03:27 pm
پارلیمنٹ میں پیسے سے آنیوالوں کا جمہوریت سے کوئی تعلق نہیں،شبلی فراز

پارلیمنٹ میں پیسے سے آنیوالوں کا جمہوریت سے کوئی تعلق نہیں،شبلی فراز

03:27 pm

اسلام آباد(روزنامہ اوصاف)وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے کہا ہے کہ پیسے کے ایما پر لوگوں کے ضمیرخریدنے کا کلچر ہے، پارلیمنٹ میں جو لوگ پیسے سے آتے ہیں ان کا جہوریت سے کوئی تعلق نہیں ہوتا،پی ٹی آئی ووٹ کا تقدس بحال کرنے کے لیے جدوجہد کررہی ہے، سینیٹ الیکشن میں پیسے کا مرض نمودار ہو جاتا ہے۔میڈیا سے گفتگو کے دوران ان کا کہنا تھا کہ حکومت سینیٹ میں اہلیت کے مطابق اپنے لوگ لانا چاہتی ہے۔ ذاتی فائدے کے لیے پیسے لینے اور دینے والے سینیٹ میں آ جاتے ہیں۔
 
ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی ووٹ کا تقدس بحال کرنے کے لیے جدوجہد کررہی ہے، سینیٹ الیکشن میں پیسے کا مرض نمودار ہو جاتا ہے۔شبلی فراز نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان ووٹ کی شفافیت اورمیرٹ پر یقین رکھتے ہیں، سچ ہمیشہ جھوٹ پر غالب ہوتاہے، چاہتے ہیں سینیٹ میں سچے لوگ عوام کی نمائندگی کریں۔انہوں نے کہا کہ امید ہے عدالت کا فیصلہ سچ کے حق میں آئے گا، تاریخ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کا احتساب کرے گی۔ ہمارے قول و فعل میں تضاد نہیں ۔وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ الیکٹرانک ووٹنگ سے ووٹ کا نظام شفاف ہو جائے گا، ن لیگ نے 4 حلقے کھولنے پر ہمیں خوار کیا اور ہم نے مثبت طرز عمل کا مظاہرہ کیا۔ان کا کہنا تھا کہ عمران خان نے ڈسکہ میں 20 پولنگ اسٹیشنز پر دوبارہ پولنگ کا چیلنج قبول کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان اور ہماری حکومت فرسودہ روایات کو ختم کرے گی۔ پارلیمنٹ میں جو لوگ پیسے سے آتے ہیں ان کا جہوریت سے کوئی تعلق نہیں ہوتا۔شبلی فراز کا کہنا تھا کہ عمران خان اس ملک میں جمہوریت اور شفافیت چاہتے ہیں، ہم چاہتے ہیں جب الیکشن ہو جائے تو کوئی انگلی نہ اٹھائے۔

تازہ ترین خبریں