09:58 am
 ورلڈکپ سے پہلے قومی کھلاڑیوں پر بڑی پابندی لگا دی گئی

 ورلڈکپ سے پہلے قومی کھلاڑیوں پر بڑی پابندی لگا دی گئی

09:58 am


اسلام آباد(نیو زڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ 2019ءکے دوران کھلاڑیوں پر اہل خانہ کو ساتھ رکھنے کی پابندی عائد کر دی ہے۔نجی ٹی وی کے مطابق پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ بند ہونے کے بعد جب متحدہ عرب امارات (یو اے ای) کو ہوم گراؤنڈ کا درجہ دیا گیا تو مصباح الحق کے کپتان بنتے ہی غیر ملکی دوروں کے دوران اہل خانہ کو ساتھ رکھنے کی روایت بھی چل پڑی جبکہ ٹیم کے اہل خانہ کے ساتھ ٹیم مینجمنٹ کے اہل خانہ بھی تواتر کے ساتھ دورے کرنے لگے۔
پی سی بی نے غیرملکی دوروں پر کھلاڑیوں کے اہل خانہ کو جانے سے روکا تو بورڈ اور کھلاڑیوں کے درمیان تناؤ کی کیفیت پیدا ہوئی لیکن اب ایک مرتبہ پھر پی سی بی نے ورلڈ کپ کے لئے قومی ٹیم کے کھلاڑیوں کو اپنے اہل خانہ کو ساتھ لے جانے کی پابندی عائد کر دی ہے جس کے باعث ایک مرتبہ پھر تناؤ کی کیفیت پیدا ہو گئی ہے۔بورڈ نے کھلاڑیوں پر واضح کیا ہے کہ قومی ٹیم کے کھلاڑی ورلڈکپ سے قبل انگلینڈ کے خلاف سیریز کے دوران تو اہلیہ اور بچوں کو ساتھ رکھ سکتے ہیں تاہم دوران ورلڈکپ انہیں اہل خانہ کو ساتھ رکھنے کی اجازت نہیں ہو گی اور اس فیصلے پر کھلاڑی خوش دکھائی نہیں دیتے جن کا موقف ہے کہ قومی ٹیم نے ورلڈ کپ کا آخری گروپ میچ بنگلہ دیش کے خلاف 5 جولائی کو کھیلنا ہے، اور اگر ٹیم فائنل میں پہنچی تو 15 جولائی کو وطن واپسی ہوگی۔اس طرح یہ دو ماہ طویل دورہ بنتا ہے اور اس دوران اہل خانہ اور بچوں کو ساتھ نہ رکھنے کی اجازت دینا افسوسناک ہے۔ یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ 2019ءمیں انگلینڈ ہی میں کھیلی گئی چیمپینز ٹرافی کے دوران کھلاڑیوں کے اہل خانہ ان کیساتھ موجود تھے۔