10:15 am
پاکستان میں طلبہ یونینز کی بحالی، وزیراعظم عمران خان کا ردعمل بھی سامنے آگیا

پاکستان میں طلبہ یونینز کی بحالی، وزیراعظم عمران خان کا ردعمل بھی سامنے آگیا

10:15 am

لاہور(نیوز ڈیسک) وزیراعظم پاکستان عمران خان نے کہا ہے کہ جامعات مستقبل کی قیادت تیار کرتی ہیں اور طلبہ یونینز اس سارے عمل کا لازمی جزو ہیں ۔بدقسمتی سے پاکستان کی جامعات میں طلبہ یونینز میدان کارزار کا روپ دھار گئیں اور جامعات میں دانش کا ماحول مکمل طور پر تباہ ہوکر رہ گیا۔عمران خان کا کہنا ہے کہ ہم دنیا کی صف اول کی دانشگاہوں میں رائج بہترین نظام سے استفادہ کرتے ہوئے
ایک جامع اور قابل عمل ضابطہ اخلاق مرتب کریں گے تاکہ ہم طلبہ یونینز کی بحالی کی جانب پیش قدمی کرتے ہوئے انہیں مستقبل کی قیادت پروان چڑھانے کے عمل میں اپنا مثبت کردار ادا کرنے کے قابل بنا سکیں۔ یاد رہے ملک میں طلبہ تنظیموں نے پاکستان بھر کے پچاس شہروں میں مارچ کا اہتمام کیا تھاجہاں طلبہ کے حقوق کیلئے آواز اٹھائی گئی اور یونین کو بحال کرنے کے مطالبے کے ساتھ ساتھ ،بڑھتی ہوئی فیسوں کیخلاف بھی آواز بلند کی۔جس پر زیادہ تر سیاسی رہنما طلبہ تنظمیوں کی بحالی کی مخالفت کرچکے ہیں ،تاہم ،شیخ رشید ،بلاول بھٹو اور فواد چوھدری نے طلبی یونین کی تشکیل کی حمایت کی تھی۔واضح رہے پنجاب پولیس نے طلباء یکجہتی مارچ کے منتظمین کے خلاف مقدمہ درج کیاتھا، مقدمہ سول لائینز تھانے میں درج کیا گیا، مقدمے میں درجنوں نامزد اور 300 تک نامعلوم افراد کو بھی شامل کیا ہیں۔ ایف آئی آر میں حکومت مخالف اور ریاستی اداروں کیخلاف تقاریر کی دفعات شامل ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ مقدمے میں مشعال خان کے والد اقبال لالہ، کامل خان، عمارعلی جان،فاروق طارق سمیت دیگر لوگوں کو نامزد کیا گیا ہے جبکہ 300 تک نامعلوم افراد کو بھی شامل کیا گیا ہے۔

تازہ ترین خبریں