11:06 am
پنجاب میں90 فیصد کیسز کی حالت بہتر ہے، ڈاکٹر یاسمین راشد

پنجاب میں90 فیصد کیسز کی حالت بہتر ہے، ڈاکٹر یاسمین راشد

11:06 am



لاہور( این این آئی) صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کے باعث پنجاب میں صرف دولوگوں کی حالت تشویشناک ہے، 90 فیصد مریضوں میں نہ ہونے کے برابر وائرس ہیں، دس فیصد وہ لوگ جن کوبخار یا کھانسی ہے۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ 10 ہزار رائے ونڈ کے تبلیغی جماعت کے لوگوں کے ٹیسٹ کیے گئے، 187مختلف ہسپتالوں میں داخل ہیں، 18 ہزار 269 لوگوں کے ٹیسٹ کیے گئے۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ چینی ڈاکٹروں نے ہماری ڈاکٹروں کو دی جانے والی ٹریننگ پر اطمینان کا اظہار کیا۔ چائینز ڈاکٹرزہماری بہت مدد کررہے ہیں، گزشتہ روز بھی چار گھنٹے چائنیز ڈاکٹروں کیساتھ سیشن ہوا۔ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ ایکسپوسینٹرمیں کورونا ٹیسٹ کی24گھنٹے سہولت دے رہے ہیں، ہرکوئی اپنا ٹیسٹ کرواسکتا ہے، کورونا وائرس کے کچھ لوگ از خود پرائیویٹ ہسپتالوں سے ٹیسٹ کرا رہے ہیں۔صوبائی وزیر صحت کا کہنا تھا کہ چائنیزکیساتھ میٹنگ میں پلازما کے حوالے سے بات چیت ہوئی۔ پلازما پر ڈاکٹر طاہر شمسی نے کراچی میں کام شروع کردیا ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ تمام صوبے کورونا کے خلاف حفاظتی اقدامات کررہے ہیں، اللہ خیرکرے صورتحال بہت بہترہے، ہماری کوشش ہے مریضوں کی تعداد نہ بڑھے، لاہور میں ایک ہزار، میو ہسپتال میں 500 بیڈز کی سہولت ہے۔ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ اس وقت ہمارے پاس 210مریض ہیں، پی کے ایل آئی میں 28مریض ہیں، کچھ مریضوں کو جنرل ہسپتال میں رکھا ہوا ہے، 10ہزارمریضوں کے لیے بیڈزکی سہولت کا بندوبست کرلیا ہے۔انہوںنے کہا کہ لاک ڈائون کی وجہ سے وائرس کا پھیلا کم ہوا، اتنی استعداد نہیں تھی کہ زیادہ تعداد میں ٹیسٹ کرلیتے، اگلے ہفتے چارہزارسے پانچ ہزارتک لوگوں کے ٹیسٹوں کی تعداد ہوجائے گی۔