05:36 pm
آم کودیسی انداز میں کھ انے والایہ شخص کوئی عام شہری نہیں  بلکہ کس ترقی یافتہ ملک کاسفیرہے ،جانیں گے توحیران رہ جائیں گے

آم کودیسی انداز میں کھ انے والایہ شخص کوئی عام شہری نہیں بلکہ کس ترقی یافتہ ملک کاسفیرہے ،جانیں گے توحیران رہ جائیں گے

05:36 pm

اسلام آباد(ویب ڈیسک )پھلوں کا بادشاہ آم اگر کھل کر اور اس کے اصل انداز میں نہیں کھایا جائےتو مطلب آپ نے آم کا مزہ نہیں لیا، اسی لئے پاکستان میں آسٹریلوی سفیر جیفری شا نے بھی چھری کانٹا چھوڑا اور اپنایا پاکستانی انداز۔کہانی کچھ یوں ہے کہ جیفری شا نے ٹوئٹر پر تصاویر شیئر کیں جس میں وہ آم کو انتہائی نفاست سے کاٹ کر چھری کانٹے سے کھا کر پاکستانی آموں کی تعریف کرتے نظر آئے جس پر ٹوئٹر پر رسیلی بحث شروع ہوگئی، ٹوئٹر پر صارفین نے بڑے دلچسپ مشورے دیتے ہوئے کہا چھری کانٹا چھوڑے اور دیسی اسٹائل میں آم کھائیں۔
صارفین کے مشوروں کو جیفری شا نے اتنا سنجیدگی سے لیا کہ دیسی اسٹائل میں آم کھانا سیکھ لیا، انہوں نے ٹوئٹر پر تصاویر شیئر کیں جس میں جیفری شا آم کو دباتےہوئے اس کا چھلکا اتارتے ہوئے اور پھر چوستے ہوئے نظر آرہے ہیں، ساتھ ہی ایک گلاس دودھ اور آموں کا تھال بھی رکھا نظر آیا۔جیفری شا نے ٹوئٹ میں لکھا کہ میں نے اپنے پچھلے ٹویٹ کے بعد بہت سارے تبصرے سنے ہیں اور روایتی پاکستانی انداز میں آم کھانے کی کوشش کی ہے۔ ایک اچھا آم، جسے "صحیح انداز میں” کھایا جاتا ہے ، تو وہ آپ کو اتنی ہی خوشی دے سکتا ہے جتنی آئس کریم! اسے بجا طور پر پاکستان میں "پھلوں کا بادشاہ” کہا جاتا ہے۔جیفری شا کی دیسی انداز کی تصاویر کو بھرپور پذیرائی مل رہئ ہے، ہزاروں بار شیئر اور لائیک کیا جاچکاہے۔جیفری شا نے گزشتہ ٹویٹ میں پاکستانی آم کی تعریف کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’پاکستان دنیا بھر میں آم کی برآمد کرنے والا چھٹا سب سے بڑا ملک ہے۔ آسٹریلیا میں پاکستانی آم کی پذیرائی بڑھتی جا رہی ہے۔جیفری شا سے قبل برطانوی ہائی کمشنر کرسچین ٹرنر بھی آموں سے لطف اندوز ہوتے نظر آئے، انہوں نے ٹویٹ پر آموں کی تصاویر شیئر کرتے ہوئےمرزا غالب کی لائنز لکھیں کہ آموں میں بس دو خوبیاں ہوں ایک بہت میٹھے ہوں اور بہت سارے ہوں، انہوں نے اپنے آم بھیجنے پر دوستوں کا شکریہ ادا بھی کیا