سی کی چیئرمین کے لئے حکومت کی طرف سے امیدوار ہو سکتے ہیں، نور عالم خان کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا وسیع تجربہ ہے، نون لیگ نے رانا تنویر احمد کو چیئرمین پی اے سی کے لئے نامزد کر رکھا ہے۔ پبلک اکاونٹس کمیٹی کے کل 30 ممبران ہیں شہباز شریف بیرون ملک موجودگی کی وجہ سے چیئرمین کے انتخاب میں شریک نہ ہو سکیں گے ۔ن لیگ کے صدرشہبازشریف کی عدم موجودگی سے اپوزیشن کا ایک ووٹ کم ہو جائے گا ،حکومت نے امیدوار لانے کا فیصلہ کیا تو اپوزیشن کے لئے مشکل ہو گی، اکثریتی ووٹ حاصل کرنے والا امیدوار چیئرمین منتخب ہو جائے گا، پبلک اکائونٹس کمیٹی کے چیئرمین کا انتخاب 28 نومبر کو ہو گا-