رات کے کھانے کے بعد معدہ دس گھنٹے تک خالی رہتا ہے ، اس حالت میں جوس پینے سے مضر صحت اجزا خون میں شامل ہوسکتے ہیں
  9  فروری‬‮  2018     |     سائنس/صحت

لاہور(نیٹ نیوز) اگر آپ ناشتے میں جوس پینے کے عادی ہیں تو فوری طور پر اس عادت کو ترک کردیں بصورت دیگر کئی امراض کا سامنا ہو سکتا ہے ،امریکہ میں ہونیوالی تحقیق کیمطابق رات کے کھانے کے بعد بھرپور نیند لینے تک آپ کا معدہ دس سے بارہ گھنٹے تک خالی

رہتا ہے ایسی حالت میں اگر خالی معدے میں جوس پی لیا جائے تو نظام ہاضمہ پر مضر اثرات مرتب ہوتے ہیں۔خالی پیٹ جوس پینے سے آپ کی صحت کو دو بڑے نقصانات کا احتمال رہتا ہے اول یہ معدے اور نظام ہاضمہ میں پائے جانے والے مفید بیکٹیریا کی کارکردگی کو متاثر کرتا ہے اور دوئم جوس میں بڑی مقدار میں فرکٹوس اور شوگر موجود ہوتی ہے جسے ہضم کرنے میں خالی معدہ ناکام رہتا ہے۔رات کے کھانے کے بعد ناشتے تک پیٹ دس سے بارہ گھنٹے خالی رہتا ہے اور ایسے موقع پر جوس پی لیا جائے تو جوس میں موجود بھاری مقدار شوگر کو خالی معدہ ہضم نہیں کر پاتا اور وہ فوری طور پر چھوٹی آنت میں فرکٹوس کی شکل میں پہنچ جاتی ہے اور بغیر ہضم ہوئے خون میں شامل ہو جاتی ہے جو نقصان کا سبب بنتی ہے۔ان حقائق کی روشنی میں ماہرین طب کا کہنا ہے کہ ناشتے میں خالی پیٹ جوس پینا صحت کیلئے مضر ثابت ہو سکتا ہے اس لئے تجویز کیا جاتا ہے کہ لوگوں کو خالی پیٹ جوس پینے سے اجتناب برتنا چاہیے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

سائنس/صحت

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved