11:28 am
رفال بھی آ جائے تو ہم تیار ہیں، پاک فضائیہ

رفال بھی آ جائے تو ہم تیار ہیں، پاک فضائیہ

11:28 am

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) پاکستان فضائیہ کے اسسٹنٹ چیف آف دی ایئر سٹاف پلانز ایئر کموڈر سید عمر شاہ کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال حراست میں لئے جانے والے بھارتی ونگ کمانڈر ابھی نند ن کے مگ 21 کے چاروں میزائل جہاز کے ساتھ موجود ہیں جس کا مطلب ہے کہ میزائل فائر ہی نہیں کئے گئے۔اس مرتبہ اگر بھارتی رفال بھی آجائے تو ہم اس کا مقابلہ کرنے کے لئے تیار ہیں۔انڈیپنڈنٹ اردو کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز اسلام آباد میں موجود ایئر ہیڈ کوارٹر میں میڈیا نمائندگا ن کو
مگ21 دکھا یا گیا جس میں چاروں میزائل نصب تھے۔حکام کی جانب سے کہا گیا ہے کہ میزائل فائر ہونے کی تفصیلات غلط ہیں، میزائل فائر کئے ہی نہیں گئے تھے۔ یاد رہے کہ 27 فروری2019 کو پاکستانی حدود میں داخل ہونے والی بھارتی ونگ کمانڈر ابھی نند ن کے جہاز مگ 21 کو نشانہ بنایا گیا تھا جس کے بعد اسے حراست میں لیا گیا تھا۔ بعد میں اگلے دن ہی جذبہ خیر سگالی کے تحت بھارتی ونگ کمانڈر کو واپس بھیج دیا گیا تھا۔بھارت نے دعویٰ کیا تھا کہ ا نہوں نے پاکستانی فوجی طیارے ایف16 کو نشانہ بنایا تھا،لیکن پاکستان فضائیہ کی جانب سے ایسی تمام خبروں کی تردید کر دی گئی تھی جس کے بعد آج میڈیا نمائندگا ن کو مگ 21 کا ملبہ دکھایا ہے جس میں چاروں میزائل اسی طرح نصب ہیں ۔ اسسٹنٹ چیف آف دی ایئر سٹاف پلانز ایئر کموڈر سید عمر شاہ نے بتایا ہے کہ جب بھارتی طیارہ پاکستانی کی حدود میں داخل ہوا تو ہم نے اسے نشانہ بنایا، پاکستان فضائیہ کا نشانہ اس کے جہاز کے بائیں پر پے لگا جس کے بعد بھارتی ونگ کمانڈر کا جہاز گر گیا۔ایئرکموڈ کا کہنا تھا کہ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ اگر چاروں میزائل اسی طرح جہاز میں نصب ہیں تو بھارتی ونگ کمانڈر نے میزائل فائر کونسا کیا۔اس لئے یہ کہنا غلط ہو گا کہ بھارتی مگ21 نے پاکستانی ایف 16پر میزائل حملہ کیا، جبکہ اس کے چاروں میزائل ابھی تک جہاز کے اندر لگے ہوئے ہیں۔

تازہ ترین خبریں