12:43 pm
امریکی جمہوریت کا کڑا امتحان

امریکی جمہوریت کا کڑا امتحان

12:43 pm

چار سال قبل ٹرمپ امریکی سیاست کے لیے ایک اجنبی نام تھا اور یہ تصور بھی محال تھا کہ وہ صدارتی انتخاب جیت لے گا۔ امریکی سیاست کے بااثر حلقوں میں شامل ہونے کی وجہ سے ہیلری کلنٹن کی جیت یقینی تھی۔ یہی وجہ تھی کہ کسی نے ٹرمپ کو سنجیدہ نہیں لیا اور صدارتی امیدواروں  کے لیے ہونے والی روایتی کڑی جانچ پڑتال  کے بغیر ہی انہیں میدان میں اترنے دیا گیا۔ 
ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکا کے ’’ریڈ نیک‘‘ (سرخ گردن) کہلائے جانے والے سفید فام امریکیوں کے جذبات کی ترجمانی کی۔ اس طبقے کی اکثریت فیکٹری مزدور ہے اور ری پبلکن پارٹی ان میں مقبول رہی ہے۔ اجرتوں کی زائد لاگت کے باعث امریکا کی کئی صنعتیں دوسرے ملکوں میں منتقل ہوگئیں۔ غیر ملکی تارکین وطن نے امریکا آکر مقامی سفید فام آبادی سے کم اجرتوں پر کام کرنا شروع کردیا اور لاکھوں سفید فام بے روزگار ہوگئے۔ ملک میں فرسودہ ہوتے انفرااسٹرکچر اور صنعتوں میں آنے والی جدت کا جائزہ لینے کے بجائے امریکا نے ترقی پذیر ممالک میں فلاح و بہبود کے منصوبوں پر دریا دلی سے امداد دی۔ امریکا اپنے بڑے شہروں میں بسی غربت زدہ آبادی کو نظر انداز کرتا رہا۔ ان شہری ملازمت اور مزدوری پیشہ حلقوں ہی میں ڈیموکریٹ پارٹی کی حمایت زیادہ تھی۔ نسلوں سے محفوظ روزگار رکھنے والے ان امریکیوں سے روزگار ہی چھن گیا۔ یہ وہ ہنر مند اور مزدور طبقہ تھا جو ہفتے کے باقی دن صرف کام کرتا ہے اور اتوار کو چرچ میں جمع ہوتا ہے اور ایک دوسرے سے مل جل کر وقت گزارتا ہے، ان کی زندگی اسی دائرے میں بسر ہوتی ہے ۔ ڈیڑھ سو سال پہلے ہونے والی خانہ جنگی کے بعد امریکی آبادی کا ایک محدود لیکن بااثر طبقہ نسل پرستانہ رجحان رکھتا ہے۔ بے روزگاری اور شدت پسندی نے نسل پرستی کے ان دبے انگاروں کو ہوا دے کر شعلوں میں تبدیل کردیا۔ اس طبقے کو اپنی طرز زندگی خطرے میں محسوس ہونے لگی اور ان کا سب سے بڑا خوف یہ تھا کہ غیر سفید فام آبادی ان پر غالب آجائے گی، ٹرمپ نے اسی دکھتی رگ پر ہاتھ رکھا۔ڈیموکریٹک پارٹی اور امریکی اسٹیبلشمنٹ کو اس صورت حال کا اندازہ ہونے تک بہت دیر ہوچکی تھی۔ ٹرمپ صدارت سنبھالنے کے بعد اپنے ہر وعدے پر قائم رہے۔ امریکی مفادات کے لیے ہر معاہدے پر کڑا  بھائوتائوکرکے نظر ثانی کروائی۔ اس سے بڑھ کر ٹرمپ کئی امریکی صنعتوں کو ملک واپس لے آئے اور انہیں امریکا میں کام کرنے پر مجبور بھی کیا۔ ٹرمپ نے امریکا کا تجارتی توازن بہتر کرنے کے لیے چین اور یورپ وغیرہ پر بھاری ٹیکس لگائے اور نیٹو کے بجٹ کے لیے دیگر نیٹو ارکان سے زیادہ بڑا حصہ ادا کروایا۔  روزگار کے مواقع پیدا ہونے اور ٹیکس میں بڑی چھوٹ ملنے سے لاکھوں امریکیوں کی زندگی میں بہتری آئی،غریب کو روزگار ملا اور امیرمزید امیر ہوگئے۔ وبا نے امریکی معیشت کی اس رفتار کو سست کردیا۔ پولیس کے خلاف احتجاج نے ’’بلیک لائیوز میٹرز‘‘ کے عنوان سے باقاعدہ ایک تحریک کی شکل اختیار کرلی جس میں سیاہ و سفید فام امریکی پولیس کی زیادتیوں کے خلاف یک زبان ہوگئے لیکن لبرل حلقوں کی جانب سے پولیس کے وسائل میں کٹوتی کے مطالبے نے روایتی امریکیوں کے کان کھڑے کردیے۔ وہ پہلے ہی اس احتجاج کو قانون کی پسپائی سمجھتے تھے تاہم ایسے مطالبات کے بعد انہوں نے اس تحریک کو بیرونی ’’سوشلسٹ‘‘ یا اشتراکی خطرے کے طور پر دیکھنا شروع کردیا۔ یہاں تک کہ سیاہ فاموں میں بھی یہ تشویش پیدا ہوگئی کہ کہیں حالات قابو سے باہر نہ نکل جائیں۔ ٹرمپ نے  افغانستان میں جاری غیر مختتم نظر آنے والی جنگ کو ختم کرنے،عراق اور شام وغیرہ سے اپنی فوج واپس لانے کا وعدہ کیا تھا۔ نیٹو بھی ان جنگ زدہ علاقوں سے نکلنے کے لیے آمادہ ہوگئی۔ امریکا کی معاشی ترقی کے لیے درکار سرمایہ بے دریغ ان جنگوں میں صرف ہورہا تھا۔ اس بار ٹرمپ کے  مخالف عناصر ایک جگہ جمع ہوگئے اور تہیہ کرلیا کہ اسے دوبارہ منتخب نہیں ہونے دیں گے۔ انتخابی مہم ابھی شروع ہی ہوئی تھی کہ امریکا کو وبا نے آلیا۔ جوبائیڈن کئی ڈیموکریٹ امیدواروں میں سے ایک تھے لیکن بدلتے حالات نے انہیں بہتر امیدوار بنا دیا۔برنی سینڈر نے ٹرمپ کو شکست دینے کے مشترکہ مقصد کے تحت بائیڈن کے ساتھ ٹکر کا مقابلہ کیا۔     (جاری ہے)

تازہ ترین خبریں

نئے مون سون سسٹم کی پاکستان میں دھماکے دار انٹری۔۔ کراچی سے خیبر تک بارشیں ہی بارشیں ؟محکمہ موسمیات نے الرٹ جاری کردیا 

نئے مون سون سسٹم کی پاکستان میں دھماکے دار انٹری۔۔ کراچی سے خیبر تک بارشیں ہی بارشیں ؟محکمہ موسمیات نے الرٹ جاری کردیا 

بچوں کے مستقبل سے کھلواڑ۔۔پاکستان کی بڑی سرکاری یونیورسٹی نے جعلی ڈگریاں جاری کردیں، گندے دھندے میں کون کون ملوث ہے؟والدین اور طلبا یہ ضرور

بچوں کے مستقبل سے کھلواڑ۔۔پاکستان کی بڑی سرکاری یونیورسٹی نے جعلی ڈگریاں جاری کردیں، گندے دھندے میں کون کون ملوث ہے؟والدین اور طلبا یہ ضرور

ہمیں دور دراز علاقوں میں پٹرول پمپ کی فراہمی  کو یقینی بنانا چاہیے۔عارف علوی

ہمیں دور دراز علاقوں میں پٹرول پمپ کی فراہمی کو یقینی بنانا چاہیے۔عارف علوی

 ماسک صحیح طریقے سے نہ پہننے کامعاملہ ۔۔۔ پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان کو امریکی ائیرلائن  اتاردیاگیا 

 ماسک صحیح طریقے سے نہ پہننے کامعاملہ ۔۔۔ پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان کو امریکی ائیرلائن  اتاردیاگیا 

ویلکم ۔۔خوش آمدید۔۔ڈاکٹر ذاکر نائیک کب پاکستان آ رہے ہیں۔۔؟ دشمنوں کی نیندیں حرام کردینےوالی خبر

ویلکم ۔۔خوش آمدید۔۔ڈاکٹر ذاکر نائیک کب پاکستان آ رہے ہیں۔۔؟ دشمنوں کی نیندیں حرام کردینےوالی خبر

ظلم کی انتہائی ، بااثرملزمان نے لڑکی کا نازک اعضا کات دیا، افسوسناک واقعہ پاکستان کے کون سے شہر میں پیش آیا؟جانیے

ظلم کی انتہائی ، بااثرملزمان نے لڑکی کا نازک اعضا کات دیا، افسوسناک واقعہ پاکستان کے کون سے شہر میں پیش آیا؟جانیے

شہباز شریف اور بلاول بھٹو ٹھپہ مافیا کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں، فرخ حبیب

شہباز شریف اور بلاول بھٹو ٹھپہ مافیا کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں، فرخ حبیب

 سندھ میں کورونا ویکسینیشن نہ کروانے والوں کو گرفتار کرنے کا فیصلہ

سندھ میں کورونا ویکسینیشن نہ کروانے والوں کو گرفتار کرنے کا فیصلہ

 لاہور  ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے والے جہاز پر نا معلوم شخص کی جانب سے  لیزر لائٹ  مارنے کا واقعہ،  مقدمہ درج

لاہور ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے والے جہاز پر نا معلوم شخص کی جانب سے لیزر لائٹ مارنے کا واقعہ، مقدمہ درج

صوابی یونیورسٹی سے جعلی ڈگریاں جاری ہونے کا انکشاف،یونیورسٹی کے چار اہلکاروں کے ملوث ہونے کی تصدیق

صوابی یونیورسٹی سے جعلی ڈگریاں جاری ہونے کا انکشاف،یونیورسٹی کے چار اہلکاروں کے ملوث ہونے کی تصدیق

خیبر پختونخوامیں کل شام سے بارشوں اور تیز ہواؤں کا نیاسلسلہ شروع ہونے کاامکان

خیبر پختونخوامیں کل شام سے بارشوں اور تیز ہواؤں کا نیاسلسلہ شروع ہونے کاامکان

تحریک انصاف سے لوٹے اور آزاد امیدوار نکا ل دیں توباقی کون بچتاہے؟عظمیٰ بخاری نے ایسی بات کہہ دی جس سے کھلاڑی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

تحریک انصاف سے لوٹے اور آزاد امیدوار نکا ل دیں توباقی کون بچتاہے؟عظمیٰ بخاری نے ایسی بات کہہ دی جس سے کھلاڑی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

 مسلم لیگ (ن) نے  الیکشن کمیشن سے وفاقی وزراء کو سزا دینے کا مطالبہ کر دیا

مسلم لیگ (ن) نے الیکشن کمیشن سے وفاقی وزراء کو سزا دینے کا مطالبہ کر دیا

 انتخابات میں الیکٹرونک ووٹنگ مشین کا استعمال ناگزیر ہے کوئی ‏بھی الیکشن ہوں دھاندلی کےالزامات لگائےجاتےہیں۔سینیٹر فیصل جاوید 

 انتخابات میں الیکٹرونک ووٹنگ مشین کا استعمال ناگزیر ہے کوئی ‏بھی الیکشن ہوں دھاندلی کےالزامات لگائےجاتےہیں۔سینیٹر فیصل جاوید