02:12 pm
کیا کرکٹ میں واقعی کالا جادو اور عملیات کا عمل دخل شرو ع ہو گیا  حیران کن رپورٹ

کیا کرکٹ میں واقعی کالا جادو اور عملیات کا عمل دخل شرو ع ہو گیا حیران کن رپورٹ

02:12 pm

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) جادو ٹونا عام طور پر ایک ایسے تصور کے طور پر جانا اور سمجھا جاتا ہے جو کم پڑھے لکھے ، پسماندہ اور غریب علاقوں میں کافی زیادہ ہے۔ اسی طرح پڑوسی ملک کے ڈراموں میں بھی ایسے تصوارت کو فروغ دینے کی کوشش کی جاتی ہے۔ تاہم اب بین الاقوامی کرکٹ میں جادو ٹونے کا تصور تقویت حاصل کرنے لگ گیاہے۔ کرکٹ میں توہم پرستی اور ٹوٹکوں کی باتیں تو ماضی سے چلی آرہی ہیں ۔ مثال کے طور پرکسی بلے باز کا پہلے بائیاں پیڈ باندھنا ، یا بلا چومنا وغیرہ وغیرہ لیکن گزشتہ چند سالوں نے کالے جادو کا ذکرکئی
مخصوص مقامات اور کھلاڑیوں سے منسلک ہوکر شائقین کرکٹ تک پہنچ رہا ہے۔ پاکستانی بلے باز حارث سہیل دورہ جنوبی افریقا کو چھوڑ کر پاکستان واپس آئے تو افواہوں کی زد میں آ گئے۔ کہا گیا کہ حارث نے یہ دورہ چھوڑنے سے پہلے ٹیم انتظامیہ کو بتایا کہ وہ کالے جادو کی گرفت میں ہیں اور اس وجہ سے وہ دورہ درمیان میں ہی چھوڑ رہے ہیں۔ حالانکہ اس سے پہلے حارث سہیل کے پہلے ٹیسٹ کے بعد واپس لوٹنے کی وجہ ان کے گھٹنے کی چوٹ کو بتایا گیا تھا۔ بتایا گیا تھا کہ اس حوالے سے حارث سہیل کے دعویٰ کے بارے میں کوئی معلومات نہ دینے کا فیصلہ کیا گیا کیونکہ وہ کافی ذہنی کشیدگی سے گزر رہے تھے۔ حالانکہ حارث سہیل کے ساتھ یہ کوئی پہلا واقعہ نہیں تھا۔ اس سے پہلے سال 2015ء میں پاکستانی ٹیم کے نیوزی لینڈ دورے پر بھی حارث سہیل نے دعویٰ کیا تھا کہ کچھ جادوئی طاقتوں نے انہیں گھیر لیا تھا۔ حتیٰ کہ سہیل نے ہوٹل کا کمرہ بھی اس کی وجہ سے بدل لیا تھا اور کچھ وقت بعد پریشان ہو کر درمیان میں ہی دورہ چھوڑ کر واپس لوٹنا پڑ گیا تھا۔ 2017ء میں سری لنکا کے کپتان چندیمل نے خود دعویٰ کیا تھا کہ ان کی ٹیم نے پاکستان کے خلاف یو اے ای میں ہونیوالی دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز کو جادو ٹونے کی مدد سے جیتا تھا۔ دنیش چندیمل اپنے دوست کی ماں گنگا جوجیا سے جادو ٹونے کی مدد لیتے رہے ہیں۔ خود خاتون تانترک نے بھی دعویٰ کیا تھا کہ سری لنکا کے ٹیسٹ کپتان دنیش چندیمل ٹیسٹ سیریز جیتنے کیلئے ان کے پاس آئے اور پاکستانی ٹیم پر جادو کرایا تھا۔

تازہ ترین خبریں