01:41 pm
قرآن:دنیاکے مصائب کاعلاج

قرآن:دنیاکے مصائب کاعلاج

01:41 pm

(گزشتہ سے پیوستہ)
مذہب کی دنیا میں یہ خیال پایاجاتاتھاکہ اس کائنات کی تخلیق کے بعد اللہ اس سے بے تعلق ہوگیاہے۔قرآن نے اس کی تردیدکی اور بتایا کہ وہ عرشِ بریں کامالک ہے اورپورے کارخانہ عالم کواپنی مرضی سے چلارہاہے:
بے شک تمہارارب وہ ہے جس نے آسمانوں اورزمین کوچھ دن میں پیدا کیا،پھرعرش پرمتمکن ہوا۔جورات کے ذریعہ دن کوڈھانک دیتاہے اوردن تیزی سے اس کے پیچھے چلا آتا ہے۔اس نے سورج، چاند اورستارے پیداکیے۔سب اس کے حکم کے تابع ہیں۔ سن لو! اسی کیلئے خاص ہے پیدا کرنابھی اورحکم دینابھی۔بابرکت ہے اللہ کی ذات جورب العالمین ہے۔(الاعراف:54)
وہ حی وقیوم ہے۔سارے عالم کوتھامے ہوئے ہے۔ایک لمحہ کیلئے وہ اس سے غافل نہیں ہے‘اللہ تعالیٰ وہ ہے کہ اس کے سواکوئی معبودنہیں۔وہ زندہ ہے اورکائنات کوتھامے ہوئے ہے۔نہ اسے اونگھ لاحق ہوتی ہے اورنہ نیند آتی ہے۔آسمانوں اور زمین میں جوکچھ ہے سب اس کی ملکیت ہے۔( البقر:255)
قرآن نے شرک کی جڑکاٹ دی اورسوائے ایک ذاتِ خداوندکے ہرچھوٹے بڑے اللہ کے تسلط اوراقتدارسے انکارکردیا۔اب انسان اس دنیا پرصرف اللہ ِ واحدکی حکمرانی دیکھ رہا تھا۔اللہ سے انسان کاتعلق غیرواضح،بلکہ ایک طرح سے منقطع رہاہے۔قرآن نے انسان کارشتہ اللہ سے جوڑدیا۔اس نے کہاکہ انسان اس دنیامیں خودسے نہیں آتا۔اس کی پیدائش ،اس کارزق،اس کی صلاحیتیں اورتوانائیاں،اس کامرض وصحت سے دوچارہونااوراس کی موت وحیات سب کچھ اللہ کے ہاتھ میں ہے،کسی دوسرے کے پاس کچھ نہیں ہے ۔ لہٰذاتمہاراتعلق اس سے اورصرف اس سے ہونا چاہیے۔سورہ فاطر میں ہے۔
 اللہ نے تمہیں مٹی سے پیداکیااورپھرنطفہ سے۔اس نے تمہارے جوڑے بنائے،جوعورت حاملہ ہوتی ہے اوربچے کوجنم دیتی ہے سب اس کے علم میں ہے۔کسی کوزیادہ عمرملتی ہے اور کسی کی عمرمیں کمی ہوتی ہے تویہ سب اللہ کے ہاں ایک کتاب میں لکھاہواہے۔ان میں سے کوئی کام اللہ کیلئے دشوارنہیں ہے۔دریاں میں انتہائی شیریں پانی ہوتا ہے جوپینے کے کام آتا ہے اورانتہائی تلخ اورنمکین بھی۔دونوں ہی سے تازہ گوشت ملتاہے اور استعمال کیلئے زیورات بھی حاصل ہوتے ہیں۔تم دیکھتے ہوکہ کشتیاں اس کا سینہ چیرتی ہوئی چلی جاتی ہیں،تاکہ تم اس کافضل تلاش کرواوراس کاشکرادا کرو۔اسی کی ذات ہے جورات اوردن کوایک دوسرے میں داخل کرتی رہتی ہے۔ سورج اورچاند کو اس نے مسخرکررکھاہے،جو ایک مقررہ مدت تک گردش میں ہیں(فاطر:11-13)
یہی اللہ تمہارارب ہے۔اسی کی بادشاہت ہے۔اس کے سواجن معبودوں کوتم پکارتے ہووہ کھجورکی گٹھلی کے چھلکے کے برابربھی کسی چیزکے مالک نہیں ہیں۔اگرتم ان کوپکاروتووہ تمہاری پکار نہیں سن سکتے اورسن بھی لیں توتمہاری بات کاجواب نہیں دے سکتے۔ اورقیامت کے روز تمہارے شرک سے انکارکردیں گے۔ اورتمہیں اس طرح کی صحیح بات ایک باخبر کے سواکوئی نہیں دے سکتا۔ (فاطر:13-14)
اس طرح کی تصریحات پورے قرآن میں پھیلی ہوئی ہیں۔اللہ واحدکے عقیدے نے انسانوں کوہرجھوٹے معبودسے نجات دی۔انسان کی گردن میں خودساختہ خداں کاجوطوق غلامی پڑاہواتھا، اسے کاٹ دیا۔جب کسی کے ہاتھ میں کوئی اقتدارنہیں ہے توکیوں وہ اس سے توقع رکھے اور اسے اپنا مالک وکارساز سمجھے۔ اب کسی فرعون کواجازت نہ تھی کہ اپنی بادشاہت وحکومت کاڈنکاپیٹے اوردوسروں کوغلام بنائے۔اللہ تعالیٰ تک براہ راست رسائی ہوسکتی ہے۔ اللہ تک رسائی کیلئے انسان ذرائع اورواسطوں کوضروری خیال کرتاتھا۔ مشرکین کہتے تھے: ہم ان معبودوں کی صرف اس لیے عبادت کرتے ہیں کہ وہ ہمیں اللہ سے قریب کردیں۔ (الزمر:3)
قرآن نے بتایاکہ اللہ تک پہنچنے اوراس کاتقرب حاصل کرنے کیلئے انسان کوکسی واسطہ کی ضرورت نہیں ہے۔اس سے وہ براہِ راست تعلق قائم کرسکتاہے۔وہ سب سے زیادہ اس سے قریب ہے اوراس کی دعائیں سنتااورجواب دیتاہے۔ان کا کام یہ ہے کہ وہ اس پرایمان رکھیں اوراس کی ہدایات پرعمل کریں:
جب میرے بندے میرے متعلق آپ سے سوال کریں توبتادیجیے کہ میں قریب ہی ہوں۔ پکارنے والاجب پکارتاہے تومیں اس کی پکار سنتااورجواب دیتاہوں۔لہٰذاانہیں بھی چاہیے کہ میری پکارکاجواب دیں اورمجھ پرایمان رکھیں۔ امید ہے وہ ہدایت پائیں گے۔(البقرہ:186)
انسان گناہ سے مشکل ہی سے بچ پاتاہے۔ بعض اوقات بڑے بڑے گناہ بھی اس سے سرزدہوجاتے ہیں،لیکن اس کاضمیرگناہ کی خلش محسوس کرتاہے، ارتکابِ گناہ اس کے دل میں کانٹے کی طرح کھٹکھٹا رہتاہے۔وہ چاہتاہے کہ اس کاگناہ دھل جائے اوروہ اس کی سزا سے بچ جائے۔اس کیلئے وہ ضروری سمجھتاتھا کہ دیوتاؤں اوردیویوں کوخوش کیاجائے۔ ورنہ وہ ان کے غضب کاشکارہوگا۔اس مقصدسے طرح طرح کے رسوم اداکرتا۔یہ رسوم مذہبی رہنمائوں کے ذریعہ انجام پاتے تھے۔شرک کی دنیامیں اب بھی یہی سب کچھ ہوتاہے۔گناہ کی زندگی گزارنے کے بعدانسان کبھی مایوس بھی ہوجاتاہے کہ اب اس کیلئے ہدایت کی راہ بندہوچکی ہے۔قرآن نے معصیت پرورانسانوں اوربڑے بڑے مجرموں کواللہ کاپیغام سنایا اورہمت دلائی کہ توبہ کے دروازے تاحیات کھلے ہوئے ہیں۔مایوس ہونے کی کوئی ضرورت نہیں۔اللہ انتہائی غفورورحیم ہے۔وہ بڑے سے بڑے مجرم کومعاف کرنے کیلئے تیار ہے۔اے میرے بندو،جنہوں نے گناہوں کے ارتکاب سے اپنے اوپرزیادتی کی ہے،تم اللہ کی رحمت سے مایوس نہ ہوجائو۔اللہ سارے گناہ معاف کردے گا۔وہ توغفورورحیم ہے۔ اپنے رب کی طرف رجوع کرواوراس کے مطیع وفرماں برداربن جائو‘قبل اس کے کہ اللہ کا عذاب آجائے اورکہیں سے تمہاری کوئی مددنہ ہو۔ (الزمر:53-54)
قرآن نے جس طرح بگڑے ہوئے افرادکو، قاتلوں اورسیہ کاروں کو،اللہ سے براہ راست تعلق قائم کرنے اورگناہوں سے توبہ کی دعوت دی،اس سے اس راہ کی بندشیں اورواسطے ختم ہورہے ہیںاورانسان توبہ واستغفارکے ساتھ سیدھے اللہ کی طرف متوجہ ہوتاہے اوروہ اپنے گردوپیش کے مصائب سے نجات حاصل کرنے میں کامیاب ہو جاتا ہے ۔ 

 

تازہ ترین خبریں

حکومت کا 103سال پرانے ایئر پورٹ کو ختم کرنے کا فیصلہ۔۔وجہ کیا بنی ہے؟جانیے تفصیل

حکومت کا 103سال پرانے ایئر پورٹ کو ختم کرنے کا فیصلہ۔۔وجہ کیا بنی ہے؟جانیے تفصیل

اسسٹنٹ کمشنر ڈسکہ کو معطل کر دیا گیا

اسسٹنٹ کمشنر ڈسکہ کو معطل کر دیا گیا

جاتی سردی پھر لوٹ آئی ۔۔۔۔ بارشیں ہی بارشیں !محکمہ موسمیات نے ٹھنڈی ٹھنڈی خوشخبری سنادی

جاتی سردی پھر لوٹ آئی ۔۔۔۔ بارشیں ہی بارشیں !محکمہ موسمیات نے ٹھنڈی ٹھنڈی خوشخبری سنادی

جوبزدل ہے وہ ہٹ جائے ،جو شیر ہے وہ ڈٹ جائے۔۔۔ مریم نواز کہاں جارہی ہیں ،ن لیگیوں کیلئے بڑی خبر آگئی

جوبزدل ہے وہ ہٹ جائے ،جو شیر ہے وہ ڈٹ جائے۔۔۔ مریم نواز کہاں جارہی ہیں ،ن لیگیوں کیلئے بڑی خبر آگئی

انگین آلتان کے ساتھ فراڈ کرنیوالا ملزم کاشف ضمیر نئی مشکل میں پھنس گیا

انگین آلتان کے ساتھ فراڈ کرنیوالا ملزم کاشف ضمیر نئی مشکل میں پھنس گیا

بزدار حکومت کاغربت کے خاتمے کی جانب ایک اور اہم قدم

بزدار حکومت کاغربت کے خاتمے کی جانب ایک اور اہم قدم

پاک فوج کی دلیری سے بہت متاثر ہوا،ابھی نندن

پاک فوج کی دلیری سے بہت متاثر ہوا،ابھی نندن

’’آپریشن سوئفٹ ریٹارٹ‘‘ کو دوسال مکمل:وقت آیا تو ہر چیلنج کا جواب بھرپور طریقے سے دیا جائیگا،پاک فوج

’’آپریشن سوئفٹ ریٹارٹ‘‘ کو دوسال مکمل:وقت آیا تو ہر چیلنج کا جواب بھرپور طریقے سے دیا جائیگا،پاک فوج

پاکستان: کوروناوائرس سے مزید33افراد جاں بحق

پاکستان: کوروناوائرس سے مزید33افراد جاں بحق

 پلوشہ خان کے گھرپرنامعلوم افرادکاحملہ

پلوشہ خان کے گھرپرنامعلوم افرادکاحملہ

ضمانت منظوری کے باوجود حمزہ شہباز رہا کیوں نہیں ہوئے؟

ضمانت منظوری کے باوجود حمزہ شہباز رہا کیوں نہیں ہوئے؟

ڈسکہ انتخابات ،الیکشن کمیشن کے فیصلے کوچیلنج کرنیکاحکومتی اقدام  مریم نواز نے کپتان کوکھری کھری سنادیں،بڑاالزام عائد

ڈسکہ انتخابات ،الیکشن کمیشن کے فیصلے کوچیلنج کرنیکاحکومتی اقدام مریم نواز نے کپتان کوکھری کھری سنادیں،بڑاالزام عائد

ہمارا یہ کام کردو، پھر تم جانو اور عمران خان،اسٹیبلشمنٹ  نے اپوزیشن کو بڑی پیشکش کردی، تہلکہ خیز دعویٰ سامنے آگیا

ہمارا یہ کام کردو، پھر تم جانو اور عمران خان،اسٹیبلشمنٹ نے اپوزیشن کو بڑی پیشکش کردی، تہلکہ خیز دعویٰ سامنے آگیا

چیئرمین چیف آف سٹاف کمیٹی جنرل ندیم رضا سے عراقی وزیر دفاع کی ملاقات

چیئرمین چیف آف سٹاف کمیٹی جنرل ندیم رضا سے عراقی وزیر دفاع کی ملاقات