01:06 pm
علاقائی تعصب اور مذہبی منافرت قومی سلامتی کیلئے زہر قاتل

علاقائی تعصب اور مذہبی منافرت قومی سلامتی کیلئے زہر قاتل

01:06 pm

اس وقت گریٹر مڈل ایسٹ ریجن (GMER) کی مسلمان ریاستوں میں فرقہ وارانہ اور علاقائی تفرقہ اپنے عروج پر ہے۔مشرق وسطیٰ عظمیٰ جسے گریٹر مڈل ایسٹ بھی کہا جاتا ہے اکیسویں صدی کی پہلی
اس وقت گریٹر مڈل ایسٹ ریجن (GMER) کی مسلمان ریاستوں میں فرقہ وارانہ اور علاقائی تفرقہ اپنے عروج پر ہے۔مشرق وسطیٰ عظمیٰ جسے گریٹر مڈل ایسٹ بھی کہا جاتا ہے اکیسویں صدی کی پہلی دہائی میں دوسری بش انتظامیہ کی طرف سے استعمال کی گئی اصطلاح ہے جو عالم اسلام کے ممالک خاص طور پر سعودی عرب، ایران، ترکی، افغانستان اور پاکستان کے لئے بنائی گئی ہے۔ بعض مفکر اسے اہم مسلم اکثریت والے علاقوں کے لئے بھی استعمال کرتے ہیں۔ان ممالک میں فرقہ وارانہ اور علاقائی تفرقے سے مسلمانوںکے درمیان خلیج وسیع سے وسیع تر ہوتی جا رہی ہے۔پاکستان جیسے ممالک کو چاہیے کہ ان بدلتے حالات پر نظر رکھے اور اس سے سبق حاصل کرنے کی کوشش کرے۔امریکہ اور اسرائیل کے اتحاد نے ان ممالک کی کمزوریوں کا بھرپور فائدہ اٹھایا ہے جس کی وجہ سے یہ ممالک عرب اور غیر عرب اور شیعہ سنی میں تقسیم ہوئے رہتے ہیں۔پاکستا ن بھی ایسی ہی صورت حال سے دوچار ہے۔لاکھ کوشش کے باوجود پاکستان علاقائی تعصب اور فرقہ وارایت سے پوری طرح نکل نہیں سکا جس کا بھرپور فائدہ  بھارت اٹھا رہا ہے اور اسے پاکستان کے خلاف ہائبرڈ وار میں ایک ہتھیار کے طورپراستعمال کر رہا ہے۔اس مقصد کے لئے بھارت بی ایل اے،بی ایل ایف، پی ٹی ایم او ر سندھو دیش لبریشن آرمی جیسی طاقتوں کو استعمال کر تا ہے۔
لشکر جھنگوی، سپاہ صحابہ اور سپاہ محمد جیسی قوتیں بھی بھارت کے استعمال میں رہتی ہیں۔بدقسمتی یہ ہے کہ یہ قوتیں کسی اور کی جنگ پاکستان کی سرزمین پر لڑتی ہیں۔را (بھارت) اور این ڈی ایس (افغانستان) ان قوتوں کی فنڈنگ کرتے ہیں، انہیں تربیت دیتے ہیں اور انہیںہتھیار فراہم کرتے ہیں تاکہ وہ پاکستان میں تخریبی کارروائیاں سر انجام دے سکیں۔یہ قوتیں پاکستان کی سالمیت اور معیشت کو تباہ کرنا چاہتی ہیں۔ابھی تک یہ فرقہ وارانہ، علاقائی تعصب اور دہشت گردگروپ الگ الگ کام کر رہے ہیں۔پاکستان کی کوششیں ہونی چاہیے کی یہ گروپ آپس میں ملنے نہ پائیں۔اس سے پہلے فاٹا میں یہ قوتیں مل کر کام کرتی رہی ہیں۔را اور این ڈی ایس کے کارندے مل کر کسی ایک فرقے کے گائوں پر حملہ آور ہوتے۔ وہاں پر گولہ باری اور فائرنگ کرتے اور پھر یہی کارروائی دوسرے فرقے کے گائوں پر دہراتے ۔ اس کا نتیجہ یہ نکلتا کہ دونوں فرقے آپس میں نہ ختم ہونے والی ایک لڑائی میں الجھ کر اپنا نقصا ن کرا لیتے۔بھارت ابھی بھی یہی حکمت عملی اپنا کر ہم میں فرقہ وارانہ فسادات کروا سکتا ہے۔ پاکستان کو چوکنا رہنا ہو گا۔ان قوتوں کو اس طرح کے کھیل کھیلنے سے روکنا ہو گا۔ان قوتوں کو آپس میں ملنے سے روکنا ہو گا۔آپریشن ضرب عضب اور ردلفساد کی کامیابیوں کو ضائع ہونے سے بچانا ہو گا۔ 
پاکستان کو تمام علاقائی اور فرقہ وارانہ قوتوں پر قابو پانا ہو گا جس کے لئے دہشت گردوں کے خلاف مسلسل آپریشن کرنے کی ضرورت ہو گی۔ایران اور افغانستان کی سرحد پر باڑ لگانے کی کارروائی جلد مکمل کرنی ہو گی۔وزارت داخلہ اور وزارت مذہبی امور کے تحت ایک پاور فل اور با اختیار ادارہ تشکیل دیاجانا چاہیے جس میں وفاقی اور صوبائی سطح پر با اختیار حکومتی اہلکار متعین ہو جن کی معاونت مختلف مکاتب فکر کے جید علماء، قانون نافذ کرنے والے ادارے اور انٹیلی جنس کے ذمہ داران کریں۔اس ادارے کی ذیلی شاخیں ڈویثرن اور ضلع کی سطح تک پھیلی ہو تاکہ معاملات کو بہتر طریقے سے چلایا جا سکے۔یہ ادارہ مختلف فرقوں کے درمیان ہم آہنگی پیدا کرے۔یہی وہ جگہ ہو جہاں چھوٹی موٹی شکایات بھی درج کرائی جا سکیں اور یہیں پر ان کا حل تلاش کیا جائے۔اگر یہاں پر مسائل کا حل نہ نکل سکے تو پھر معاملہ اوپر بھیجا جائے۔تمام مذہبی جماعتوں اور مختلف مکاتب فکر کے رہنمائوں کو باور کرایا جائے کہ موجودہ حالات میں فرقہ وارانہ فسادات کے نتائج کتنے خوفناک ہو سکتے ہیں اور انہیںمذہبی اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے فوائد بتاتے ہوئے اس بات کی طرف راغب کیا جائے کہ مل جل کر رہنے میں ہی عافیت ہے۔ان رہنمائوں کو اپنے لوگوں کے کنڈکٹ کا براہ راست ذمہ دار ٹھہرایا جائے۔ پاکستان میں اس بات کی اشد ضرورت ہے کہ مذہبی اور فرقہ وارانہ اجتماعات کے لئے سخت ترین قانون سازی کی جائے اور اس کی پابندی کرانے کے لئے فعال حکومتی ڈھانچہ تیار کیا جائے۔اس کے علاوہ ملک کے تمام مدارس حکومت کے براہ راست کنٹرول میں ہونے چاہئیں۔بہتر ہو گا کہ تمام مدارس میں ایک نصاب اور ایک نظام تعلیم نافذ ہو۔ مذہبی ہم آہنگی کو نصاب تعلیم کا لازمی جزو قرار دے جائے۔مدارس کی تمام بیرونی امداد اور فنڈنگ مکمل طور پر بند کر دی جائے۔اگر کہیں بیرونی امداد یا فنڈنگ کا سارغ مل جائے تو اسے انٹی منی لانڈرنگ اوردہشت گردی کے لئے فنڈنگ تصور کرتے ہو ئے ان پر سخت قانونی چارہ جوئی کی جائے اور جس ملک سے یہ فنڈنگ آئے اس کے خلاف سفارتی سطح پر ایکشن لیا جائے۔
حکومت پاکستان کو چاہیے کی حتیٰ المقدور ان مدارس کی مالی معاونت خود کرے۔میڈیا پر اس ضمن میں سخت کنٹرول کی ضرورت ہے۔میڈیا کو یہ آزادی نہیں ہونی چاہیے کہ فرقہ وارانہ منافرت کو ہوا دے بلکہ میڈیا کو مثبت کردار ادا کرتے ہوئے فرقہ ورانہ ہم آہنگی کو پروموٹ کرنا چاہیے۔نفرت انگیز اور توہین آمیز لٹریچر پر سخت پابندی ہونی چاہیے تاکہ مختلف مکاتب فکر کی دل آزاری نہ ہو سکے کیو نکہ نفرت آمیز مواد سے فرقہ واریت میں اضافہ ہوتا ہے۔توہین آمیز اور نفرت انگیز مواد ملنے پر قصور واروں پر دہشت گردی کے قوانین لاگو کئے جائیں۔اس سلسلے میں پاکستان علماء کونسل ایک بھر پور اور تاریخی کردار ادا کر سکتی ہے۔دیکھنے میں وہ آیا ہے کہ مذہبی رہنما حالات کو بنانے یا بگاڑنے میں کلیدی کردار ادا کر تے ہیں۔مذہبی رواداری پیدا کرنے کے لئے موافق ماحول علماء حضرات ہی پیدا کر سکتے ہیں۔
ایک وقت ایسا بھی آیا تھا کہ محرم الحرام میں اہل تشیع عاشورہ کا جلوس نکال رہے ہیں اور ان کے سنی بھائی جلوس کے راستے میں میٹھے پانی کی سبیلیں لگائے بیٹھے ہیں اور جلوس کی حفاظت کا ذمہ سنی بھائیوں نے اپنے سر لے رکھا ہے جبکہ دوسری طرف یہ بھی دیکھنے میں آیا ہے کہ عاشورہ کے جلوس کو روکنے اور حالات کو خراب کرنے میں سنی بھائی پیش پیش ہیں اور جگہ جگہ رکاوٹیں کھڑی کر کے جلوس کی راہ میں روڑے اٹکانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔مختصراً یہ کہ حالات کو بگاڑنے یا سنوارنے میں مذہبی رہنما بنیادی کردار ادا کر سکتے ہیں۔ انہیں چاہیے کہ آگے آ کر علاقے کی سطح پر ایسے پلیٹ فارم بنائیں جہاں مذہبی ہم آہنگی کو فروغ دیا جا سکے اور جہاں پر فرقہ واریت سے متعلق چھوٹے چھوٹے مسائل خود حل کر لئے جائیں۔ اگر یہ نہ کیا گیا اور مذہبی منافرت میں اضافہ ہونے دیا گیا تو ہمارے دشمن اس کا فائدہ اٹھانے کے لئے ہمیشہ تیار بیٹھے ہیں۔آپس کے معاملات سے دشمن کو فائدہ اٹھانے دینا کوئی دانش مندی کی بات نہیں ہے ۔
 

تازہ ترین خبریں

سابق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے فنڈز کے ناجائز استعمال کا انکشاف

سابق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے فنڈز کے ناجائز استعمال کا انکشاف

بھارت سے آنے والے طیارے کی پاکستان میں ایمرجنسی لینڈنگ،

بھارت سے آنے والے طیارے کی پاکستان میں ایمرجنسی لینڈنگ،

اسلام آباد میں حساس ادارے کاسابق آفیسر فائرنگ سے قتل

اسلام آباد میں حساس ادارے کاسابق آفیسر فائرنگ سے قتل

سعودی عرب پاکستان کو 500ملین ڈالرز دے گا، وزیر خارجہ

سعودی عرب پاکستان کو 500ملین ڈالرز دے گا، وزیر خارجہ

حکومت کا شہبازشریف کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کےفیصلے کے خلاف عدالت جانے کا اعلان

حکومت کا شہبازشریف کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کےفیصلے کے خلاف عدالت جانے کا اعلان

ملک بھر میں تعلیمی اداروں کی بندش کی تاریخ آگے بڑھا دی گئی

ملک بھر میں تعلیمی اداروں کی بندش کی تاریخ آگے بڑھا دی گئی

والدین کو گھر سے نکالنا پاکستان میں قابل سزا جرم قرار

والدین کو گھر سے نکالنا پاکستان میں قابل سزا جرم قرار

ضلع مہمند میں ٹینک کی دیوار گرنے سے سات بچے جاں بحق

ضلع مہمند میں ٹینک کی دیوار گرنے سے سات بچے جاں بحق

یا اللہ خیر۔۔۔ پورے گاوں میں ماتم۔۔۔ایک ساتھ سات بچے جاں بحق۔۔۔وجہ کیا بنی؟

یا اللہ خیر۔۔۔ پورے گاوں میں ماتم۔۔۔ایک ساتھ سات بچے جاں بحق۔۔۔وجہ کیا بنی؟

راستہ جلدی کیوں نہیں دیا ، جدہ ٹاون میں کار سواروں کی فائ ر نگ۔۔۔۔۔ایک ہلاک ۔۔۔ زخمیوں کی اطلاعات

راستہ جلدی کیوں نہیں دیا ، جدہ ٹاون میں کار سواروں کی فائ ر نگ۔۔۔۔۔ایک ہلاک ۔۔۔ زخمیوں کی اطلاعات

حکومت کا ایک اور بڑا فیصلہ۔۔۔ملک میں تعلیمی ادارے 23 مئی تک بند رکھنے کافیصلہ

حکومت کا ایک اور بڑا فیصلہ۔۔۔ملک میں تعلیمی ادارے 23 مئی تک بند رکھنے کافیصلہ

ملک میں کورونا ویکسین ختم۔۔۔ ڈاکٹر یاسمین راشد نے کیاکیا؟؟

ملک میں کورونا ویکسین ختم۔۔۔ ڈاکٹر یاسمین راشد نے کیاکیا؟؟

پانی سے بھری ٹنکی کھیلتے بچوں پر جاگری، 7 جاں بحق ، افسوسناک واقعہ کہاں پیش آیا ؟ جان کر آپ کی بھی آنکھیں نم ہوجائینگی

پانی سے بھری ٹنکی کھیلتے بچوں پر جاگری، 7 جاں بحق ، افسوسناک واقعہ کہاں پیش آیا ؟ جان کر آپ کی بھی آنکھیں نم ہوجائینگی

جہانگیر ترین سے خفیہ ملاقات میں معاملات طے ہوگئے،عمران خان کا اہم مسئلہ حل ہو گیا،اسمبلیاں توڑنے کاامکان کم

جہانگیر ترین سے خفیہ ملاقات میں معاملات طے ہوگئے،عمران خان کا اہم مسئلہ حل ہو گیا،اسمبلیاں توڑنے کاامکان کم