09:10 pm
پہلے بہت نقصان ہوا لیکن پھر۔۔۔ کئی مشکلات کے بعد بھی اس جوڑے نے اپنا بزنس کیسے کامیاب بنایا؟ جانیں ان کی کہانی

پہلے بہت نقصان ہوا لیکن پھر۔۔۔ کئی مشکلات کے بعد بھی اس جوڑے نے اپنا بزنس کیسے کامیاب بنایا؟ جانیں ان کی کہانی

09:10 pm

کہتے ہیں کہ اگر محنت کی جائے تو ہر کام ممکن ہو سکتا ہے پھر چاہے وہ مشکل اور ناممکن ہی کیوں نا ہو۔ آج ہم آپ کو ایک ایسے جوڑے کی کہانی بتانے جا رہے ہیں جنہوں نے سخت محنت اور لگن سے اپنا بزنس سیٹ کیا اور لوگوں کے لیے مثال قائم کر دی۔سدرہ قاسم جن کا تعلق پاکستان کے شہر اوکاڑہ سے ہے، ان کی اپنے شوہر وقاص علی سے پہلی ملاقات اپنی آنٹی کے گھر ہوئی، وقاص سدرہ کی آنٹی کے گھر پڑھنے آیا کرتے تھے۔سدرہ کو وقاص شروع سے ہی کافی
زیادہ پسند تھا کیونکہ سدرہ کے مطابق ان دونوں کی ذہنیت آپس میں کافی زیادہ مماثلت رکھتی تھی، وقاص اعلیٰ تعلیم کے لیے لاہور جانے لگا، اس وقت اس نے سدرہ کو پیشکش کی کہ کیا وہ اس کی بزنس پارٹنر بنے گی؟سدرہ نے جب یہ بات اپنے گھر والوں کو بتائی تو انہوں نے صاف انکار کر دیا۔انکار سننے کے بعد سدرہ کافی زیادہ افسردہ ہو گئیں یہاں تک کہ وہ اپنا زیادہ تر وقت کمرے میں تنہا گزارنے لگیں، سدرہ کی اس حالت نے ان کے والدین کو ایک مرتبہ پھر سوچنے
پر مجبور کر دیا، بعدازاں وہ دونوں اس بات پر راضی ہو گئے کہ سدرہ وقاص کے ساتھ لاہور میں جا کر کام کر سکتی ہے۔ لاہور میں انہوں نے وقاص کے ساتھ ’سوشل میڈیا آرٹ‘ نامی کمپنی میں کام کرنا شروع کیا جس کا مقصد برانڈز کو سوشل میڈیا کی سطح پر ابھارنا تھا۔تاہم کام کے دوران دونوں کے درمیان اچھے روابط قائم ہوئے۔سدرہ کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ ہم نے کبھی بھی اپنے تعلقات کے حوالے سے ایک دوسرے سے بات نہیں کی تھی، لیکن ہم دونوں ایک دوسرے کے ساتھ اچھا محسوس کرتے تھے۔لیکن ان کی زندگی اور کام کو اس وقت ایک نیا رخ ملا جب ان کی ملاقات اوکاڑہ کے مقامی ولیج کونسل میں کاریگروں کے ایک گروپ سے
ہوئی۔ وہ لوگ دو کمروں پر مشتمل ایک ورک شاپ میں لیدر کے جوتے بنانے کا کام کر رہے تھے۔سدرہ نے اس ورک شاپ کا چکر روز لگانا شروع کیا تاکہ وہ ان کاریگروں کو اس بات کے لیے منا لے کہ وہ ان دونوں کے ساتھ مل کر کام کریں، اور بالآخر وہ لوگ مان گئے۔جہاں سدرہ یہ کام کر رہی تھی وہیں وقاص ویب سائٹ سنبھال رہا تھا، سدرہ کی یہ کوشش تھی کہ جو جوتے یہ لوگ بنائیں وہ بہترین معیار کے ہوں۔سدرا نے کہا کہ ہم نے اپنے جوتوں کی کلیکشن کو Hometown Shoes کا نام دیا، اور جب ہم نے اپنی ویب سائٹ کو لانچ کیا تو پہلا آرڈر اسی وقت فرانس سے آگیا۔انہوں نے مزید کہا کہ شپنگ کی قیمتیں بے انتہا زیادہ
ہونے کے باعث ہم نے اپنے اس آرڈر میں نقصان اٹھایا لیکن نہ ہمت ہاری اور نہ ہی امید چھوڑی۔انہوں نے بتایا کہ تقریباً ایک سال بعد ہم ایک ماہ میں 50 جوتے فروخت کر دیا کرتے تھے، ہم اپنے اس بزنس سے خوش تھے۔بزنس کے دوران ہی دونوں کی شادی ایک سادہ سی تقریب میں ہوئی، کیونکہ شادی کے فوراً بعد انہیں سان فرانسسکو میں Y- کمبینیٹر ایکسلریٹر پروگرام کے لیے جمع کرائی گئی درخواست پر کام کرنا تھا۔تاہم اس پروگرام میں کامیاب ہونے کا معیار ہارورڈ یونیورسٹی سے بھی زیادہ سخت تھا، انہوں نے بتایا کہ ان کا انٹرویو سخت ناکام ہوا لیکن انہوں نے پھر بھی ہمت نا ہاری اور امریکہ چلی گئیں۔ کمبینیٹر میں ان کا اس
وقت غلطیاں کرنا اچھا ثابت ہوا، کیونکہ انہوں نے اس سے بہت کچھ سیکھا۔سدرہ نے بتایا کہ "ہمارے گروپ میں ہماری کمپنی واحد تھی جنھوں نے رقم اکٹھا نہیں کی جس سے معاملات مزید خراب ہو گئے۔تاہم ایک ایونٹ منعقد کیا گیا جس میں ہمیں اپنی پراڈکٹ کا ڈیمو دینا تھا۔ ہماری کلاس کے تمام افراد کافی ڈریس اپ تھے لیکن ان میں سے کسی نے وہ جوتے نہیں پہنے تھے جو ہم نے انہیں بیچے تھے۔ہم نے پھر ریسرچ شروع کی کہ ایسا کیوں ہے، لوگوں کی دلچسپی زیادہ تر جن جوتوں کی طرف ہے؟ پہلے جو جوتے ہم بنا رہے تھے وہ فارمل وئیر تھے جبکہ اب ہم نے کیژوئل وئیر بنانا شروع کیے۔کیونکہ زیادہ تر افراد وہ جوتے
پہننا پسند کرتے ہیں جو روزمرہ پہن سکیں۔تاہم وقت اور محنت کے ساتھ ساتھ ان کا بزنس پروان چڑھنے لگا اور انہوں نے ڈھیروں کامیابیاں سمیٹیں۔

تازہ ترین خبریں

کیا آپ جانتے ہیں مائیکر اوون میں یہ نمبر والے بٹن کیوں ہوتے ہیں؟ جانیں اس میں چھپے ایسے راز جو بہت کم لوگ جانتے ہیں

کیا آپ جانتے ہیں مائیکر اوون میں یہ نمبر والے بٹن کیوں ہوتے ہیں؟ جانیں اس میں چھپے ایسے راز جو بہت کم لوگ جانتے ہیں

کومے میں بیٹی کو جنم دینے والی ماں ۔۔ ماں کی ممتا نے کیسے اپنی ننھی پری کو موت کے منہ سے بچایا؟

کومے میں بیٹی کو جنم دینے والی ماں ۔۔ ماں کی ممتا نے کیسے اپنی ننھی پری کو موت کے منہ سے بچایا؟

عمرہ کرنے کے لئے جا رہا تھا، ڈکیتوں نے گولی مار دی ۔۔ کراچی میں بڑھتی ہوئی چوری کی وارداتیں ایک اور نوجوان کی زندگی لے گئی

عمرہ کرنے کے لئے جا رہا تھا، ڈکیتوں نے گولی مار دی ۔۔ کراچی میں بڑھتی ہوئی چوری کی وارداتیں ایک اور نوجوان کی زندگی لے گئی

مفتاح اسماعیل نے نواز شریف کو استعفیٰ پیش کردیا: اسحاق ڈار نئے وزیر خزانہ نامزد

مفتاح اسماعیل نے نواز شریف کو استعفیٰ پیش کردیا: اسحاق ڈار نئے وزیر خزانہ نامزد

یا اللہ! میری ماں کو مسلمان بنا دے ۔۔ خانہ کعبہ میں امی کے لیے دعا کرنے والے نوجوان کی والدہ نے اسلام کیسے قبول کیا؟ ویڈیو وائرل

یا اللہ! میری ماں کو مسلمان بنا دے ۔۔ خانہ کعبہ میں امی کے لیے دعا کرنے والے نوجوان کی والدہ نے اسلام کیسے قبول کیا؟ ویڈیو وائرل

افریقی ملک میں فوجی اڈے پر خود کش دھماکہ،جانی نقصان کی اطلاعات

افریقی ملک میں فوجی اڈے پر خود کش دھماکہ،جانی نقصان کی اطلاعات

مریم نواز کے داماد کے پاور پلانٹ کا معاملہ، اس حوالے سے ماضی میں کیا کچھ ہوا ؟ جانیں

مریم نواز کے داماد کے پاور پلانٹ کا معاملہ، اس حوالے سے ماضی میں کیا کچھ ہوا ؟ جانیں

مفتاح اسماعیل وزیرخزانہ رہیں گے یانہیں ؟نواز شہباز ملاقات میںبڑافیصلہ ہوگیا

مفتاح اسماعیل وزیرخزانہ رہیں گے یانہیں ؟نواز شہباز ملاقات میںبڑافیصلہ ہوگیا

گانے کاستیاناس کردیا۔۔۔ گرباکوئین معروف گلوکار ہ نیہاککڑ سے ناخوش

گانے کاستیاناس کردیا۔۔۔ گرباکوئین معروف گلوکار ہ نیہاککڑ سے ناخوش

نواز شریف کے سکیورٹی گارڈ کا صحافیوں کو دیکھ کر نازیبا اشارہ،عوام میں غم وغصے کی لہردوڑ گئی

نواز شریف کے سکیورٹی گارڈ کا صحافیوں کو دیکھ کر نازیبا اشارہ،عوام میں غم وغصے کی لہردوڑ گئی

دریامیں کشتی الٹنے سے کتنے افرادجاں بحق ہوگئے ،انتہائی افسوسناک خبرآگئی

دریامیں کشتی الٹنے سے کتنے افرادجاں بحق ہوگئے ،انتہائی افسوسناک خبرآگئی

زرداری اور شہباز شریف کے علاوہ ایک تیسری وکٹ بھی ہے، اسی وکٹ کو گرانا ہدف ہے: عمران خان

زرداری اور شہباز شریف کے علاوہ ایک تیسری وکٹ بھی ہے، اسی وکٹ کو گرانا ہدف ہے: عمران خان

مقامی کرکٹر کا انتقال: عثمان شنواری کو ٹوئٹ کرکے خیریت سے آگاہ کرنا پڑا

مقامی کرکٹر کا انتقال: عثمان شنواری کو ٹوئٹ کرکے خیریت سے آگاہ کرنا پڑا

عمران خان نے حامد خان کو تحریک انصاف میں اہم عہدہ دیدیا

عمران خان نے حامد خان کو تحریک انصاف میں اہم عہدہ دیدیا