05:53 am
پاکستان کے اہم شہر میں سگا باپ اپنی بیٹی کیساتھ کئی سال تک شرمناک کام کر تا رہا

پاکستان کے اہم شہر میں سگا باپ اپنی بیٹی کیساتھ کئی سال تک شرمناک کام کر تا رہا

05:53 am


اسلام آباد مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کے اہم شہر میں خون سفید ہو گیا ، سگا باپ ہی اپنی بیٹی کیساتھ کیا شرمناک کام کر تا رہا ، جانیں۔۔۔۔ پنجاب کے شہر ڈیرہ غازی خان میں انتہائی گھناونے واقعے کا انکشاف ہوا ہے۔بتایا گیا ہے کہ خاتون نے پولیس میں درخواست دی ہے کہ اس کا والد اسے پسند کی شادی کرنے کے بعد برسوں تک ناصرف جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا رہا، بلکہ اس کی نومولود بیٹی کو بھی قتل کر ڈالا۔ خاتون کی جانب سے درج کروائے گئے مقدمہ میں اپنے والد کے خلاف جنسی زیادتی، نازیبا ویڈیوز بنانے اور حبس بے جا میں رکھنے کے الزامات
عائد کیے گئے ہیں۔خاتون کا کہنا ہے کہ اس کے والد نے مرضی سے شادی کرنے کے جرم میں 8 سال تک اسے زنجیروں میں باندھے رکھا۔2012 میں اس نے اپنی پسند سے شادی کی تھی۔ تاہم 2013 میں اسے مجبور کیا گیا اور کہا گیا والدین کے گھر واپس چلے جانے کی صورت میں اس کی باقاعدہ رخصتی کروائی جائے گی۔ اسی لیے وہ والدین کے گھر واپس آ گئی، لیکن اس کے بعد اگلے کئی برس اس کیلئے قیامت سے کم نہ تھے۔ وہ جب اپنے والدین کے گھر واپس آئی، اس وقت وہ حاملہ تھی۔ والدین کے گھر 5 روز بعد اس کے ہاں بیٹی کی پیدائش ہوئی جسے چند روز بعد ہی قتل کر دیا گیا۔جبکہ لڑکی نے بتایا کہ اسے صفائی کے بہانے بلا کر گھر کی بیٹھ میں جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا جاتا تھا ۔