04:54 pm
واقعہ  تحقیقات کے لئے جے آئی ٹی تشکیل دے دی گئی،15 روز میں رپورٹ پیش کرے گی

واقعہ تحقیقات کے لئے جے آئی ٹی تشکیل دے دی گئی،15 روز میں رپورٹ پیش کرے گی

04:54 pm

کوئٹہ( آن لائن ) ہزارہ ٹاؤن واقعہ کی تحقیقات میں بڑی پیشرفت سامنے آئی ہے۔کوئٹہ کے علاقے ہزارہ ٹائون میں مشتعل ہجوم سے نوجوان کی ہلاکت اور دو افراد کو زخمی کرنے واقعہ کی تحقیقات کے لئے 8رکنی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے۔ محکمہ داخلہ بلوچستا ن نے ہزارہ ٹائون واقعہ کی تحقیقات کے لئے ایس ایس پی انسوٹی گیشن کوئٹہ اسد خان ناصر کی سربراہی 8رکنی مشترکہ
تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی۔ٹیم میں آئی ایس آئی ، ایم آئی ، اسپیشل برانچ، آئی بی، سی ٹی ڈی کے نمائندے اور کیس کے تفتیشی آفیسرشامل ہیں تحقیقاتی ٹیم کو ایف آئی ، ایس ای سی پی،اسٹیٹ بینک کا تعاون بھی حاصل ہوگاجبکہ تحقیقاتی ٹیم 15دن میں اپنی رپورٹ ایڈیشنل چیف سیکرٹری محکمہ داخلہ و قبائلی امور کو پیش کریگی۔واضح رہے کہ کوئٹہ کے نواحی علاقے ہزارہ ٹاون کرانی روڈ پر گزشتہ شب ہجوم نے تین افراد کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں ایک شخص جاں بحق اور دو زخمی ہوگئے تھے۔۔پولیس حکام نے ہزارہ ٹائون واقعہ میںغفلت برتنے والے ایس ایچ ائو بروری روڈ تھانہ عزت اللہ، سب انسپکٹر محمد اقبال، گن مین محمد رضوان ، ڈرائیوراورنگزیب ،اور کانسٹیبل لیاقت علی کو معطل کرتے ہوئے پولیس لائن رپورٹ کرنے کی ہدایت کردی۔