12:46 pm
عبداللہ عبداللہ، امن کا نقیب؟

عبداللہ عبداللہ، امن کا نقیب؟

12:46 pm

 (گزشتہ سے پیوستہ)
افغانستان میں ہونے والے دونوں انتخابات میں غنی اور عبداللہ عبداللہ کے درمیان کانٹے کا مقابلہ رہا۔خیال رہے کہ اشرف غنی دسمبر 2001 ء میں چوبیس سال بعد، یواین اور ورلڈ بینک میں اپنی ملازمت چھوڑ کرافغانستان لوٹے تھے۔وہ صدر،حامد کرزئی کے چیف ایڈوائزر کے عہدے پر فائز ہوئے۔دوسری جانب عبداللہ عبداللہ ناردرن الائنس کے سینئر رکن تھے اور 2001 ء سے پہلے احمد شاہ مسعودکے مشیر رہے۔ پانچ برس وزیر خارجہ کا منصب سنبھالنے کے بعد وہ  حامد کرزئی سے الگ ہوئے۔ انہوں نے دو بار اشرف غنی کے خلاف صدارتی الیکشن لڑا۔دونوں ہی موقعوں پر مقابلہ انتہائی قریبی رہا۔ انتخابات اور ووٹوں کی گنتی پر تحفظات کے بنیاد پر انہوں نے نتائج کو رد کرتے ہوئے اپنے طو رپر صدر کا حلف اٹھا لیا تھا۔ 
 
2007ء سے 2012ء کے دوران معتبر امریکی تھنک ٹینک ’’ایس ویسٹ انسٹی ٹیوٹ ‘‘(EWI)کی جانب سے “Afghanistan Re-Connected” کے عنوان سے مذاکروں کا سلسلہ شروع ہوا۔ مجھے برسلز اور برلن کے لیے  EWIکا ڈائریکٹر نامزد کیا گیا۔ وہاں مجھے غنی اور عبداللہ عبداللہ سے طویل مکالمے کا موقع ملا۔ دونوں ہی صاحبان کی افغان اور بین الاقوامی ایشوز پر شان دار گرفت ہے البتہ میں نے عبداللہ عبداللہ کو ہمیشہ معتدل، متوازن اور سہل پایا۔ 
یہ اتفاق ہی تھا کہ برلن سے دبئی لوٹتے ہوئے عبداللہ عبداللہ میری ساتھ والی نشست پر براجمان تھے۔ میں نے ان سے پوچھا،’ آپ نے پاکستان کے ساتھ تعمیری تعلقات استوار کیوں نہیں کیے؟‘ ان کے جواب نے مجھے چونکا دیا۔ ان کا کہنا تھا،’ اگر ہم چاہیں بھی تو کیاپاکستان ہم سے بات کرے گا؟‘جب میں نے پاکستان میں طاقت کے مراکز سے رابطہ کیا، اس پیغام کے ساتھ کہ عبداللہ عبداللہ دیگر افغانوں کے برعکس زیادہ عملی ہے، گو اسے چند شکایات ہیں، تو مجھے خاموش رہنے کی ہدایت کر دی گئی۔
امن مذاکرات کے ابتدائی متنازع دنوں کے بعد اب عبداللہ عبداللہ پاکستان کے دورے پرآئے ہیں۔ ایک نوجوان ڈاکٹر کی حیثیت سے انہوں نے 85ء میں کچھ عرصے یہاں کام کیا تھا۔ اس دورے سے ہمیں اپنی سابق افغان پالیسی پر نظر ثانی کرنے اوراسے بہتر بنانے کا نادر موقع ملتا ہے ۔پاکستان ایک پرامن افغانستان کا خواہش مند ہے۔ افغانستان ہمارا پڑوسی ہے اور یہ حقیقت کبھی تبدیل نہیں ہوسکتی۔ روس اور وسطی ایشیا کے درمیان مرکزی لنک کی حیثیت کا حامل افغانستان اس خطے میں پانی اور توانائی کی پالیسی میں کلیدی حیثیت کا حامل ہے ۔سی پیک اور اس کی ایرانی توسیع افغانستان کو اہم شاہ راہ بنا دیتی ہے۔ اگر افغانستان میں امن ہوگیا، تو دو ملین افغان پناہ گزین بھی واپس لوٹ جائیں گے، جس سے پاکستانی معیشت پر بوجھ کم ہوگا۔ 
افغان امریکہ  امن معاہدے کے نتیجے میں امریکی فوج کا افغانستان سے انخلا صدر ٹرمپ کی ‘America first’پالیسی کا تسلسل ہے ۔امریکی فوج اس سے خوش نہیں۔ وہ کچھ دستے پیچھے چھوڑنا چاہے گی۔ امکان ہے کہ امریکی انخلاء  کے بعد بھی لڑائی جاری رہے۔ایسے میں کوئی نہیں چاہے گاکہ افغانستان کا موجودہ حکومتی ڈھانچہ ڈھے جائے اور ایک خلا پیدا ہوجائے۔ اس لیے امریکی فوج کے چند دستوں کی موجودگی ضروری ہے۔اشرف غنی عبداللہ عبداللہ کے مقابلے میں امریکیوں کے لیے زیادہ موزوں ثابت ہوئے۔ شائد یہی وجہ ہے کہ ووٹوں کی گنتی ان کے حق میں گئی البتہ غنی کے مقابلے میں عبداللہ عبداللہ کی زمین میں جڑیں زیادہ گہری ہیں۔ اول الذکر آج نہیں تو کل، امریکہ لوٹ جائیں گے۔ ایک آزاد حکومت ہی افغانستان اور خطے کے لیے موزوں ہے۔ 
ایک باہم مربوط دنیا میں امن مذاکرات، جنہیں بھارت ہر صورت سبوتاژ کرنے کے درپے ہوگا، نہ صرف ہمارے، بلکہ پورے خطے کے مفاد میں ہیں۔دفتر خارجہ اورآئی ایس آئی اس انتہائی اہم اقدام کے لیے تعریف کے مستحق ہیں۔ ہم امن کے ممکنہ نقیب کے طور پر عبداللہ عبداللہ کو پاکستان میں خوش آمدید کہتے ہیں۔
 (فاضل کالم نگار سیکیورٹی اور دفاعی امور کے تجزیہ کار ہیں)

تازہ ترین خبریں

اسلام آباد کی سڑک پر 50کے نوٹ بکھرتے ہی راہگیر ٹوٹ پڑے

اسلام آباد کی سڑک پر 50کے نوٹ بکھرتے ہی راہگیر ٹوٹ پڑے

پنجاب میں ٹرانسپورٹ چلانے کی تاریخ میں توسیع

پنجاب میں ٹرانسپورٹ چلانے کی تاریخ میں توسیع

شوال المکرم کا چاند دیکھنے کےلئے رویت ہلال کمیٹی کا اجلاس  طلب

شوال المکرم کا چاند دیکھنے کےلئے رویت ہلال کمیٹی کا اجلاس طلب

سندھ میں چھ بجتے ہی شاپنگ کےلئے دی گئی مہلت ختم

سندھ میں چھ بجتے ہی شاپنگ کےلئے دی گئی مہلت ختم

سابق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے فنڈز کے ناجائز استعمال کا انکشاف

سابق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے فنڈز کے ناجائز استعمال کا انکشاف

بھارت سے آنے والے طیارے کی پاکستان میں ایمرجنسی لینڈنگ،

بھارت سے آنے والے طیارے کی پاکستان میں ایمرجنسی لینڈنگ،

اسلام آباد میں حساس ادارے کاسابق آفیسر فائرنگ سے قتل

اسلام آباد میں حساس ادارے کاسابق آفیسر فائرنگ سے قتل

سعودی عرب پاکستان کو 500ملین ڈالرز دے گا، وزیر خارجہ

سعودی عرب پاکستان کو 500ملین ڈالرز دے گا، وزیر خارجہ

حکومت کا شہبازشریف کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کےفیصلے کے خلاف عدالت جانے کا اعلان

حکومت کا شہبازشریف کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کےفیصلے کے خلاف عدالت جانے کا اعلان

ملک بھر میں تعلیمی اداروں کی بندش کی تاریخ آگے بڑھا دی گئی

ملک بھر میں تعلیمی اداروں کی بندش کی تاریخ آگے بڑھا دی گئی

والدین کو گھر سے نکالنا پاکستان میں قابل سزا جرم قرار

والدین کو گھر سے نکالنا پاکستان میں قابل سزا جرم قرار

ضلع مہمند میں ٹینک کی دیوار گرنے سے سات بچے جاں بحق

ضلع مہمند میں ٹینک کی دیوار گرنے سے سات بچے جاں بحق

یا اللہ خیر۔۔۔ پورے گاوں میں ماتم۔۔۔ایک ساتھ سات بچے جاں بحق۔۔۔وجہ کیا بنی؟

یا اللہ خیر۔۔۔ پورے گاوں میں ماتم۔۔۔ایک ساتھ سات بچے جاں بحق۔۔۔وجہ کیا بنی؟

راستہ جلدی کیوں نہیں دیا ، جدہ ٹاون میں کار سواروں کی فائ ر نگ۔۔۔۔۔ایک ہلاک ۔۔۔ زخمیوں کی اطلاعات

راستہ جلدی کیوں نہیں دیا ، جدہ ٹاون میں کار سواروں کی فائ ر نگ۔۔۔۔۔ایک ہلاک ۔۔۔ زخمیوں کی اطلاعات