07:35 am
4ہفتوں کی مہلت ہوتے ہی نواز شریف وطن واپس آئیں گے یا نہیں ؟ ن لیگ نے بڑا اقدام اٹھانے کی تیاری کر لی

4ہفتوں کی مہلت ہوتے ہی نواز شریف وطن واپس آئیں گے یا نہیں ؟ ن لیگ نے بڑا اقدام اٹھانے کی تیاری کر لی

07:35 am

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک ) نواز شریف کا لندن میں قیام بڑھانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ سابق وزیراعظم کے خاندانی ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم لندن میں 4ہفتے سے زیادہ قیام کریں گے، شہباز شریف کے وکلاء نے طبی بنیادوں سے درخواست بنا کر ہائیکورٹ میں جمع کروانے کی تیاری کرلی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ے مطابق نواز شریف نے طبی وجوہات پر بیرون ملک قیام میں توسیع کا فیصلہ کیا ہے، نوازشریف چار ہفتوں کی مدت مکمل ہونے
کے بعد بھی ملک واپس نہیں آئیں گے۔ برطانوی ڈاکٹرز نے کے مطابق نوازشریف کے طبی معائنے اور ٹیسٹ مکمل ہونے میں کئی مہینے لگ سکتے ہیں۔ اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے طبی بنیادوں پر کیس کی تیاری کیلئے اپنے وکلاء کو ہدایت کردی ہے۔طبی صورتحال کی دستاویزات حکومت کیساتھ ہائیکورٹ میں بھی جمع کرائی جائیں گی۔ یاد رہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کو طبی بنیادوں پر علاج کیلئے چار ہفتوں کی مدت دی گئی تھی جو 17 دسمبر کو ختم ہو رہی ہے۔ یادرہے لاہور ہائیکورٹ کے دو رکنی بنچ نے پاکستان مسلم لیگ (ن)کے قائد ، سابق وزیر اعظم نواز شریف کو علاج کے لیے غیر مشروط طور پر چار ہفتوں کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی۔ فاضل عدالت نے وفاقی حکومت کی ساڑھے 7 ارب روپے کے انڈیمنٹی بانڈز کی شرط کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ جب ہائیکورٹ نے ضمانت دی تھی تو اس شرط کا کوئی جواز نہیں بنتا۔ لاہور ہائیکورٹ نے حکم میں کہا تھا کہ نواز شریف علاج کی خاطر چار ہفتوں کیلئے ملک سے باہر جاسکتے ہیں اور علاج کے لیے مزید وقت درکا ہوا تو درخواست گزار عدالت سے دوبارہ رجوع کرسکتا ہے اور میڈیکل رپورٹس کی روشنی میں توسیع دی جاسکتی ہے۔ تاہم اب برطانوی ڈاکٹرز کی ہدایت پر سابق وزیراعظم نوازشریف نے لندن قیام میں توسیع کا فیصلہ کیا ہے۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے طبی معائنے میں کئی ماہ لگ سکتے ہیں

تازہ ترین خبریں