10:26 am
ورلڈ کپ سکواڈ کا حصہ بننے کیلئے فٹنس کا پیمانہ مقرر

ورلڈ کپ سکواڈ کا حصہ بننے کیلئے فٹنس کا پیمانہ مقرر

10:26 am

اسلام آباد(نیو زڈیسک) فٹنس ٹیسٹ میں ناکام ہونے پر میگا کرکٹ ایونٹ کی ٹرین مس ہو جائے گی۔ حارث سہیل اور رضوان کی کارکردگی پر ٹیم مینجمنٹ کا اظہار اطمینان، گرانٹ فلاور نے بیٹنگ لائن کے کمزور ہونے کا تاثر مسترد کر دیا۔قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور نے ورلڈ کپ کیلئے بیٹنگ لائن کے کمزور ہونے کے تاثر کو مسترد کر دیا ہے۔ لاہور میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے آسٹریلیا کیخلاف ون ڈے سیریز
میں وائٹ واش کے باوجود قومی بیٹسمینوں کی کارکردگی کو تسلی بخش قرار دیا۔ورلڈ کپ کیلئے قومی ٹیم میں منتخب ہونے کیلئے کھلاڑیوں کے سامنے فٹنس کو بینچ مارک مقرر کیا گیا ہے اور کھلاڑیوں کو بتا دیا ہے کہ یویو ٹیسٹ میں انہیں 17.4 پوائنٹس حاصل کرنا ہوں گے، تب ہی وہ فٹ قرار دئیے جائیں گے ورنہ میگا ایونٹ کی ٹرین مس ہو جائیگی۔ایک سوال پر بیٹنگ کوچ کا کہنا تھا کہ وہ کھلاڑیوں کے ساتھ انجوائے کرتے ہیں اور آئندہ بھی یہ سلسلہ جاری رہے گا۔ گرنٹ فلاور نے امید ظاہر کی کہ ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرے گی اور بیٹنگ لائن بھی مایوس نہیں کرے گی۔گرانٹ فلاور نے کہا کہ مقابلوں میں ٹیم کے زیادہ تر اہم کھلاڑی آرام کر رہے تھے اور بیک اپ پلیئرز کو صلاحیتوں کے اظہار کا موقع دیا گیا۔ آسٹریلیا کیخلاف ون ڈے سیریز میں بیٹنگ لائن پر تنقید بھی غیر ضروری ہے۔انہوں نے بتایا کہ آسٹریلین ٹیم اپنی مشکلات پر قابو پا چکی ہے تاہم اسے ہرانا ہمیشہ سے مشکل رہا ہے۔ کینگرو زکیخلاف سیریز میں پاکستانی بیٹسمینوں نے عمدہ کارکردگی دکھائی۔ وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان نے سیریز میں دو سنچریاں بنائیں جو کہ خوش آئند بات ہے۔ان کا کہنا تھا کہ حارث سہیل ورلڈ کلاس پلیئر ہیں اور انہوں نے بھی دو سنچریاں بنا کر اس بات کو ثابت کیا جبکہ عابد علی کی کارکردگی غیر متوقع تھی کیونکہ نوجوان بیٹسمین کے ساتھ زیادہ کام نہیں کیا اور شارجہ میں عابد علی فٹنس ٹیسٹ میں بھی ناکام ہو گئے تھے، اس لئے ان سے سنچری کی توقع نہیں تھی۔ گرانٹ فلاور کا کہنا تھا کہ شارجہ میں کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ لئے گئے تھے اور کچھ کھلاڑی ٹیسٹ پاس نہیں کر سکے

تازہ ترین خبریں