01:26 pm
ایف اے ٹی ایف! خوشخبریاں سنانے والے کہاں ہیں؟

ایف اے ٹی ایف! خوشخبریاں سنانے والے کہاں ہیں؟

01:26 pm

ایف اے ٹی ایف‘ گرے لسٹ برقرار٭ جسٹس فائز عیسیٰ کے خلاف ریفرنس  کالعدم٭ سوڈان اسرائیل کو تسلیم کر رہا ہے‘ مزید پانچ ’اسلامی‘ ممالک تسلیم کرنے والے ہیں‘ ٹرمپ٭ امریکی صدر کا انتخاب 3نومبر کو ‘ آٹھ دن باقی٭
’’کیپٹن صفدر کی گرفتاری وفاق پر حملہ ہے۔‘‘ مریم نواز٭ انڈے 165سے 180روپے درجن‘  تمام سبزیاں گوشت مہنگائی کی انتہا پر٭ مزار قائداعظمؒ کی بے حرمتی‘ سندھ حکومت کی ٹیم 30روز تحقیقات کرے گی٭ جنوری 2021ء : ’’ حکومت ختم ہو جائے گی۔‘‘ مریم نواز‘ ’’نواز شریف 25جنوری تک جیل میں ہوں گے۔‘‘ وزیر اطلاعات٭ سندھ: جرائز ‘ سندھ کی ملکیت ہیں‘ اٹارنی جنرل ٭ لاہور اورنج ٹرین‘ پشاور بسیں چل پڑیں‘ مقبوضہ کشمیر: محبوبہ مفتی‘ بھارتی جھنڈا ہٹا دیا۔
ایف اے ٹی ایف (فنانس ایکشن ٹاسک فورس) نے پاکستان کو گرے لسٹ سے نکالنے سے انکار کر دیا۔ فروری میں پھر اجلاس ہوگا! میرے لئے یہ بات نئی  نہیں‘ اسی کالم میں دس دن پہلے چھاپ دیا تھا کہ گرے لسٹ فروری تک قائم رہے گی بلکہ 21فروری کی تاریخ بھی دے دی تھی۔
اب ان حکومتی مچھندروں کو اپنے عہدے چھوڑ دینے چاہئیں؟ جو مسلسل دھمالیں ڈال رہے تھے کہ پاکستان چند روز میں گرے لسٹ سے نکل جائے گا۔ یہ لوگ مسلسل گمراہ کن مفروضوں سے عوام کو بے وقوف بناتے اور گمراہ چلے آرہے ہیں۔ حکومتی قلعے کی فصیل پر چڑھ کر ڈفلیاں بجاتے‘ بیانات دیتے چلے آرہے تھے کہ ’’گرے لسٹ ختم ہو رہی ہیں... اگلے ہفتے  سے سبزیاں سستی ہو رہی ہیں‘ آٹا عام ہو رہا ہے‘ وزیراعظم نے ملک میں دودھ اور شہد کی نہریں بہانے کا حکم دیا ہے....!!‘‘
ان لوگوں کو معلوم تھا کہ ایف اے ٹی ایف کی عائد کردہ 27شرائط میں سے چھ اہم شرائط پر عملدرآمد نہیں ہوسکا‘ اس لئے گرے لسٹ ختم نہیں ہوسکی‘ مگر عوام کو حقائق سے آگاہ کرنے کی ہمت نہیں تھی! شرم آرہی ہے کہ یہ لوگ کتنے دھڑلے اور ڈھٹائی کے ساتھ عوام کو ’’خوش خبریاں‘‘ سناتے رہے‘ سناتے جارہے ہیں۔ اپوزیشن کو حکومت کے خلاف جلسے جلوسوں کی کیا ضرورت ہے‘ یہ خودکش سرکاری مجاور ہی کافی ہیں۔
وزیراعظم عمران خان نے نہایت دل سوزی کے ساتھ بیان دیا ہے کہ میں سخت مہنگائی کی خبروں پر  رات کو سو نہیں سکا! خان صاحب! مجھے آپ سے بہت ہمدردی ہے کہ  آپ قوم کی پریشانی پر رات بھربے چین رہے اور سو نہیں سکے‘ مگر  وزیراعظم صاحب! یہ 22کروڑ بے بس ‘ بے کس لوگوں کی قوم تو آپ کے اقتدار کے دو برسوں کے ’’عہد زریں‘‘ میں ایک رات بھی آرام سے نہیں سو سکی! اکثریت ویسے ہی بے روزگار ہے‘ فاقے کاٹ رہی ہے‘ کچھ لوگوں میں کرنسی نوٹ اٹھائے مارے مارے پھر رہے ہیں‘ بازار میں آٹا‘ گھی نہ چینی !! ملازم خواتین ہڑتالیں کر رہی ہیں‘ دھرنے دے رہی ہیں‘ ان کے گھروں کے چولہے بجھ گئے ہیں....! مجھے آپ سے ہمدردی ہے جناب عالم پناہ وزیراعظم صاحب!
بچی کچھی ن لیگ کی خود بخود سربراہ خاتون‘ مریم نواز نے نیا فلسفہ  پیش کیا ہے کہ قائداعظمؒ کے مزارکی بدترین بے حرمتی کے مقدمہ میں ضمانت پر رہا‘ محمد صفدر نام کے ملزم کی گرفتاری وفاق پر حملہ ہے۔ دماغی کیفیت متزلزل ہو تو مریض کی الٹی سیدھی باتوں پر ناراض اور پریشان ہونے کی بجائے اس کے مرض کے علاج پر توجہ دینا ضروری ہے۔ محمد صفدر کون؟ واحد پہچان یہ کہ اتفاق سے ایک سیاسی خاندان کا داماد ہے۔ اس  نے مزار قائداعظمؒ کے سامنے اور پھر مزار کا اندرونی جنگلہ پھلانگ کر اندر جا کر اپنی بیوی کو خوش کرنے کے لئے بڑھکیں ماریں‘ نعرے لگائے اور آئندہ بھی ازدواجی خوشنودی کے لئے یہ عمل جاری رکھنے کا اعلان کیا۔ ایک  بزرگ کالم نگارنے لکھا ہے کہ قائداعظمؒ قوم کے محسن باپ ہیں‘ کیا کوئی شخص اپنے باپ کی قبر پر کھڑے ہو کر اس طرح کی بڑھکیں اور نعرے مار سکتا ہے؟ جی ہاں! یہی صوبائی حکومت کے سائے میں مار سکتا ہے جو اس جیسے سنگین جرم کے ملزم کے اس مکروہ طرز عمل کی مذمت کا ایک لفظ بھی نہ کر سکے۔ الٹا اس کے خلاف 18گھنٹے تک مقدمہ درج نہ ہونے دیا۔ مریم نواز سنو! صفدر کی گرفتاری پاکستان کے وفاق پر حملہ نہیں‘ خود صفدر نے وفاق پر حملہ کیا ہے۔ اپنے آپ کو سنبھالو خاتون! تم لوگوں کو اندازہ ہی نہیں کہ قائداعظمؒ کون تھے؟ انہوں نے کروڑوں مسلمانوں پر کیا احسان کیا ہے؟ مریم نواز! تم بھی مزار قائداعظمؒ کی بے حرمتی کے مقدمہ میں ملوث ہو‘ غور سے سنو‘ آج جس یہ جو بے شمار ’’بڑے‘‘ خاندان‘ صدر‘ وزیراعظم اور دوسرے ’’بڑے‘‘ پاکستان پر قابض ہیں‘ یہ سب قائداعظمؒ کی کرم فرمائی سے ان بڑے عہدوں تک پہنچے ہیں۔ پاکستان نہ بنتا تو آج کوئی بھارتی جاتی عمرا میں لوہے کی دکان میں ہتھوڑے چلا رہا ہوتا‘ کوئی سینما گھروں کے باہر اب بھی ٹکٹیں بیچ رہا ہوتا! اس عظیم محسن کی روح کو جو ناقابل برداشت اذیت پہنچائی گئی ہے‘ اس پر کیسے خاموش رہا جائے؟ لٹیروں راہزنوں نے بے تحاشا لوٹ مار کرلی‘ پھر بھی جی نہیں بھر رہا۔ کیا ستم ہے کہ سنگین جرائم والے مولاجٹ سیاسی درگاہوں کے سجادہ نشین بنے ہوئے ہیں؟ بڑے دکھ کے ساتھ افسوس کا اظہار کر رہا ہوں کہ مسلم لیگ کے سینئر ترین نہایت واجب الاحترام بزرگ رہنما راجہ ظفر الحق ( عمر 86سال) بانی پاکستان بابائے قوم کے مزار کی شدید بے حرمتی پر مذمت نہ سہی‘ افسوس اور دکھ کا ایک لفظ بھی نہ سکے۔
اپوزیشن نے 12جلسوں کا اعلان کیا ہے۔ پہلے جلسے میں ہی ن لیگ اور پیپلزپارٹی آمنے سامنے آگئے‘ نواز شریف نے آرمی چیف کا نام لے کر بدزبانی کی۔ بلاول بھٹو نے ناپسندیدگی کا اظہار کر دیا اور کراچی کے جلسے میں نواز شریف کی تقریر رکوا دی۔ اب کوئٹہ میں تیسرے جلسے میں زبردستی نواز شریف کی تقریر شامل کرنے کی کوشش کی گئی تو بلاول نے جلسے میں جانے کی بجائے  گلگت بلتستان کا رخ کرلیا اور جلسے میں شرکت نہ کرسکنے کی پیشگی معذرت بھی کر دی! مولانا فضل الرحمان پریشان کہ بڑی مشکل سے بھان متی کا کنبہ جمع کیا تھا‘ دو جلسوں سے ہی اتحاد کی اینٹیں اکھڑنا شروع ہوگئی ہیں‘
محاورہ ہے کہ اونٹ کی کوئی کل سیدھی نہیں ہوتی! معروف مزاح نگار  محمد خالد اختر نے دلچسپ بات کہی کہ اٹھتے وقت اونٹ کے اعضا9 زاویے بناتے ہیں۔ جنرل شفیق الرحمان نے لکھا کہ اونٹ کی گردن اس لئے لمبی ہوتی ہے کہ اس کا سر اس کے جسم سے بہت دور ہوتا ہے۔ منو بھائی نے لکھا کہ اونٹ کا نچلا ہونٹ لٹکتا رہتا ہے‘ یوں لگتا ہے کہ اب گِرا کر گِرا! کچھ لوگ ہر وقت اس کے گرنے کے انتظار میں رہتے ہیں۔ عجیب جانور ہے کہ کیکر اور جھاڑیوں کے پتوں کے ساتھ کانٹے بھی کھا جاتا ہے۔
قارئین کرام! اونٹ کی اتنی باتیں ایسے ہی نہیں کر رہا۔ جب بھی اونٹ کا ذکر آتا ہے خاص طور پر یہ کہ اس کا کل سیدھی نہیں ہوتی‘ مجھے موجودہ حکومت یاد آجاتی ہے....اس کے بیت المال میں وزیروں‘ مشیروں اور خصوصی معاونین کے ذخیرے میں روزانہ ایک دانے کا اضافہ ہو جاتا ہے (موجودہ تعداد 53) ۔ ان لوگوں کے پاس کوئی کام تو ہے نہیں‘ فرصت ہی فرصت ہے‘ ایسے میں شعل کے طور پر کوئی نہ کوئی مشغلہ شروع کر دیتے ہیں۔ ملک کے سادہ طبیعت شریف النفس صدر سے کوئی نہ کوئی غلط مسلط ریفرنس یا آرڈیننس جاری کراویا جاتا ہے‘  جسٹس فائز عیسیٰ کے خلاف‘ ریفرنس و سندھ کے جرائر کا آرڈیننس! سپریم کورٹ نے فیصلہ دیا ہے کہ ریفرنس میں 9سنگین غلطیاں ہیں۔ ماضی میں ایک آرڈیننس تین بار تبدیل کیاگیا! اب سندھ کے جزائر پر ملکیت کا آرڈیننس! سندھ اسمبلی نے اسے مسترد کر دیا اور  بلاول نے تین دن میں آرڈیننس واپس لئے جانے کا انتباہ کیا تو دوسرے ہی ان سرکاری چوبدار بول اٹھے کہ جناب! آپ ناراض ہوگئے‘ یہ جزائر سندھ  کی ہی ملکیت ہیں‘ ہم تو ایسے ہی دل لگی کررہے تھے‘ ایک پرانا محاورہ یاد آگیا کہ ’’بیکار مباش! کچھ کیا کر! پاجامہ ادھیڑ کر سیا کہ!‘‘ بڑے ذوق و شوق سے یہ کام جاری ہے اسی پر کالم ختم۔




 

تازہ ترین خبریں

اداکارہ اقرا عزیز کو شوٹنگ سے پہلے بسمہ اللہ نہ پڑھنے کا کیوں کہا گیا؟

اداکارہ اقرا عزیز کو شوٹنگ سے پہلے بسمہ اللہ نہ پڑھنے کا کیوں کہا گیا؟

مولی کھانے کے بعد یہ چیزیں ہر گز نہ کھائیں ورنہ خطرناک بیماری بھی ہوسکتی ہے۔۔ جانیں مولی کو کون سی 3 چیزوں کے ساتھ نہیں کھانا چاہیے؟

مولی کھانے کے بعد یہ چیزیں ہر گز نہ کھائیں ورنہ خطرناک بیماری بھی ہوسکتی ہے۔۔ جانیں مولی کو کون سی 3 چیزوں کے ساتھ نہیں کھانا چاہیے؟

آپ کا انگوٹھا ان میں سے کس شکل کا ہے ۔۔ سیدھے انگوٹھے والے ہو جائیں خبردار، جانیے آپ کی شخصیت کے بارے میں کون سے راز بتاتے ہیں

آپ کا انگوٹھا ان میں سے کس شکل کا ہے ۔۔ سیدھے انگوٹھے والے ہو جائیں خبردار، جانیے آپ کی شخصیت کے بارے میں کون سے راز بتاتے ہیں

محمد ﷺ کے شہر میں موجود انجن کی کہانی ۔۔ جانیں ان مختلف مقامات کے بارے میں، جن کی حقیقت آپ کو بھی حیران کر دے گی

محمد ﷺ کے شہر میں موجود انجن کی کہانی ۔۔ جانیں ان مختلف مقامات کے بارے میں، جن کی حقیقت آپ کو بھی حیران کر دے گی

جب والدہ کو دوبارہ زندہ دیکھا تو جان میں جان آئی ۔۔ وہ خوش قسمت بیٹا، جس نے اپنا جگر والدہ کو دے دیا

جب والدہ کو دوبارہ زندہ دیکھا تو جان میں جان آئی ۔۔ وہ خوش قسمت بیٹا، جس نے اپنا جگر والدہ کو دے دیا

آئی فون نے برف میں پھنس جانے والے ایک شخص کی زندگی بچالی

آئی فون نے برف میں پھنس جانے والے ایک شخص کی زندگی بچالی

والدہ کی بیماری میں مدد کرنے پر جڑواں بہنوں نے ایک ہی لڑکے سے شادی کرلی

والدہ کی بیماری میں مدد کرنے پر جڑواں بہنوں نے ایک ہی لڑکے سے شادی کرلی

کیا آپ کو معلوم ہے یہ کریم بالوں کے لئے ہوتی ہے؟ اگر آپ بھی اسے اب تک ہونٹوں یا جسم میں لگانے کے لئے استعمال کرتے ہیں

کیا آپ کو معلوم ہے یہ کریم بالوں کے لئے ہوتی ہے؟ اگر آپ بھی اسے اب تک ہونٹوں یا جسم میں لگانے کے لئے استعمال کرتے ہیں

کسی کو دیکھ کر اپنا کھیل تبدیل نہیں کرسکتے، ہمارا ریکارڈ ۔۔قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ محمد یوسف نے بڑی بات کہہ دی

کسی کو دیکھ کر اپنا کھیل تبدیل نہیں کرسکتے، ہمارا ریکارڈ ۔۔قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ محمد یوسف نے بڑی بات کہہ دی

حکمران تھے مگر بیٹی کی فیس لیٹ جمع کراتے تھے ۔۔ 2 مشہور سیاست دانوں کی اپنے بچوں سے محبت

حکمران تھے مگر بیٹی کی فیس لیٹ جمع کراتے تھے ۔۔ 2 مشہور سیاست دانوں کی اپنے بچوں سے محبت

بارش کب ہو گی ؟ محکمہ موسمیات نے اہم پیش گوئی کردی

بارش کب ہو گی ؟ محکمہ موسمیات نے اہم پیش گوئی کردی

خبردار،شہری ہوشیار رہیں،خطرے کی گھٹنی بج گئی  

خبردار،شہری ہوشیار رہیں،خطرے کی گھٹنی بج گئی  

کراچی پولیس نے اپنی کارکردگی دکھانے کے لیے کون سا کام کرناشروع کردیا،جان کرآپ کے ہوش اڑ جائیں گے

کراچی پولیس نے اپنی کارکردگی دکھانے کے لیے کون سا کام کرناشروع کردیا،جان کرآپ کے ہوش اڑ جائیں گے

پی پی رہنما نے بھی ملک کے دیوالیہ ہونے کا خدشہ ظاہر کردیا

پی پی رہنما نے بھی ملک کے دیوالیہ ہونے کا خدشہ ظاہر کردیا