12:43 pm
17رمضان المبارک۔۔۔یوم الفرقان حق و باطل کا پہلا معرکہ

17رمضان المبارک۔۔۔یوم الفرقان حق و باطل کا پہلا معرکہ

12:43 pm

  اسلام اور کفر کے درمیان پہلا معرکہ بدر کے مقام پر2ھ 17رمضان المبارک کو ہواجس میں اللہ تعالیٰ نے اسلام کو شاندار فتح سے نوازااورکفر کی کمر توڑ کر رکھ دی ۔اس لئے  17رمضان المبارک کو اللہ تعالیٰ نے یوم الفرقان کانام دیاہے۔یہ روئے زمین کی پہلی جنگ تھی جو اسلحہ اور ظاہری مال و اسباب کے بجائے اللہ پرکامل ایمان اور ایقان کی بنیاد پر لڑی گئی۔ بدر مکہ اور مدینہ سے شام جانے والے تجارتی قافلوں کی گزر گاہ پر ایک چھوٹا سا گائوں تھا جس کے اردگرد چھوٹے پہاڑی ٹیلے تھے ۔تجارتی راستہ ہونے کی وجہ سے اس کی ایک خاص اہمیت تھی ۔میدان بدر مدینہ منورہ سے قریباً 80اورمکہ سے دو سو بیس میل کے فاصلے پر تھا۔
 مسلمانوں کے مکہ سے ہجرت کرکے مدینہ چلے جانے کے بعد اسلام دشمن خصوصاًسرداران قریش بہت جز بز ہورہے تھے اوراپنے ہاتھ مل رہے تھے کہ مسلمان اپنی جانیں بچا کر ان کے ہاتھ سے نکل گئے علاوہ ازیں مکہ کے مشرک اور اسلام دشمن سرداروں کو یہ خوف بھی لاحق تھا کہ مسلمان قوت پکڑ کر اس تجارتی راستے کو بند کردیں گے اور مکہ کی تجارت اور کاروبار ختم ہوجائے گا۔کفار مکہ دن رات اسی سوچ بچار میں تھے کہ کسی طرح مسلمانوں کو ہمیشہ کے لئے کچل دیا جائے ،وہ غصے اور انتقام کی آگ میں جھلس رہے تھے اورمدینہ پر چڑھ دوڑنے کا بہانہ ڈھونڈ رہے تھے۔انہی دنوں مکہ کا ایک تجارتی قافلہ ابو سفیان کی قیادت میں شام سے مال تجارت لے کر واپس آرہا تھا ۔اس قافلے کی حفاظت کی آڑ میں سرداران قریش نے ایک ہزار جنگجوئوں کا بہت بڑا لشکر تیارکیا جو ہر طرح کے اسلحہ سے لیس تھا۔
نبی مہربان حضرت محمدﷺ کو مدینہ پر حملہ کی غرض سے قریشی لشکر کی آمد کی اطلاع ملی تو آپﷺ نے مجلس مشاورت بلوائی اور خطرے سے نپٹنے کے لیے تجاویز طلب فرمائیں۔ مہاجرین نے جانثاری کا یقین دلایا۔ آپﷺنے دوبارہ مشورہ طلب کیا تو انصار میں سے سعد بن عبادہؓ نے عرض کیا کہ غالباً آپ  ؐکا روئے سخن ہماری طرف ہے۔ آپ ؐنے فرمایا ہاں۔ حضرت سعد بن عبادہؓ نے عرض کیا کہ’’یا رسول اللہﷺ! ہم آپؐ پر ایمان لائے ہیں۔ ہم نے آپ ؐکی تصدیق کی اور گواہی دی ہے کہ جو کتاب آپﷺ لائے ہیں وہ حق ہے اور ہم نے آپ ؐکی اطاعت اور فرمانبرداری کا عہد کیا ہے۔ یا رسول اللہﷺ آپؐ جس طرف جانے کا حکم دیں گے ہم میں کوئی ایک بھی اس سے پیچھے نہیں ہٹے گا۔ قسم ہے اس ذات کی جس نے حق کے ساتھ آپﷺ کو معبوث کیا اگر آپؐ ہمیں سمندر میںکود جانے کا حکم دیں گے تو ہم سمندر میں کود جائیں گے‘‘۔
حضرت مقداد ؓنے عرض کیا’’ہم موسیٰؑ کی امت کی طرح نہیں ہیں جس نے موسیٰؑ سے کہا کہ تم اور تمہارا رب جاکر دشمن سے لڑو۔ ہم تو یہاں بیٹھ کر دیکھیں گے ، بلکہ ہم آپ ﷺکے دائیں بائیں اور آگے پیچھے آپﷺ کے ساتھ لڑیں گے‘‘۔
غزوہ بدر میں مسلمانوں کی فتح کا سب سے بڑا اور اصل سبب نصرت الہٰی تھا۔ اللہ تبارک و تعالیٰ سے حضور نبی اکرمؐ نے نہایت گریہ وزاری سے دعا فرمائی ، ’’اے خدا! یہ قریش ہیں اپنے سامان غرور کے ساتھ آئے ہیں تاکہ تیرے رسول کو جھوٹا ثابت کریں۔ اے اللہ! اب تیری وہ مدد آجائے جس کا تو نے مجھ سے وعدہ فرمایا۔ اے اللہ ! اگر آج یہ مٹھی بھر نہتے لوگ مارے گئے تو پھر روئے زمین پر تیری عبادت کرنے والا کوئی نہیں بچے گادعا کے دوران آپﷺ کی داڑھی مبارک آنسوئوں سے بھیگی ہوئی اور ہچکی بندھی تھی۔ آپﷺ کے کندھوں پر پڑی ہوئی چادر بار بار نیچے گر جاتی جسے حضرت ابوبکر صدیق ؓ اٹھا کر آپﷺ کے کندھوں پر ڈال دیتے اور ساتھ ساتھ حضورﷺ کی ڈھارس بندھاتے کہ اللہ تعالیٰ آپﷺ کو تنہا نہیں چھوڑے گا اور آپ ؐ کی ضرور مدد کرے گا۔ 
اس کے جواب میں اللہ تعالیٰ نے آپﷺ کو فتح کی بشارت دی اور ایک ہزار فرشتوں سے امداد فرمائی جس کا ذکر اللہ تعالیٰ نے سورۃ الانفال میں کیا ہے۔جنگ سے ایک روز قبل آپﷺ نے میدان بدر کا معائنہ فرمایا ،آپﷺ کے ہاتھ میں چھڑی تھی جس سے آپ ؐ نے میدان میں مختلف جگہ پر دائرے لگائے اور فرمایا کہ ابوجہل یہاں قتل ہوگا،ولید،عتبہ اور شیبہ یہاں قتل ہوگا۔جنگ کے بعد صحابہ ؓ نے دیکھا کہ ان مشرک سرداروں کی لاشیں اسی جگہ پڑی تھیں جہاں آپﷺ نے نے دائرے لگائے تھے۔
جنگ بدر میں مسلمانوں کی کل تعداد محض 313نفوس قدسیہ پر مشتمل تھی ،ان میں سترہ سالہ نوجوان عمیر سے لے کر ساٹھ سالہ بوڑھے تک سب لوگ شامل تھے۔جنگی مال و اسباب اور اسلحہ کی شدید قلت تھی ۔محض دوگھوڑے اور 70اونٹ تھے۔لڑنے والوں کے پاس ڈھنگ کی تلواریں بھی نہیں تھیں مگر اللہ کے ان سپاہیوں کو جنگی اسلحہ اور اپنی قوت بازو سے زیادہ اللہ کی مدد اور نصرت کا یقین تھا۔
کافر ہے تو شمشیر پہ کرتا ہے بھروسہ
مومن ہے تو بے تیغ بھی لڑتا ہے سپاہی 
(جاری ہے)

تازہ ترین خبریں

 ن لیگ کے بجلی کے منصوبے موجودہ حکومت سے نہیں چل رہے، مہنگائی اور بجلی بلوں میں اضافہ سے عوام تنگ آ چکی ہے۔احسن اقبال

ن لیگ کے بجلی کے منصوبے موجودہ حکومت سے نہیں چل رہے، مہنگائی اور بجلی بلوں میں اضافہ سے عوام تنگ آ چکی ہے۔احسن اقبال

 حکومت کی جانب سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین انتخابات میں دھاندلی کے لئے استعمال کرنے کی کوشش ہے ۔ فرحت اللہ بابر

حکومت کی جانب سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین انتخابات میں دھاندلی کے لئے استعمال کرنے کی کوشش ہے ۔ فرحت اللہ بابر

سندھ حکومت نے تھر کے 200گائوں کےلئے 28کروڑروپے مختص کردیے

سندھ حکومت نے تھر کے 200گائوں کےلئے 28کروڑروپے مختص کردیے

سندھ کے اندر جمہوریت کے نام پر ڈکٹیٹرشپ موجود ہے۔ سندھ میں اگلی حکومت پاکستان تحریک انصاف کی ہوگی۔فواد چوہدری

سندھ کے اندر جمہوریت کے نام پر ڈکٹیٹرشپ موجود ہے۔ سندھ میں اگلی حکومت پاکستان تحریک انصاف کی ہوگی۔فواد چوہدری

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

چشتیاں میں کنویںکی دیوار بناتے ہوئے زمین بیٹھ گئی ۔۔۔ 3 مزدور جاں بحق

چشتیاں میں کنویںکی دیوار بناتے ہوئے زمین بیٹھ گئی ۔۔۔ 3 مزدور جاں بحق

لاہور میں تیز آندھی اور گرد آلود ہواؤں کے باعث 120 فیڈرز پر بجلی معطل ہو گئی۔

لاہور میں تیز آندھی اور گرد آلود ہواؤں کے باعث 120 فیڈرز پر بجلی معطل ہو گئی۔

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

 پی ‏ٹی آئی کی حکومت نےگالم گلوچ کی سیاست کی بنیادڈالی ہے۔وزیراطلاعات سید ناصرحسین شاہ

پی ‏ٹی آئی کی حکومت نےگالم گلوچ کی سیاست کی بنیادڈالی ہے۔وزیراطلاعات سید ناصرحسین شاہ

 پاکستان ایک پرامن، خود مختار اور مستحکم افغانستان کا خواہاں ہے۔شاہ محمود قریشی

پاکستان ایک پرامن، خود مختار اور مستحکم افغانستان کا خواہاں ہے۔شاہ محمود قریشی

 ہر طرح کی کرپشن کے خاتمے پر یقین رکھتے ہیں، معصوم پاکستانیوں کے اربوں لوٹنے والوں سے قانون کے مطابق نمٹیں گے۔ چیئرمین نیب

ہر طرح کی کرپشن کے خاتمے پر یقین رکھتے ہیں، معصوم پاکستانیوں کے اربوں لوٹنے والوں سے قانون کے مطابق نمٹیں گے۔ چیئرمین نیب

 محترمہ بینظیر بھٹو شہید نے جس نظریے کے لئے اپنی جان کا نذرانہ دیا وہ نظریہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ آصف علی ذرداری 

 محترمہ بینظیر بھٹو شہید نے جس نظریے کے لئے اپنی جان کا نذرانہ دیا وہ نظریہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ آصف علی ذرداری 

محلےکے لڑکوں سے ناجائز تعلقات پر 14سالہ لڑکی کو مار ڈالا گیا

محلےکے لڑکوں سے ناجائز تعلقات پر 14سالہ لڑکی کو مار ڈالا گیا

 الیکشن سے پہلے عوام کو بڑے بڑے خواب دکھائے گئے مگر نہ معیشت بہتری ہوئی اور نہ ہی ایک کروڑ نوکریاں دی گئیں ۔مفتاح اسماعیل

الیکشن سے پہلے عوام کو بڑے بڑے خواب دکھائے گئے مگر نہ معیشت بہتری ہوئی اور نہ ہی ایک کروڑ نوکریاں دی گئیں ۔مفتاح اسماعیل