05:05 pm
کرونا اپڈیٹس ، لاک ڈائون کے حوالے سے حکومت کا بڑا فیصلہ ، پاکستانیوں کیلئے اہم خبر

کرونا اپڈیٹس ، لاک ڈائون کے حوالے سے حکومت کا بڑا فیصلہ ، پاکستانیوں کیلئے اہم خبر

05:05 pm


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) اسلام آباد میں نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے ہونے والے اجلاس میں وفاقی حکومت نے لاک ڈاؤن میں مزید نرمی کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے بند پڑے کاروبار، شادی ہالز، پارکس، ریسٹورنٹس اور تفریحی مقامات کھولنے کا اعلان کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے ترقی و اصلاحات اسد عمر کی زیر صدارت ہونے والے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے اجلاس میں ملک میں موجودہ کرونا وائرس کی صورتحال پر غور کیا گیا، اسد عمر نے متعلقہ اداروں سے 
کرونا وائرس پر قابو پانے کے لیے کیے گئے اقدامات پر بریفنگ لی۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے اجلاس کے بعد وفاقی وزیر اسد عمر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ پاکستان میں کرونا وائرس کی وبا پر تقریباً قابو پا لیا گیا ہے اور کرونا وائرس کی ملک میں موجودہ صورتحال کو دیکھتے ہوئے تعلیمی اداروں کو پندرہ ستمبر کو کھولنے کا فیصلہ برقرار رکھا گیا ہے۔ میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے اسد عمر نے کہا کہ آٹھ اگست بروز ہفتے سے حکومت نے سیاحتی مقامات اور وہاں پر موجود تمام ہوٹلز کو کھولنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ 10 اگست پیر سے ملک بھر میں پبلک پارکس، تفریحی مقاماتِ، ایکسپو ہالز، بیوٹی پارلرز، مزارات، مذہبی مقامات، سینما، تھیٹرز، جم، کلب، ہوٹل، کیفے اور ریسٹورینٹس کو بھی کرونا سے بچاؤ کی ایس او پیز کے تحت کھول دیا جائے گا، ہوٹلز اور ریسٹورنٹ میں بیٹھ کر کھانا کھانے کی بھی اجازت ہوگی۔ وفاقی وزیر نے نقل و حمل اور ٹرانسپورٹ پر سے پابندی کا فیصلہ واپس لینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ہم روڈ ٹرانسپورٹ، ریلوے لائن اور ایئر لائنز کو بھی معمول کے مطابق بحال کر رہے ہیں، اس کے علاوہ لوگوں کو بسوں اور میٹرو بس میں کھڑے ہوکر سفر کرنے کی اجازت نہیں ہو گی جبکہ ڈبل سواری پر لگی پابندی بھی ہٹائی جا رہی ہے۔ اسد عمر نے بازاروں اور مارکیٹوں کو دی گئی ہفتے اور اتوار کی چھٹی ختم کرتے ہوئے کہا کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے اجلاس میں ملک بھر کے بازاروں اور مارکیٹوں کے اوقات کار پرانے بحال کیے جا رہے ہیں، جس میں بازاروں اور مارکیٹوں کو کھولنے کے لیے اوقات کار کی پابندی نہیں ہوگی۔ وفاقی وزیر نے بتایا کہ محرم الحرام کے جلوسوں کے حوالے سے علمائے کرام کے ساتھ مل کر ایس او پیز تیار کیے گئے ہیں، جن کے مطابق مجالس اور جلوس منعقد کرنے کی اجازت دی جا رہی ہے، اس کے علاوہ 14 اگست کی تقریبات کے حوالے سے بھی آئندہ دنوں میں گائیڈ لائنز طے کر لی جائیں گی۔ وفاقی وزیر اسد عمر نے کھیلوں کی سرگرمیوں کی بحالی کے حوالے سے بتاتے ہوئے کہا کہ وفاقی حکومت نے ان تمام کھیلوں کی سرگرمیوں کو بحال کرنے کی اجازت دی ہے جن میں جسمانی ٹکراؤ نہیں ہوتا ۔ تاہم جن کھیلوں کی سرگرمیوں کو بحال کیا جا رہا ہے ان کو دیکھنے کے لیے تماشائیوں کو گراؤنڈ میں جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔ واضح رہے کہ پاکستان میں گزشتہ چند ہفتوں سے کرونا وائرس کا زور ٹوٹ چکا ہے اور کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کے سامنے آنے والے اور کرونا کے باعث ہلاک ہونے والے مریضوں کی شرح نہ ہونے کے برابر ہے، کرونا وائرس کی اسی صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے وفاقی حکومت نے بند پڑی تمام کاروباری اور سیاحتی سرگرمیوں کو کھولنے کا اعلان کیا ہے۔