02:50 pm
کپتانی جانے کا اندازہ ہوگیاتھا ، خود کوذہنی طور پر تیار رکھا ہوا تھا،

کپتانی جانے کا اندازہ ہوگیاتھا ، خود کوذہنی طور پر تیار رکھا ہوا تھا،

02:50 pm

کراچی(نیوز ڈیسک) سابق کپتان پاکستان کرکٹ ٹیم سرفراز احمد نے کہا ہے کہ جو حالات تھے اس سے اندازہ ہوگیا تھا کہ کپتانی جانے والی ہے۔سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ کپتانی سے ہٹائے جانے کے لیے ذہنی طور پر تیار تھا کیوں کہ جو حالات تھے، اس سے اندازہ ہوگیا تھا کہ میری کپتانی جانے والی ہے۔انہوں نے کہا کہ سب نے ڈومیسٹک کرکٹ پر توجہ دینے کا مشورہ دیا ہے جس کے بعد ساری توجہ ڈومیسٹک کرکٹ پر مرکوز ہے
۔سینٹرل کنٹریکٹ کے حوالے سے سرفراز کا کہنا تھا کہ ابھی وہ سینٹرل کنٹریکٹ میں شامل ہیں اور ڈومیسٹک کھیلنے پر آدھی فیس ملتی ہے۔خیال رہے کہ سابق کپتان قائد اعظم ٹرافی کے 7 ویں راؤنڈ کے میچ میں سندھ کے کپتان ہیں اور انہوں نے گزشتہ دنوں فرسٹ کلاس کرکٹ میں 5 سال بعد سنچری سکور کی ہے۔پاکستان کرکٹ بورڈ نے سری لنکا کے خلاف ٹی ٹونٹی سیریز میں کلین سویپ شکست کے بعد سرفرازاحمد کو تینوں فارمیٹ کی کپتانی سے فارغ کردیا تھا جس کے بعد سے وہ ڈومیسٹک کرکٹ کھیل کر فارم کی بحالی کے لیے کوشاں ہیں ۔

تازہ ترین خبریں