02:04 pm
مسئلہ کشمیر  برطانوی  پارلیمان میں!  

مسئلہ کشمیر  برطانوی  پارلیمان میں!  

02:04 pm

  بھارت  اٹوٹ انگ کا راگ جتنا مرضی الاپتا رہے اور کشمیر کو ڈھٹائی  سے اپنا اندرونی معاملہ قرار دے کر جھینپ مٹاتا رہے ، لیکن جب بھی عالمی
  بھارت  اٹوٹ انگ کا راگ جتنا مرضی الاپتا رہے اور کشمیر کو ڈھٹائی  سے اپنا اندرونی معاملہ قرار دے کر جھینپ مٹاتا رہے ، لیکن جب بھی عالمی سطح پر کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کا تذکرہ ہوتا ہے تو دلی سرکار کی تلملاہٹ دیدنی ہوتی ہے۔ ایسا ہی واقعہ گزشتہ ہفتے سامنے آیا ۔ برطانوی پارلیمان میں مقبوضہ کشمیر کی بدترین صورتحال پر بحث ہوئی ۔ گفتگو کا محور انسانی حقوق کی پامالی تھا۔ برطانوی اراکین پارلیمان نے بھارتی ریاستی مظالم کی جو تفصیلات بیان کیں وہ مودی سرکار کے خلاف ایک ناقابل تردید چارج شیٹ سے کم نہیں۔ مقبوضہ کشمیر کا خصوصی ریاستی تشخص آئینی واردات کے ذریعے  پامال کرنے کے بعد بھارتی جنون عروج پر پہنچ چکا ہے۔ عوامی احتجاج کو کچلنے کے لیے بدترین کرفیو نافذ کیا گیا۔ اصل صورتحال کو دنیا سے چھپانے کے لیے مواصلاتی ذرائع معطل کر دئیے گئے۔ برطانوی رکن پارلیمان سارہ اوون  نے ہائوس آف لارڈز کو آگاہ کیا کہ احتجاجی لہر کو کچلنے کے لئے نافذ کئے جانے والے کرفیو کو کرونا لاک ڈائون کا نام دے کر بھارت سرکار دنیا کی آنکھوں میں دھول جھونک رہی ہے۔ اس عالمی رسوائی پر بھارتی ریاست بھنائی ہوئی ۔ بحث کے اگلے روز بھارتی دفتر خارجہ نے برطانوی اراکین پارلیمان کی رائے کو بے بنیاد اور حقائق کے منافی قرار دیتے ہوئے جموں ، کشمیر اور لیہہ کو وفاقی علاقے(یونین ٹیر یٹری) قرار دیا۔  پاکستان کے محکمہ خارجہ کو خصوصی طور پر اس نکتے پر توجہ مرکوز کرنی چاہیے کہ ڈیڑھ برس قبل پانچ اگست کے ناجائز اقدام کے نتیجے میں آرٹیکل ۳۷۰ کی منسوخی کے بعد سے بھارت عالمی فورمز پر تسلسل سے مقبوضہ کشمیر کو اپنی یونین ٹیریٹری قرار دے کر بین الاقوامی  رائے عامہ کو گمراہ کر رہا ہے۔ بھارت کا یہ موقف اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے منافی ہونے کے ساتھ ساتھ اُن وعدوں کے بھی خلاف ہے جن کی بنیاد پر پنڈت نہرو نے کشمیری قیادت کو ریاستی خود مختاری کے سبز باغ دکھائے تھے۔ یہ ضرورت ہر گزرتے دن کے ساتھ شدید ہوتی جا رہی ہے کہ پاکستان تمام اہم پلیٹ فارمز پر بھارت کے جھوٹے موقف کے خلاف مظلوم کشمیریوں کا مبنی برحق مقدمہ پوری تندہی سے پیش کرے۔ حکومت میں آتے ہی وزیر اعظم نے یہ جرات مندانہ اعلان کیا تھا کہ پاکستان ہر محاذ پر کشمیریوں کی وکالت کرتا رہے گا۔ قوم کی جانب سے پذیرائی کی صورت اس موقف کی تائید نے یہ بھی ثابت کردیا ہے کہ پاکستان کے تمام طبقات مسئلہ کشمیر پر یکساں سوچ کے حامل ہیں۔ خارجہ محاذ پر پاکستان کی مثبت پیش رفت کی بدولت ترکی ، ملائیشیا ، ایران اور آذربائیجان کی جانب سے واشگاف الفاظ میں مسئلہ کشمیر کے حل پر زور دیا جا رہا ہے۔ مودی سرکار کو یہ کسی قیمت پر منظور نہیں کہ کشمیر کا تذکرہ کسی عالمی فورم پر بیان کیا جائے۔ گزشتہ ماہ  نائیجیر میں منعقد ہونے والے  او آئی سی کے وزرائے خارجہ کی کانفرنس کے موقع پر بھی بھارت نے اپنی زہریلی سوچ کا بھرپور مظاہرہ کیا تھا۔ مودی سرکار کے زرخرید میڈیا نے کانفرنس سے پہلے ہی یہ ڈھول پیٹنا شروع کر دیا کہ او آئی سی  نے  اجلاس  کے ایجنڈے میں مسئلہ کشمیر  کو شامل ہی نہیں کیا ۔ دو روز تک بھارتی میڈیا مودی سرکار کی جعلی سفارتی فتح کے ترانے سنا کر اپنی جنتا کو بے وقوف بناتا رہا ۔ جب اجلاس کی مصدقہ  تفصیلات سامنے آئیں تو بھارتی پروپیگنڈے کا بھانڈہ پھوٹا۔ او آئی سی نے بڑی صراحت سے مسئلہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بھارتی ریاستی موقف کو کھلے لفظوں جھٹلایا۔ اس معاملے پر مودی سرکار کی تلملاہٹ اس لئے بھی دو چند ہوگئی کہ او آئی سی میں یہ ساری ناخوشگوار کاروائی بھارت کے  قابل اعتماد خلیجی دوستوں کی موجودگی میں ہوئی۔ 
کون نہیں جانتا کہ برطانیہ میں بھارتی پروپیگنڈہ مشینری ہمیشہ سے بہت فعال رہی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ برطانیہ میں کثیر تعداد میں مقیم کشمیری اور پاکستانی نژاد تارکین وطن بھارت کی چیرہ دستیوں سے بخوبی آگاہ ہیں۔ اسی کی دہائی میں بھارتی مظالم سے تنگ آکر برطانیہ میں نقل مکانی کرنے والے سکھ بھی تسلسل سے ہندوستانی ریاستی جبر کے خلاف آواز بلند کرتے دکھائی دیتے ہیں۔ اپنے بدترین ریاستی مظالم پر پردہ ڈالنے کے لئے بھارت بیرون ملک سفارتی و صحافتی ذرائع سے پرو پیگنڈے کا سلسلہ جاری رکھتا ہے۔ یورپی تفتیشی این جی او کی حالیہ رپورٹ نے نہایت صراحت سے  پاک مخالف جعلی پروپیگنڈہ نیٹ ورک کے چشم کشا حقائق بے نقاب کئے ہیں۔ مودی سرکار کی تازہ درد سری یہ ہے کہ تمام تر عیاری اور جعلسازی کے باوجود ریاستی تشدد اور دہشت گردی جیسے سنگین جرائم عالمی منظر نامے پر بے نقاب ہوتے چلے جا رہے ہیں۔ حالات کا تقاضہ ہے کہ پاکستان اپنے تمام سفارتی و صحافتی ذرائع  بھارتی مہم جوئی  کو ناکام  بنانے کے لیے استعمال کرے۔ بدقسمتی سے گزشتہ چند ماہ کے دوران  حکومت اور حزب اختلاف  کے مابین  سیاسی کشیدگی اتنی بڑھی ہے کہ اہم قومی معاملات پس منظر میں چلے گئے ہیں۔ یہ امر قابل افسوس ہے کہ بھارت کی جعلی پروپیگنڈہ مہم اور کھلی دہشت گردی کے خلاف حزب اختلاف کی صف اول کی قیادت کی جانب سے کوئی قابل ذکر موقف یا مذمت سامنے نہیں آئی۔ قومی معاملات پر یکجہتی کی فضا پیدا کرنا بنیادی طور پر حکومت کی ذمہ داری ہے ۔ کشمیر اور بھارتی دہشت گردی جیسے اہم معاملات پر یکساں حکمت عملی کی تشکیل کے لیے حکومت کو شعلہ بیاں ترجمانو ں کی نہیں بلکہ سنجید ہ مزاج مشیروں کی ضرورت ہے۔  
 

تازہ ترین خبریں

’’پی ٹی آئی کے غنڈوں کا مقابلہ کرنے پرمجھے اپنے شیروں پر فخر ہے‘‘مریم نواز

’’پی ٹی آئی کے غنڈوں کا مقابلہ کرنے پرمجھے اپنے شیروں پر فخر ہے‘‘مریم نواز

وزیر اعظم اعتماد کا ووٹ لینے میں کامیاب۔۔۔ مریم نواز نے ایسی بات کہہ دی کہ کھلاڑی بھی حیران رہ گئے

وزیر اعظم اعتماد کا ووٹ لینے میں کامیاب۔۔۔ مریم نواز نے ایسی بات کہہ دی کہ کھلاڑی بھی حیران رہ گئے

’میں ما لشیا قسم کا وزیر نہیں ‘ وزیراعظم کو اعتماد کا ووٹ ملنے کے بعد شیخ رشید کا قومی اسمبلی میں خطاب

’میں ما لشیا قسم کا وزیر نہیں ‘ وزیراعظم کو اعتماد کا ووٹ ملنے کے بعد شیخ رشید کا قومی اسمبلی میں خطاب

جمہوریت حکومت اور اپوزیشن کے درمیان مقابلے کو کہتے ہیں،عمران خان اکیلے ہی دوڑ کر اول آئے، راجہ پرویز اشرف کا ردعمل

جمہوریت حکومت اور اپوزیشن کے درمیان مقابلے کو کہتے ہیں،عمران خان اکیلے ہی دوڑ کر اول آئے، راجہ پرویز اشرف کا ردعمل

عمران خان صاحب! تبدیلی کیلئے آگے بڑھیں ہم آپ کے ساتھ ہیں، خالد مقبول

عمران خان صاحب! تبدیلی کیلئے آگے بڑھیں ہم آپ کے ساتھ ہیں، خالد مقبول

احسن اقبال بھی جوتاکلب میں شامل،سابق وزیرداخلہ  کارکنوں سے بات چیت کرہی رہے تھے کہ۔۔۔ویڈیوسوشل میڈیاپروائرل

احسن اقبال بھی جوتاکلب میں شامل،سابق وزیرداخلہ کارکنوں سے بات چیت کرہی رہے تھے کہ۔۔۔ویڈیوسوشل میڈیاپروائرل

اپوزیشن دوبارہ وزیراعظم کیخلاف تحریکِ عدم اعتماد لاسکتی ہےیانہیں؟ حکمران جماعت کیلئے اہم خبرآگئی

اپوزیشن دوبارہ وزیراعظم کیخلاف تحریکِ عدم اعتماد لاسکتی ہےیانہیں؟ حکمران جماعت کیلئے اہم خبرآگئی

 شہریوں کو بجلی کی مد میں بڑا ریلیف ملنے کا امکان،نیپرا نے منظوری دیدی

شہریوں کو بجلی کی مد میں بڑا ریلیف ملنے کا امکان،نیپرا نے منظوری دیدی

پی ٹی آئی کارکنوں کی جانب سے گھیرے میں آنے کے بعد مریم تپ گئیں،وزیراعظم کوبدمعاش کہہ ڈالا

پی ٹی آئی کارکنوں کی جانب سے گھیرے میں آنے کے بعد مریم تپ گئیں،وزیراعظم کوبدمعاش کہہ ڈالا

حکومتی ارکان نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن کے بنچوں کیساتھ کیاحرکت کرڈالی ،جان کرآپ کو یقین نہیں آئیگا

حکومتی ارکان نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن کے بنچوں کیساتھ کیاحرکت کرڈالی ،جان کرآپ کو یقین نہیں آئیگا

عمران خان عوام کوریلیف دینے کیلئے ڈٹ گئے ، ایسا فیصلہ کرلیا کہ اپوزیشن جماعتیں منہ تکتی رہ گئیں

عمران خان عوام کوریلیف دینے کیلئے ڈٹ گئے ، ایسا فیصلہ کرلیا کہ اپوزیشن جماعتیں منہ تکتی رہ گئیں

بیٹیاں ہوں توایسی۔۔۔ اپنا گھر بسانے سے قبل بیٹیوں نے باپ کا گھر بسا دیا

بیٹیاں ہوں توایسی۔۔۔ اپنا گھر بسانے سے قبل بیٹیوں نے باپ کا گھر بسا دیا

پی ٹی آئی ممبران کوپیغام ،کپتان کابھی آخرتک لڑنے کافیصلہ

پی ٹی آئی ممبران کوپیغام ،کپتان کابھی آخرتک لڑنے کافیصلہ

مسلم لیگ(ن) کے رہنمائوں پر پی ٹی آئی کارکنان کا حملہ،شاہدخاقان عباسی نے کارکنوں کوتھپڑ رسیدکردئیے

مسلم لیگ(ن) کے رہنمائوں پر پی ٹی آئی کارکنان کا حملہ،شاہدخاقان عباسی نے کارکنوں کوتھپڑ رسیدکردئیے