12:40 pm
بھارت میں جشن

بھارت میں جشن

12:40 pm

 پی ڈی ایم کے کوئٹہ جلسے کے موقعے پر ہزار گنجی بازار میں دھماکہ ہوا ۔ چند روز بعد پشاور مسجد  میں درس قرآن کے دوران دھماکے
 پی ڈی ایم کے کوئٹہ جلسے کے موقعے پر ہزار گنجی بازار میں دھماکہ ہوا ۔ چند روز بعد پشاور مسجد  میں درس قرآن کے دوران دھماکے میں قیمتی جانوں کا نقصان ہوا اور معصوم بچے زخمی ہوئے۔ دہشت گردی کا تسلسل دشمن کے ارادوں کی عکاسی کر رہا ہے۔  ایل او سی پر بھارت کی جارحیت میں تشویش ناک اضافہ دکھائی دے رہا ہے۔ افغانستان  کی صورتحال بھی  ہر گذرتے دن  کے ساتھ بگڑ رہی  ہے۔ گذشتہ ہفتوں میں جو شدت لڑائی میں آئی  ہے وہ  امن معاہدے کے بعد  اس پہلے کبھی  دکھائی نہیں دی۔ امریکی افواج کی جانب سے کئے گئے فضائی حملوں  کو  افغان طالبان  نے امن معاہدے کی خلاف ورزی قرار دے کر شدید رد عمل  ظاہر کیا  ہے۔  دوحہ مذاکرات کا معاملہ تاحال کھٹائی میں جا پڑا ہے۔ اگر افغانستان میں بدامنی کا سلسلہ دراز ہوا تو منفی اثرات پاکستان پر بھی مرتب ہوں گے۔  افغانستان میں بھارت کے پروردہ عناصر بھی یکلخت متحرک ہوئے ہیں ۔ پاکستان کے متعلق انتہائی منفی سوچ کے حامل شمالی اتحاد کے سیاستدان اور ایک صوبے کے سابق گورنر عطا نور نے بھارت کی یاترا کے دوران سفارتکاروں  اور اعلیٰ بیوروکریٹس سے ملاقاتوں کے دوران کھل کر دلی سرکار سے افغانستان میں بھرپور کردار ادا کرنے کا مطالبہ کیا  ہے۔ 
بھارتی میڈیا میں شائع ہونے والی رپورٹس کے مطابق افغان سیاستدان  کا موقف یہ ہے کہ اگر بھارت ہاتھ پر ہاتھ رکھ کر بیٹھا رہا تو  طالبان کی برتری  قائم  ہونے کے بعد افغانستان  میں پاکستان کا اثر و رسوخ بڑھ جائے گا ۔ اس سے قبل پاکستان کے بدترین مخالف جنر ل رشید دوستم  بھی ہندوستان کا دورہ کر چکے ہیں۔ ظاہر ہے ان دوروں سے افغانستان اور پاکستان کے لئے کوئی خیر کا پہلو  برآمد نہیں ہو سکتا ۔  افغانستان میں یکا یک خانہ جنگی کی آگ کا بھڑکنا بلاوجہ نہیں ہے۔ یہ کوئی اتفاق نہیں کہ افغانستان میں ایک مدرسے میں بچوں کو نشانہ بنانے کے چند دن بعد پشاور میں بھی ایسی  ہی مذموم حرکت کی گئی  ۔ بھارت کی شرپسندانہ حکمت عملی  کوئی دھکی چھپی بات نہیں ۔ کشمیر سمیت پورے خطے میں بالادستی قائم کرنے کے لئے بھارت دہشت گردی کا ہتھیار پوری قوت سے استعمال کر رہا ہے۔  چند روز قبل معروف افغان راہنما گلبدین حکمت یار نے پاکستان کا دورہ کیا ۔ اس موقع پر گلبدین حکمت یار  نے بھی  دلی سرکار کی  افغانستان میں شرپسندانہ مداخلت پر کڑی تنقید کی۔ اُن کا کہنا تھا کہ  دنیا میں بھارت اور ایران  ہی وہ دو ممالک ہیں جو اس وقت اشرف غنی کی  کٹھ پتلی حکومت کی پشت پناہی کر رہے ہیں۔  گلبدین حکمت یار نے بھارت کو کشمیر میں ریاستی دہشت گردی کے غیر انسانی سلسلے پر بھی متنبہ کیا ۔
 یہ امر شبے سے بالا ہے کہ بھارت پوری قوت سے پاکستان کی سا لمیت اور استحکام کو نشانہ بنا رہا ہے۔ ایسے نازک وقت میں مشکوک عزائم کے حامل نام نہاد قوم پرست ملک میں لسانی نفرتوں کا پرچار کر کے تفرقہ بازی کا بازار گرم کر رہے ہیں۔ پی ٹی ایم  کے سوشل میڈیا پلیٹ فارم سے پشاور مدرسہ دھماکے کو پشتون نسل کشی قرار دیا جا رہا ہے۔ لیکن حیرت انگیز طور پر دہشت گردی میں ملوث بھارت کے خلاف ایک لفظ بھی پی ٹی ایم کی قیادت یا حمایتیوں کی زبان پر نہیں آیا ۔ اسی طرح افغانستان میں دہشت گردی کا نشانہ بننے والے معصوم بچوں کے غم میں مگر مچھ کے آنسو  بہاتے ہوئے ان جعلی قوم پرستوں نے ایک مرتبہ بھی کابل حکومت کی کارکردگی پر انگلی نہیں اٹھائی لیکن پشاور دھماکے کو بنیاد بنا کر پاک افغان سرحدی باڑ کو بھی ہدف تنقید بنایا جا رہا ہے اور ملک کے ریاستی اداروں کے خلاف دشام طرازی کا سلسلہ بھی زوروں پر ہے۔ مخدوش حالات کا تقاضا تھا کہ حزب اقتدار اور حزب اختلاف پارلیمان میں بامقصد بحث کر کے حساس قومی مسائل پر یکساں موقف اختیار کرتے ۔ اس کے برعکس قومی منظر نامے پر اتحاد کے بجائے تقسیم کی دراڑیں گہری ہوتی جا رہی ہیں۔ متضاد نظریات کی حامل گیارہ جماعتیں پی ڈی ایم کے پلیٹ فارم سے قومی مسائل پر جس طرح عوام سے مخاطب ہو رہی ہیں وہ کئی اعتبار سے ضرر رساں ہے۔ صاف دکھائی دے رہا ہے کہ ان مختلف الخیال جماعتوں کے درمیان حکومت دشمنی کے علاوہ کوئی قدرِ مشترک نہیں۔ تین جلسوں کے بعد ملک میں فکری انتشار اور سیاسی ابہام میں اضافہ ہوا ہے۔ لندن میں بغرض علاج مقیم میاں صاحب عدالت سے ملی ضمانت کی مدت ختم ہونے کے بعد اشتہاری قرار دئیے جاچکے ہیں ۔ 
اُن کے دو متنازعہ خطابات نے کئی مباحث کو جنم دیا ہے۔ بھارتی میڈیا نے جس انداز میں پی ڈی ایم کی سرگرمیوں کو پاکستان کے خلاف استعمال کیا ہے اُس پر ملک کی اکثریت کو شدید تشویش ہے ۔ اگر کوئی مطمئن ہے تو وہ پی ڈی ایم کی قیادت ہے  یا اُن کے پیشہ ور حمایتی ہیں۔ کراچی جلسے میں قومی زبان اردو کو ہدف تنقید بنایا گیا ۔ لندن سے سابق وزیر اعظم نے دو جلسوں میں ریاستی اداروں کے سربراہوں کو نام لے کر سیاسی معاملات میں ملوث کیا۔ دیگر قائدین کے سر پر بھی یہی بھوت سوار ہے۔ پہلے ایک صاحب کی زبان پھسلی تو پاکستان کے بجائے بلوچستان کو آزاد ریاست بنانے کا نعرہ لگا دیا ۔ اب سابق سپیکر کی رگ حمیت بے وقت پھڑک اٹھی اور انہیں بھارتی پائلٹ کی رہائی کا معنی خیز درد محسوس ہونے لگا ، رہی سہی کسر وزیر سائنس نے پوری کردی ہے جنہیں اپنے محکمے کے علاوہ ہر معاملے میں زبانی گولہ باری کرنے کا شوق ہے۔ بیان داغنے والے تمام حضرات کا دعویٰ ہے کہ اُن کی گفتگو توڑ مروڑ کر پیش کی گئی ۔ تاہم  ان تمام بیانات پر بھارت میں جشن کا سماں ہے جبکہ سادہ لوح پاکستانی سر پکڑ کر بیٹھے ہیں۔
 

تازہ ترین خبریں

محرم الحرام میں مجالس اور جلوسوں کیلئے ایس او پیز جاری

محرم الحرام میں مجالس اور جلوسوں کیلئے ایس او پیز جاری

پاکستان کے اہم شہر میں 15 سے زائد شادیاں کرنے والافراڈیا ، پولیس حرکت میں آگئی

پاکستان کے اہم شہر میں 15 سے زائد شادیاں کرنے والافراڈیا ، پولیس حرکت میں آگئی

پینٹاگون کے نزدیک فائرنگ ، کئی افرادکے زخمی ہونے کی اطلاعات

پینٹاگون کے نزدیک فائرنگ ، کئی افرادکے زخمی ہونے کی اطلاعات

قومی اسمبلی ملازمین کیلئے نیا ہدایت نامہ جاری ۔۔۔ کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پارلیمنٹ ہاؤس میں داخلہ ممنوع قرار

قومی اسمبلی ملازمین کیلئے نیا ہدایت نامہ جاری ۔۔۔ کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پارلیمنٹ ہاؤس میں داخلہ ممنوع قرار

الیکشن کمیشن کی عمارت کے دوسرے فلور پر آگ لگ گئی 

الیکشن کمیشن کی عمارت کے دوسرے فلور پر آگ لگ گئی 

 قائد اعظم پورٹریٹ کے سامنے غیر اخلاقی تصاویر بنوانے کے واقعے پر مقدمہ در ج

قائد اعظم پورٹریٹ کے سامنے غیر اخلاقی تصاویر بنوانے کے واقعے پر مقدمہ در ج

15 سے زائد شادیاں کرنے والے فراڈئے کے بیٹے کو ساہیوال پولیس نے گرفتار کرلیا 

15 سے زائد شادیاں کرنے والے فراڈئے کے بیٹے کو ساہیوال پولیس نے گرفتار کرلیا 

قومی اسمبلی میں حکومتی جماعت کے دوارکان کے مابین شدید تلخ کلامی

قومی اسمبلی میں حکومتی جماعت کے دوارکان کے مابین شدید تلخ کلامی

شہبازشریف نےانٹرویودےدیالیکن ہمیں اب جواب دیناپڑتاہے۔ شاہد خاقان عباسی 

شہبازشریف نےانٹرویودےدیالیکن ہمیں اب جواب دیناپڑتاہے۔ شاہد خاقان عباسی 

عمران صاحب صبح اٹھتے ہی آپ کا کام صرف عوام کا آٹا چینی بجلی گیس دوائی مہنگی کرنا ہوتا ہے۔ مریم اورنگزیب

عمران صاحب صبح اٹھتے ہی آپ کا کام صرف عوام کا آٹا چینی بجلی گیس دوائی مہنگی کرنا ہوتا ہے۔ مریم اورنگزیب

عمران خان سیاسی بصیرت سے تاحال محروم ہیں اور جمہوریت سے نفرت کرنے والی سوچ کے مہرے کے سوا کچھ نہیں۔ فیصل کریم کنڈی

عمران خان سیاسی بصیرت سے تاحال محروم ہیں اور جمہوریت سے نفرت کرنے والی سوچ کے مہرے کے سوا کچھ نہیں۔ فیصل کریم کنڈی

 چئیرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ کا اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان

چئیرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ کا اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان

ن لیگی رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کانیا کارنامہ ۔۔۔ اپنی جگہ دوسرے بندے کو امتحانی ہال میں بٹھا دیا

ن لیگی رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کانیا کارنامہ ۔۔۔ اپنی جگہ دوسرے بندے کو امتحانی ہال میں بٹھا دیا

نوازشریف کوکرکٹ کاشوق تھاوہ بائی چانس وزیراعظم بن گئے۔ عمران خان 

نوازشریف کوکرکٹ کاشوق تھاوہ بائی چانس وزیراعظم بن گئے۔ عمران خان