08:02 am
چین میں موجود 500سے زائد طلبا کی حکومت پاکستان سے درخواست ، ویڈیو لنک میں

چین میں موجود 500سے زائد طلبا کی حکومت پاکستان سے درخواست ، ویڈیو لنک میں

08:02 am

اسلام آباد (اوصاف ایکسکلوژو)دنیا بھر میں کرونا وائرس کا خوف اپنے پنجے گاڑ چکا ہے ۔ گزشتہ دنوں چین میں موجود 500میں سے 4طلبا میں اس خطرناک وائرس کی موجودگی کا انکشاف ہو ا ہے ۔ اس حوالے سے چین میں موجود طلبا نے پاکستانی حکومت سے مدد کی درخواست کی ہے ۔ درخواست گزار کا کہنا تھا کہ میں ہوزونگ یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی ووہان سے پاکستانی ہوں، ووہان وہ شہر ہے جہاں سے کرونا وائرس شروع ہوا ہے م اس وقت ووہان میں صورتحال بہت گھمبیر ہے، کرونا وائر س کی وجہ سے انسانی
کمروں میں آئسو لیٹ کر دیا گیا ہے، پورا شہر بند پڑا ہے، روڈ ریلوے اسٹیشن، ہوائی اڈے، ٹیکسی اسٹینڈسب بند پڑے ہیں،۔ ہسپتال مریضوں سے بھرے پڑے ہیں وائر س نے بڑے پیمانے پر تباہی مچائی ہے۔روزانہ کی بنیاد پر یہ وائرس بڑھ رہا ہے اور ہزاروں لوگ اس کا شکار ہو رہے ہیں۔اس وقت ووہان میں 500 سے زائد پاکستانی طالب علم موجود ہیں،یو ایس اے، ملائیشاء آسٹریلیا، ترکی، انڈیا و دیگر ممالک کی حکومتوں نے اپنے اسپیشل طیارے بھیج کر ان کو واپس بلوا لیا ہے۔اس وقت ہیو مین یونیورسٹی سے کی طرف سے ایک ای میل بھیجی گئی ہے کہ ہم پاکستان جا سکتے ہیں لیکن ابھی تک پاکستانی حکومت نے ایسی کوئی مدد نہیں کی کہ ہمیں کب اور کیسے یہاں سے نکالنا ہے۔ ہماری ان سے درخواست ہے کہ ہمیں یہاں سے نکالیں، ہمیں یہاں سے نکالیں، ہمیں یہاں سے نکالیں۔