10:10 am
انتخاب عالم کو حفیظ کاردار نے کیسے منتخب کیا؟

انتخاب عالم کو حفیظ کاردار نے کیسے منتخب کیا؟

10:10 am

اسلام آباد(نیو زڈیسک) پاکستان جب معرض وجود میں آیا اس وقت انتخاب عالم پانچ سال کے تھے۔ ان کا خاندان شملہ میں رہائش پذیر تھا۔ والد الیکٹریکل انجینئر تھے۔انتخاب عالم اس سکول الیون ٹیم کے کپتان تھے جس نے انٹرسکول الیون ٹورنامنٹ جیتا تھا۔ وہ کراچی سی کی جانب سے چند فرسٹ کلاس میچز بھی کھیل چکے تھے لیکن کمبائنڈ سکول الیون کے سلیکٹرز انہیں اپنی ٹیم میں منتخب نہیں کرتے تھے جس کا انتخاب عالم کو بہت افسوس تھا۔
ان کے بڑے بھائی نیٹ میں پاکستان کی قومی کرکٹ ٹیم کو باؤلنگ کرایا کرتے تھے۔ ایک دن انتخاب عالم بھی ویسے ہی باؤلنگ کرانے چلے گئے۔ یہ 1958ء کی بات ہے۔جب انہوں نے باؤلنگ کرانا شروع کی تو عبدالحفیظ کاردار نے انہیں بغور دیکھنا شروع کیا۔ جوں ہی انتخاب عالم نے وزیر محمد( جنہوں نے حال ہی میں ویسٹ انڈیز کیخلاف ٹیسٹ میں 189رنز بنائے تھے) کو آؤٹ کیا تو حفیظ کاردار بہت متاثر ہوئے اور انہوں نے انتخاب عالم کو بلایا، نام پوچھا اور کہا کیا تم کل سکول الیون کیلئے کھیل رہے ہو؟انتخاب نے کہا ’’نہیں سر‘‘، حفیظ کاردار نے کہا اوہ، پھر تم کل پاکستان کی طرف سے کھیلو گے۔ انتخاب عالم کا کہنا ہے کہ یہ سن کر مجھے یقین نہیں آیا میں نے خود کو چاند پر محسوس کیا۔اگلی صبح انتخاب عالم کراچی سٹیڈیم پہنچے تو کمبائنڈ سکول الیون کے سلیکٹرز نے کہا انتخاب تم ادھر کیا کر رہے ہو؟ انتخاب عالم نے کہا میں آپ کی طرف سے نہیں کھیلنے کیلئے آیا میں پاکستان کی طرف سے کھیلوں گا۔ بس یہ سننا تھا کہ سلیکٹرز حیران رہ گئے، انہیں یقین ہی نہیں آیا۔

تازہ ترین خبریں