02:59 pm
 ہائیبرڈ وار: پاکستان کو کیا کرنا چاہیے؟

ہائیبرڈ وار: پاکستان کو کیا کرنا چاہیے؟

02:59 pm

ایک جانب جہاں عالمگیریت کی بنیاد پر  دنیا کے مختلف  لوگوں کو یک جا کیا گیا ، وہیں مختلف ممالک نے اسی تصور کے تحت گروہ بندی کرکے دنیا پر اپنی بالادستی جمانے کے لیے اس تصور کا بے دریغ استعمال کیا۔ شام، عراق، افغانستان اور یمن میں ہم طاقت کے لیے کھینچ تان کو اس کی مثال کے طور پر دیکھ سکتے ہیں۔ اکثر اب روایتی جنگیں ’’ہائبرڈ جنگ‘‘ کے ساتھ نہیں چل پاتیں اور اس وقت دنیا کو اپنی لپیٹ میں لیے ہوئے ہیں۔ 
 
ہائبرڈ وار فیئر کی حکمت عملی میں اقتصادی، سیاسی اور سفارتی حربوں کا استعمال ہوتے ہیں، جن کے تحت پابندیاں اور کسی ملک کے سیاسی عمل میں مداخلت شامل ہے۔ اسی طرح روایتی جنگی حربوں کے ساتھ اس کا امتزاج تیار کرنے کے لیے حزب اختلاف کے گروہوں کو مسلح کیا جاتا ہے، سائبر حملے اور دیگر ہتھیار بھی اس حکمت عملی میں شامل ہوتے ہیں۔ خبروں میں جعل سازی، مسخ شدہ خبریں، سوشل میڈیا اور خفیہ اداروں کی کارروائیاں بھی اس کے اہم ہتھیار ہیں۔ ٹیکنالوجی کی ترقی کی وجہ سے مختلف مقاصد کے لیے ان ہتھیاروں کو یک جا کرکے استعمال کرنا آسان ہوگیا ہے، بیک وقت مختلف حربے استعمال کیے جاسکتے ہیں اور درپیش صورت حال سے ان کی مطابقت بھی پیدا کی جاسکتی ہے۔پاکستان جیسے ممالک کے لیے اس میں بالخصوص یہ خطرہ ہے کہ یہاں دہشت گردی کو اس جنگ کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔ یہ ایک معلوم حقیقت ہے کہ اسامہ بن لادن القاعدہ کے عفریت کو پیدا کرنے والوں کے قابو سے باہر ہونے سے پہلے سوویت یونین کے خلاف مغرب کے آلہ کار کے طور پر استعمال ہوا۔ یہ بھی سب جانتے ہیں کہ عراق پر امریکی جارحیت کے لیے جعلی خبروں کو بنیاد بنایا گیا جس کے نتیجے میں صدام حسین کی حکومت کا  تختہ الٹایا  گیا اور شیعہ مسلح تحریکوں کو کچلنے کے لیے اس کی سنّیوں کی اکثریت رکھنے والی فوج کے افسران اور سابق اہل کاروں پر مشتمل داعش جیسی تنظیم کھڑی کی گئی۔  
خفیہ مداخلت جنگی حربوں میں کوئی نیا طریقہ نہیں۔ سوشل میڈیا ، انٹرنیٹ کی مدد سے حاصل ہونے والی کثیر معلومات کے ذریعے پروفائلنگ اور صارفین کی پسندو ناپسند تک رسائی کے بعد اس کی رفتار میں اضافہ ہوا۔ اس معلومات  سے  استعمال کنندگان کا سیاسی رجحان معلوم کرنا اب مشکل نہیں۔ پاکستان کو 1980ء سے ہائیبرڈ جنگ کا سامنا ہے لیکن بظاہر ہم نے اس کے مقابلے کے لیے کوئی حکمت عملی ترتیب نہیں دی۔ اس کی مختلف وجوہ ہیں۔ بنیادی ترین وجہ تو یہ ہے کہ برصغیر میں سمجھ بوجھ کا استعمال کرنے کے بجائے افواہوں اور افسانوں پر کان دھرنے کا رجحان عام ہے، اس کے ساتھ ہمارے ہاں عوام میں آگاہی کی بہت کمی ہے، وہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان، خزانہ و خارجہ کی وزارتوں وغیرہ جیسے  سرکاری اداروں اور مناصب کی عوام مفاد سے متعلق اہمیت کا ادارک نہیں رکھتے۔
پاکستان کی جانب سے کسی بھی دہشت گردی سے خود کو دور رکھنے اور افغانستان میں امن عمل کی حمایت کے فیصلے نے ہمارے لیے عالمی برادری میں بہتر تعلقات کیلئے نئے در وا کیے۔ اس مثبت پیش رفت کے باوجود ہائبرڈ جنگ کا خطرہ ٹلا نہیں بلکہ اس میں شدت آتی جارہی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ پاکستان پر ان جنگی حربوں کے ذریعے ہونے والے حملوں کو روکنے کیلئے باقاعدہ حکمت ترتیب دینی پڑے گی۔ مگر یہ کیسے ممکن ہوگا؟ ظاہر ہے کہ سب سے پہلے  سرکاری اداروں اور عوامی سطح پر ہائبرڈ وارفیئر سے متعلق آگاہی عام کی جائے۔ یہ جنگ صرف فوج یا قومی سلامتی کے ادارے تنہا نہیں لڑ سکتے، اس کیلئے اجتماعی آگاہی اور اقدامات کی ضرورت ہوگی۔ اس کے لیے حکومت کا اعتماد بحال کرنے کی ضرورت ہے اور میڈیا کو تصدیق شدہ معلومات کی فراہمی یقینی بنانا چاہیے۔ جھوٹ اور اشتعال انگیزی کو بے نقاب کرنے اور اس پر فوری سزاؤں میں کوئی رعایت نہیں دینا چاہیے۔ سرکاری اور ریاستی اداروں کو خطرات اور انسدادی حکمت عملی سے متعلق آگاہ رکھا جائے۔ اگر کسی ایسے کمپیوٹر وائرس کی تشخیص ہوجائے جو نجی معلومات یا اداروں کے پروگرامز کو متاثر کرسکتے ہوں، یا کرنسی کی قدر میں ردوبدل کے لیے کی جانے والی خفیہ چالبازی سے متعلق معلومات حاصل ہوں تو انھیں عوام کے سامنے لانا چاہیے، اس کے لیے نہ صرف انتباہ جاری ہو بلکہ انسداد کے لیے حکمت عملی بھی وضع کی جائے۔ 

تازہ ترین خبریں

ملک بھر میں سخت پابندی ۔۔۔ وفاقی حکومت نے صوبوں کو ہدایت جاری کردیں۔کیاہونےوالاہے؟پوری قوم کیلئے بڑی خبر

ملک بھر میں سخت پابندی ۔۔۔ وفاقی حکومت نے صوبوں کو ہدایت جاری کردیں۔کیاہونےوالاہے؟پوری قوم کیلئے بڑی خبر

 امریکامیں 2روزہ ماحولیاتی کانفرنس 2021کاآغازہوگیا ۔۔پاکستان کی بھی شرکت 

 امریکامیں 2روزہ ماحولیاتی کانفرنس 2021کاآغازہوگیا ۔۔پاکستان کی بھی شرکت 

پی ڈی ایم جماعتوں کی عیدالفطر کے بعد لانگ مارچ کی تیاری شروع

پی ڈی ایم جماعتوں کی عیدالفطر کے بعد لانگ مارچ کی تیاری شروع

دیر لگی مگر آخر کار ! وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار خوشی سے نہال ، پاکستانیوں کو زبردست خوشخبری سنا دی گئی

دیر لگی مگر آخر کار ! وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار خوشی سے نہال ، پاکستانیوں کو زبردست خوشخبری سنا دی گئی

کراچی میں لاک ڈاؤن۔۔ ٹرانسپورٹ پربھی پابندی۔۔۔ وزیرصحت سندھ کے اعلان نے عوام پر بجلیاں گرادیں

کراچی میں لاک ڈاؤن۔۔ ٹرانسپورٹ پربھی پابندی۔۔۔ وزیرصحت سندھ کے اعلان نے عوام پر بجلیاں گرادیں

گواد ر انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے ترقی کے نئے دور کی شروعات ہوگی ۔۔۔ جام کمال کی اہم شخصیت سے ملاقات کے وقت بیان 

گواد ر انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے ترقی کے نئے دور کی شروعات ہوگی ۔۔۔ جام کمال کی اہم شخصیت سے ملاقات کے وقت بیان 

صحافی نے تحریک انصاف کے وزیر سے سوال کیا تو انہوںنے ایسا جواب دیا کہ تمام پاکستانی ارتھ ہو کر  رہ گئے

صحافی نے تحریک انصاف کے وزیر سے سوال کیا تو انہوںنے ایسا جواب دیا کہ تمام پاکستانی ارتھ ہو کر رہ گئے

پارٹی ورکر ہوں کسی لوٹے کی بیٹی نہیں ، ن لیگ کو زبردست جھٹکا ، اہم ترین خاتون رہنما نے ن لیگ سے استعفیٰ دیدیا

پارٹی ورکر ہوں کسی لوٹے کی بیٹی نہیں ، ن لیگ کو زبردست جھٹکا ، اہم ترین خاتون رہنما نے ن لیگ سے استعفیٰ دیدیا

اسلام آباد پولیس کی ایک اور ذبردست کاروائی ۔۔۔۔ کار چوری میں ملوث منظم گینگ کے 5 کارچور گرفتارکرلئے گئے 

اسلام آباد پولیس کی ایک اور ذبردست کاروائی ۔۔۔۔ کار چوری میں ملوث منظم گینگ کے 5 کارچور گرفتارکرلئے گئے 

خیبر پختونخوا میں مزید 39 افراد جاں بحق ہوگئے ۔۔ انتہائی افسوس ناک خبر 

خیبر پختونخوا میں مزید 39 افراد جاں بحق ہوگئے ۔۔ انتہائی افسوس ناک خبر 

56 بچے متاثر ۔۔۔۔ شہراقتدار سے انتہائی بری خبر آگئی

56 بچے متاثر ۔۔۔۔ شہراقتدار سے انتہائی بری خبر آگئی

کورونا ڈیوٹی کرنے والے ڈاکٹر نے خود کشی کی ۔۔۔ وجہ کیا بنی ؟؟ انتہائی  ہوشربا انکشاف

کورونا ڈیوٹی کرنے والے ڈاکٹر نے خود کشی کی ۔۔۔ وجہ کیا بنی ؟؟ انتہائی ہوشربا انکشاف

اب عوام کو یہ چیز ہر صورت میں ملے گی ۔۔۔ وزیراعظم نے اہم اعلان کردیا

اب عوام کو یہ چیز ہر صورت میں ملے گی ۔۔۔ وزیراعظم نے اہم اعلان کردیا

خاتون کا ٹیکسی ڈرائیور پر وحشیانہ تشدد ۔۔۔۔ ویڈیو وائرل ہوگئی ۔۔۔۔ وجہ کیا بنی ؟؟ْ۔۔۔انتہائی دلچسپ خبر

خاتون کا ٹیکسی ڈرائیور پر وحشیانہ تشدد ۔۔۔۔ ویڈیو وائرل ہوگئی ۔۔۔۔ وجہ کیا بنی ؟؟ْ۔۔۔انتہائی دلچسپ خبر