01:56 pm
اسلام اور فلاح انسانیت 

اسلام اور فلاح انسانیت 

01:56 pm

خدمت خلق وہ پاکیزہ جذبہ ہے جسے ہر مذہب و ملت اور ضابطہ اخلاق میں قدر کی نگاہ سے دیکھا جاتاہے۔ دنیا کی زندگی میں ہر انسان دوسروں کا محتاج ہے۔ اگر ہم غور کریں کہ ایک نوالہ جو ہم منہ میں ڈالتے ہیں کتنے انسانوں کی محنت اس میں شامل ہوتی ہے۔ کسی نے بیج بویا۔ فصل کی حفاظت کی۔ اسے کاٹا اور اناج تیار کرکے بازار میں لایا۔ کسی نے خریدا اور کھانے کیلئے تیار کیا۔ اس طرح فطری طور پرا قدرت انسان کو انسان کا محتاج بنا دیا ہے۔ اس کاروبار حیات میں زندگی کے حالات میں اتار چڑھائو  آتا رہتا ہے۔یہ زندگی ایک آزمائش ہونے کی وجہ سے دکھ اور سکھ کا مجموعہ ہے۔ اگر آج ہم آسائش سے سانس لے رہے ہیں تو اس کو غنیمت سمجھتے ہوئے اللہ کے شکر گزار ہوں اور دوسروں کے غموں میں شریک ہو کر ان کی داد رسی کریں۔ جہاں آج خوشیوں سے بھرپور لمحات دکھائی دے رہے ہیں کسی کو کیا معلوم کہ کل وہاں سے پریشانیوں اور دکھوں نے ڈیرے ڈالے ہوں۔ بقول کسے
خوشی کے ساتھ دنیا میں ہزاروں غم بھی ہوتے ہیں
جہاں بجتی ہیں شاہناہیاں، وہاں ماتم بھی ہوتے ہیں
حضرت علی رضی اللہ عنہ کا قول ہے کہ  اگر دنیا کی زندگی میں پریشانیاں اور غم نہ ہوں تو کئی ایک اپنوں میں چھپے غیروں اور غیروں میں چھپے اپنوں کی پہچان نہ ہو سکے۔ دنیا میں جن اقوام نے بھی نام پایا اور ترقی کی ان کے اوصاف میں سے قدر مشترک خدمت خلق ہے۔ اس حوالے سے تین پہلو حد درجہ قابل توجہ ہیں ۔ خوراک۔ صحت اورتعلیم ۔ انسانوں کو زندہ رہنے کیلئے خوراک اوربیماری کی حالت میں علاج کی ضرورت ہوتی ہے۔ باوقار اورسنجیدہ زندگی گزارنے کیلئے علم کی روشنی سے قلوب و اذہان کو منور کرنا بھی انسان کا فطری حق ہے۔ یورپ میں رہتے ہوئے اپنے معاشروں کا اگر اس پہلو سے موازنہ کریں توخوفناک صورت حال سامنے آتی ہے۔ پاکستان میں آنے والی ہر حکومت بلند و بانگ دعوے ضرور کرتی ہے لیکن آج تک اس حوالے سے کوئی خاطر خواہ تبدیلی عمل میں نہیں آئی۔ طب کا شعبہ خدمت خلق کی علامت سمجھا جاتا ہے لیکن ہمارے ہاں دولت کی حرص اور لالچ میں یہ شعبہ بھی اپنی وقعت کھوتا جارہا ہے۔ زیادہ تر ڈاکٹر ضابطے کی کارروائی کے طور پر سرکاری ہسپتالوں میں جاتے ہیں جبکہ اصل علاج کیلئے مریضوں کو پرائیویٹ کلینک کا پتہ بتایا جاتا ہے۔ اس وقت پرائیویٹ ہسپتال بہت بڑا بزنس بن چکے ہیں جن میں بے کس، لاچار اور نادار لوگوں کا کوئی پرسان حال نہیں۔ اگرچہ کچھ خدمت خلق کا جذبہ رکھنے والے افراد اور تنظیموں نے خیراتی ہسپتال بھی بنائے ہوئے ہیں لیکن معیار اور آبادی کے لحاظ سے ضرورت پوری نہیں کر سکتے۔اسی طرح تعلیم جو کہ ہر شہری کا بنیادی حق ہے وہ بھی محروم توجہ ہے۔ دانش یا کسی اور نام سے ایک ہاتھ کی انگلی پر گنے جانے والے سکول آبادی کے تناسب کے لحاظ سے ایک مذاق سے کم نہیں ۔ ارباب اختیار کو پوری آبادی کیلئے ایسے تعلیمی نظام کو ترتیب دینے کی ضرورت ہے جو فعال ہوں اور وقت و حالات کے تقاضوں کو پورا کریں۔ یہی وجہ ہے کہ سرکاری سکولوں کی ابتر صورت حال اور غیر معیاری نظام تعلیم کی وجہ سے زیادہ تر بچے نجی سکولوں میں داخلہ لینے پر مجبور ہیں۔ ان نجی سکولوں میں فیس اور دیگر واجبات ادا کرنا انتہائی مشکل عمل ہے۔ ایک محنتی اور پڑھا لکھا شخص اپنی پوری تنخواہ تین بچوں کی تعلیمی فیس پر لگا دے تو باقی معاملات زندگی کیسے چلائے گا۔ پاکستان کے بڑے شہروں میں اس وقت نجی تعلیمی ادارے بہت کام کر رہے ہیں لیکن اس کے ساتھ ساتھ غریبوں کی پہنچ سے دور اور بہترین کاروبار کی شکل بھی اختیار کر چکے ہیں۔ زندہ رہنے کیلئے ہرذی روح کو خوراک کی ضرورت ہوتی ہے لیکن اس حوالے سے بھی افراتفری کا دور دورہ ہے۔ کچھ وہ ہیں جو عیش و عشرت میں زندگی گزار رہے ہیں اور کچھ وہ کہ جو جسم و روح کا رشتہ برقرار رکھنے کیلئے بھی پریشان حال ہیں۔ ستر فیصد زرعی آبادی کے ملک میں بھی کچھ لوگ بھوکے سوئیں تو یقینا شرمناک صورت حال ہے۔ اگر چہ انکم سپورٹ کے نام پر کچھ سکیمیں حکومتی سطح پر کام کر رہی ہیں لیکن وہ بھی اونٹ کے منہ میں زیرہ کے برابر ہیں۔
اس حوالے سے منیر نیازی کے بقول صورت حال کچھ یوں ہے کہ
منیر اس ملک پر آسیب کا سایہ ہے یا کیا ہے 
کہ حرکت تیز تر ہے اور سفر آہستہ آہستہ
وہ تو ہے جو بھی ہے۔ مایوسی گناہ ہے۔ ہم پر امید ہیں کہ انشاللہ عنقریب صورت حال تبدیل ہو گی اور حقیقی معنوں میں وطن عزیز ایک اسلامی فلاحی ریاست بنے گا۔لیکن اصحاب ثروت اور جو ترقی یافتہ ممالک میں رہ رہے ہیں ان کی بھی خدمت خلق کے حوالے سے کچھ ذمہ داریاں ہیں جوانہیں ادا کرنی چاہئیں۔ ہم جس محلہ یا شہر سے وابستہ ہیں وہاں بھی کئی ایسے لوگ ہوں گے جو ہماری مدد کے منتظر ہوں گے۔ ہمارے رشتہ داروں اور اعزہ و اقارب میں بھی کئے ایسے ہوں گے جو محتاج ہوں گے۔ ان حالات میں اپنی اپنی حیثیت کے مطابق ہمیں ان کی خدمت کو اپنے لئے سعادت سمجھنا چاہیے۔ یتیموں اور بیوائوں کی کفالت کر کے ہم دین و دنیا میں عزت پا سکتے ہیں۔ مسلمان دنیا کے جس حصے میں بھی رہے وہ پہلے مسلمان ہے اور پھر کچھ اور۔ ہمارے دین نے ہمیں خدمت خلق کی طرف بھرپور طریقے سے متوجہ کیا ہے۔ یتیموں، بیوائوں، اقربا اور معاشرے کے مجبور لوگوں کی دست گیری ایک مسلمان کیلئے اعزاز سے کم نہیں۔

تازہ ترین خبریں

ایک خاتون نےمرد بن کر دو ، دوشادیاں رچالیں اور پھر۔۔ ۔وہ کام کر دکھایا کہ سننے والوں پر لرزہ طاری ہو جائے 

ایک خاتون نےمرد بن کر دو ، دوشادیاں رچالیں اور پھر۔۔ ۔وہ کام کر دکھایا کہ سننے والوں پر لرزہ طاری ہو جائے 

بچے بھوکے ہوتے ہی لیکن کھانا نہیں مانگتے کہیں ’ماں‘ خودکشی نہ کرلے، بچوں کی بھوک ماں کیسے برداشت کرے؟

بچے بھوکے ہوتے ہی لیکن کھانا نہیں مانگتے کہیں ’ماں‘ خودکشی نہ کرلے، بچوں کی بھوک ماں کیسے برداشت کرے؟

معمولی تلخ کلامی، پاکستان کے اہم شہر کے اسسٹنٹ کمشنر کو قتل کر دیا گیا 

معمولی تلخ کلامی، پاکستان کے اہم شہر کے اسسٹنٹ کمشنر کو قتل کر دیا گیا 

چھٹی کے روز پاکستان میں دوسرا بڑا سانحہ، کئی اموات 

چھٹی کے روز پاکستان میں دوسرا بڑا سانحہ، کئی اموات 

معروف اداکارہ نےاپنے مداحوں کوبغیر شادی ماں بننے کی خوشخبر ی سنا دی

معروف اداکارہ نےاپنے مداحوں کوبغیر شادی ماں بننے کی خوشخبر ی سنا دی

ویسٹ انڈیز ٹیم کا دورہ پاکستان، ہرلعزیز کھلاڑی انجری کے باعث ٹیم سے باہر 

ویسٹ انڈیز ٹیم کا دورہ پاکستان، ہرلعزیز کھلاڑی انجری کے باعث ٹیم سے باہر 

دشمن چاہ کر بھی کرکٹ کو پاکستان سے ختم نہ کرسکا، پی ایس ایل 7 کیلئے کتنے غیر ملکی کرکٹرز دستیاب ہیں؟ بڑے بڑے نام شامل

دشمن چاہ کر بھی کرکٹ کو پاکستان سے ختم نہ کرسکا، پی ایس ایل 7 کیلئے کتنے غیر ملکی کرکٹرز دستیاب ہیں؟ بڑے بڑے نام شامل

واٹس ایپ کے وہ سب سے خاص فیچرز جو صرف آئی فون پر استعمال کیے جاسکتے ہیں

واٹس ایپ کے وہ سب سے خاص فیچرز جو صرف آئی فون پر استعمال کیے جاسکتے ہیں

روس آئندہ برس کس ملک پر حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے؟ امریکیوں کی نیندیں حرام ہو گئیں، پوری دنیا میں ہلچل مچا دی

روس آئندہ برس کس ملک پر حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے؟ امریکیوں کی نیندیں حرام ہو گئیں، پوری دنیا میں ہلچل مچا دی

وہ بیٹا جس نےاپنےباپ کی 122ارب ڈالرز کی جائیداد لینے سے صاف انکار کر دیالیکن وجہ کیا بتائی؟

وہ بیٹا جس نےاپنےباپ کی 122ارب ڈالرز کی جائیداد لینے سے صاف انکار کر دیالیکن وجہ کیا بتائی؟

سانحہ سیالکوٹ: معاملہ چیف جسٹس کے پاس پہنچ گیا لیکن اس میں کیا استدعا کی گئی؟ بڑی خبر 

سانحہ سیالکوٹ: معاملہ چیف جسٹس کے پاس پہنچ گیا لیکن اس میں کیا استدعا کی گئی؟ بڑی خبر 

10 دسمبر کو پاکستانیوں کو کیا بڑی خوشخبری ملنے جا رہی ہے ؟ عوام وزیر اعظم عمران خان کے انتظار میں بیٹھ گئی 

10 دسمبر کو پاکستانیوں کو کیا بڑی خوشخبری ملنے جا رہی ہے ؟ عوام وزیر اعظم عمران خان کے انتظار میں بیٹھ گئی 

سری لنکن منیجر کو قتل کرنے کے بعد ملزم کہاں چھپے ہوئے تھے؟ 6 اہم ترین گرفتاریاں  

سری لنکن منیجر کو قتل کرنے کے بعد ملزم کہاں چھپے ہوئے تھے؟ 6 اہم ترین گرفتاریاں  

انتہائی افسوسناک خبر، طیارہ گر کر تباہ، سوار تمام افراد چل بسے 

انتہائی افسوسناک خبر، طیارہ گر کر تباہ، سوار تمام افراد چل بسے