06:33 pm
ریاست مخالف  مواد  اور  سوشل  میڈیا  ضوابط  

ریاست مخالف  مواد  اور  سوشل  میڈیا  ضوابط  

06:33 pm

 قومی منظر نامے پر دو اہم امور توجہ طلب ہیں ۔ اول، بھارت کی سرپرستی میں یورپ کی سرزمین سے چلائے جانے والے پاکستان مخالف بین الاقوامی جعلی پروپیگنڈا نیٹ ورک کا بھانڈا پھوٹا ہے۔ دوم،حکومت پاکستان نے غیر قانونی یا قابلِ اعتراض مواد کی انٹرنیٹ پر ترویج کی روک تھام کے لئے نئے ضوابط منظور کرنے کا مستحسن قدم اٹھایا ہے۔ان دونوں معاملات میں گہرا ربط ہے۔ گزشتہ کالم میں بھی اس امر کی نشاندہی کی گئی تھی کہ پاکستان میں وسیع پیمانے پر انارکی اور عدم استحکام پھیلانے کے لئے منظم مہم جوئی کی جا رہی ہے۔ گو انٹرنیٹ جیسی اہم سہولت آج زندگی کا لازمی جزو بن چکی ہے لیکن بعض شیطانی سوچ کے حامل ممالک مختلف ڈیجیٹل پلیٹ فارمز کو منفی مقاصد کے لئے استعمال کر رہے ہیں۔لگ بھگ ڈیڑھ برس قبل پاکستان کے ریاستی اداروں نے تفتیش کے بعد یہ سراغ لگایا تھا کہ جعلی شناخت والے سوشل میڈیا اکائونٹس کو بھارت اور افغانستان سے چلایا جا رہا ہے۔یہ جعلی اکائونٹس چوبیس گھنٹے پاکستان میں لسانی تعصب ، فرقہ ورانہ نفرت اور متشدد باغیانہ افکار کا پرچار کرتے رہتے ہیں۔ایک جانب پاکستانی ریاست بھارتی سرپرستی میں چلنے والے دہشت گرد نیٹ ورکس کے خلاف برسرپیکار رہا جبکہ دوسری جانب انہی ریاست مخالف گروہوں کے ماسٹر مائنڈ اور سہولت کار سوشل میڈیا اور دیگر ڈیجیٹل پلیٹ فارمز پر بلا روک ٹوک زہریلا پروپیگنڈا کرتے رہے۔ ایسے متعدد واقعات سامنے آئے جن میں دہشت گرد تنظیموں نے کسی دوسرے ملک کی سرزمین پر بیٹھ کر پاکستان میں ناپختہ ذہنوں کو ورغلا کر اپنے شیطانی چنگل میں پھانسا۔یہ امر واقعہ ہے کہ بیرون ملک مورچہ زن علیحدگی پسند دہشت گرد مختلف سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کے ذریعے ریاست پاکستان کے خلاف جھوٹا پروپیگنڈا کر کے پسماندہ علاقوں کے نوجوانوں کو دہشت گردی کے لئے اکساتے رہے ہیں۔ پاکستان کو ایک ناکام ریاست کے طور پر پیش کرنے کے لئے سوشل میڈیا کے ذریعے جعلی معلومات پر مبنی مواد کی تشہیر کر کے عوام میں مایوسی اور غیر یقینی کی کیفیات ابھاری جاتی رہی ہیں۔  بھارت کی حکمران جماعت بی جے پی کے متعدد رہنما اور وزراء پاکستان کو نیست و نابود کرنے کے عزم کا اظہار کر چکے ہیں ۔ گو پاکستان نے بھارت کی طرف سے مسلط کردہ ففتھ جنریشن ہائبرڈ وار کا تذکرہ کئی مرتبہ کیا لیکن عالمی برادری نے اس معاملے پر زیادہ توجہ نہیں دی۔ پاکستان کے مغرب زدہ لبرل حلقوں نے عسکری اداروں سے روایتی بغض کا مظاہرہ کرتے ہوئے ففتھ جنریشن وار جیسے حساس معاملے پر ہمیشہ غیر سنجیدہ منفی تبصرے کئے۔خدا کی کرنی ہے کہ یورپ کی ایک تنظیم (ای یو ڈس انفولیب) نے بھارت کے جعلی پروپیگنڈا نیٹ ورک کا بھانڈا پھوڑ کر پاکستان کے تمام تحفظات کو سند بخش دی ہے۔ اس تنظیم کی ویب سائٹ پر دستیاب تفتیشی رپورٹ میں بھارت کی عالمی جعلسازی کو بے نقاب کرنے والے چشم کشا حقائق پیش کئے گئے ہیں۔ 
بھارت گزشتہ پندرہ برس سے سات سو پچاس سے زائد جعلی میڈیا ہائوسز اور دس سے زیادہ جعلی این جی اوز کی مدد سے اقوام متحدہ اور یورپی یونین،بین الاقوامی اداروں اور میڈیا کو پاکستان کے خلاف جھوٹی خبریں فراہم کر رہا تھا۔ رپورٹ میں واضح طور پر بیان کیا گیا ہے کہ پاکستان میں علیحدگی پسندی کو فروغ دینے کے لیے بھارت نے جعلی بلوچ تنظیم تشکیل دے کر خود ساختہ پروپیگنڈہ ویڈیوز اور تصاویر کا پرچار کیا۔ چودہ برس پہلے انتقال کر جانے والے انسانی حقوق کے معروف علمبردار پروفیسر لوئیس بی سون کی جعلی تصاویر اور بیانات کو جعلسازی سے استعمال کیا گیا۔ اس وسیع جعلسازی نیٹ ورک کا بنیادی مقصد پاکستان کو عالمی سطح پر بدنام کر کے اپنے بھیانک جرائم پر پردہ ڈالنا تھا۔اس مذموم واردات میں بھارتی نیوز ایجنسی اے این آئی بھی پیش پیش رہی جبکہ جعلسازی کے گھن چکر کی سرپرستی بھارت کا سری واستو گروپ کرتا رہا۔ اس تفتیشی رپورٹ کے طشت از بام ہونے کے بعد سے بھارتی میڈیا پر بھی سکتہ مرگ طاری ہے اور ان جعلی نیٹ ورکس کی خبروں کو بنیادبنا کر ریاستی اداروں کو رگیدنے والے پاکستانی لبرلز کی زبانیں بھی گنگ ہیں۔ یہ امر اب شبے سے بالا ہے کہ بھارت کی سرکردگی میں پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کے لئے سوشل میڈیا اور انٹرنیٹ کے ذریعے منظم مہم جوئی جاری ہے۔لسانی تعصب،فرقہ ورانہ تقسیم،سیاسی اختلافات،سفارتی تعلقات اور حساس مذہبی معاملات پر پاکستانی معاشرے میں تفریق پیدا کرنے کے لئے مسلسل غیر قانونی مواد پھیلایا جا رہا ہے۔ پاکستان میں ایسے قوانین کی کمی شدت سے محسوس کی جارہی تھی جن کے ذریعے ریاست مخالف غیر قانونی رجحانات کا سدباب کیا جاسکے ۔ وفاقی کابینہ نے اکتوبر کے پہلے ہفتے میں جو نئے ضوابط منظور کئے ہیں انہیں مرتب کرتے ہوئے متعلقہ کمیٹی نے بہت عرق ریزی کی ہے۔گو بعض حلقے ان ضوابط پر تحفظات کا اظہار کر رہے ہیں لیکن یہ طے ہے کہ دشمن ممالک کی ایما پر پھیلائے جانے والے ایسے غیر قانونی مواد کی کھلم کھلا ترویج کی اجازت ہر گز نہیں دی جاسکتی جو ملکی سالمیت،نظریاتی اساس،اندرونی استحکام اور ریاستی اداروں کو ہدف بناتا ہو۔ 

 

تازہ ترین خبریں

تیل کی قیمتیں کنٹرول سے باہر، عالمی مارکیٹ میں پھر کتنا اضافہ ہو گیا؟ تشویشناک خبر آگئی

تیل کی قیمتیں کنٹرول سے باہر، عالمی مارکیٹ میں پھر کتنا اضافہ ہو گیا؟ تشویشناک خبر آگئی

بجلی مہنگی اور مہنگی ، فی یونٹ قیمت میں اڑھائی روپے سے زائد اضافے کا امکان

بجلی مہنگی اور مہنگی ، فی یونٹ قیمت میں اڑھائی روپے سے زائد اضافے کا امکان

موسلا دھار بارشوں اور برفباری کا اگلا سلسلہ کب شروع ہو گا؟ محکمہ موسمیات نے کپکپادینے والی پیشنگوئی کر دی

موسلا دھار بارشوں اور برفباری کا اگلا سلسلہ کب شروع ہو گا؟ محکمہ موسمیات نے کپکپادینے والی پیشنگوئی کر دی

ڈالر 174روپے سے بھی تجاوز؟مہنگائی کے طوفان کیلئے ہو جائیں تیار،اوپن مارکیٹ سے ہوش اڑا دینے والی خبر آگئی

ڈالر 174روپے سے بھی تجاوز؟مہنگائی کے طوفان کیلئے ہو جائیں تیار،اوپن مارکیٹ سے ہوش اڑا دینے والی خبر آگئی

بلاول دل کا جانی ہے اسے 7 سیاسی خون بھی معاف ہیں، وفاقی وزیر نے دلچسپ بات کہہ دی

بلاول دل کا جانی ہے اسے 7 سیاسی خون بھی معاف ہیں، وفاقی وزیر نے دلچسپ بات کہہ دی

مریم نواز مسلسل نشانہ کیوں بنا رہیں ہیں ؟ سینئر صحافی نے اندر کی بات بتا دی

مریم نواز مسلسل نشانہ کیوں بنا رہیں ہیں ؟ سینئر صحافی نے اندر کی بات بتا دی

گوجرہ موٹروے ز ی ا د ت ی کیس، متاثرہ لڑکی کے مزید ہوشربا انکشافات، پولیس کا ساری کہانی سنا دی

گوجرہ موٹروے ز ی ا د ت ی کیس، متاثرہ لڑکی کے مزید ہوشربا انکشافات، پولیس کا ساری کہانی سنا دی

خلائی مخلوق نے ہمارے ایٹمی میزائل ناکارہ کر دیئے  امریکی ائیرفورس کے سابق کپتان کے دعوے نے تھرتھلی مچا دی

خلائی مخلوق نے ہمارے ایٹمی میزائل ناکارہ کر دیئے امریکی ائیرفورس کے سابق کپتان کے دعوے نے تھرتھلی مچا دی

’’اسحٰق ڈار نے نہ پاکستان کا پیسہ چوری کیا اور نہ ہی کوئی خفیہ بینک اکائونٹس ہیں‘‘ سابق وزیر خزانہ نے مقدمہ جیت لیا، نجی ٹی وی چینل کو معافی

’’اسحٰق ڈار نے نہ پاکستان کا پیسہ چوری کیا اور نہ ہی کوئی خفیہ بینک اکائونٹس ہیں‘‘ سابق وزیر خزانہ نے مقدمہ جیت لیا، نجی ٹی وی چینل کو معافی

موسمِ سرما کا باقاعدہ آغاز، کہاں کہاں برفباری جاری ہے؟ سیاحت کے شوقین افراد کی موجیں لگ گئیں

موسمِ سرما کا باقاعدہ آغاز، کہاں کہاں برفباری جاری ہے؟ سیاحت کے شوقین افراد کی موجیں لگ گئیں

بہت کر لیے مزے ، چلو استعفیٰ دو! وزیراعظم نے اپنے انتہائی قریبی ساتھی کی قربانی کا فیصلہ کر لیا

بہت کر لیے مزے ، چلو استعفیٰ دو! وزیراعظم نے اپنے انتہائی قریبی ساتھی کی قربانی کا فیصلہ کر لیا

نواز شریف کی نا اہلی کا فیصلہ واپس!ن لیگی کارکنان کو بڑی خوشخبری سنا دی گئی

نواز شریف کی نا اہلی کا فیصلہ واپس!ن لیگی کارکنان کو بڑی خوشخبری سنا دی گئی

آج کی سب سے بڑی خبر، ڈی جی آئی ایس آئی کے نام پر حکومت اور فوج کا اتفاق ہو گیا، نوٹیفیکیشن کب جاری ہو گا؟تصدیق کر دی گئی

آج کی سب سے بڑی خبر، ڈی جی آئی ایس آئی کے نام پر حکومت اور فوج کا اتفاق ہو گیا، نوٹیفیکیشن کب جاری ہو گا؟تصدیق کر دی گئی

 ایٹمی سائنسدان ڈاکٹرعبدالقدیرکی قبر پر مقبرہ بنایا جائے گا،نجی اخبارنے بڑادعویٰ کردیا

ایٹمی سائنسدان ڈاکٹرعبدالقدیرکی قبر پر مقبرہ بنایا جائے گا،نجی اخبارنے بڑادعویٰ کردیا