01:36 pm
کراچی الیکشن کا تماشا! سارے جیت گئے، سارے ہار گئے!

کراچی الیکشن کا تماشا! سارے جیت گئے، سارے ہار گئے!

01:36 pm

٭’’ملک سے پیسہ چوری کر کے باہر لے جانے والے غدار ہیں‘‘ وزیراعظم!O کراچی: الیکشن کمشن کا ایک اور ’’ڈسکہ شو‘‘ ضمنی انتخاب، سارے جیت گئے، سارے ہار گئے! ساروں نے جشن منایا، سارے رو رہے ہیں! آپس میں گتھم گتھا!O بلاول اور مریم نواز پھر آمنے سامنے! O بھارت، کرونا، خوفناک اضافہ، ایک روز میں تین لاکھ 94 ہزار نئے مریض 3351 ہلاک O ’’مجھ سے ٹکٹیں دینے میں بہت غلطیاں ہوئیں‘‘ عمران خاںO اپنے بیان پر قائم ہوں: بشیر میمنO لاہور کا متنازعہ سی سی پی او عمر شیخ، پنجاب بدرO پشاور: کرونا کی خلاف ورزی والا وزیر صحت، ضمانت کی درخواستO وزیراعظم عمران 7 مئی کو سعودی عرب جائیں گےO بھارت کی چین سے امداد کی اپیل!!!
٭وزیراعظم عمران خان میں ایک ’خوبی‘ کا معترف ہوں کہ منہ میں جو آئے کہہ دیتے ہیں، جو جی میں آئے کر دیتے ہیں۔ بعد میں سوچنا شروع کرتے ہیں کہ کیا کہا، کیا کیا؟ گزشتہ روز اپنے کہے اور کئے پر دوباتیں صاف صاف کہہ دیں۔ ایک یہ کہ ’’ملک کا پیسہ چوری کر کے باہر لے جانے والے غدار ہیں‘‘ دوسری بات، ایک پچھتاوا کہ انہوں نے غلط افراد کو ٹکٹیں دینے کی غلطیاں کیں! جہاں تک پیسے باہر لے جانے والے ’غداروں‘ کا ذکر ہے تو اس میں بہت سے نام آ سکتے ہیں مثلاً نوازشریف، شہباز شریف، مریم نواز، حسین نواز، حسن نواز، سلمان شہباز، اسحاق ڈار، آصف زرداری، بلاول زرداری، خسرو بختیار، جہانگیر ترین، اعظم سواتی، ندیم بابر، چودھری برادران، عشرت العباد، پرویز مشرف، ایڈمرل منصور الحق‘‘ طویل فہرست ہے، ان سب افراد کی بیرون ملک دولت کے انباروں، محلات،فلیٹوں، فارم ہائوسوں، پلازوں، اربوں کھربوں کے وسیع کاروباروں کو جمع کیا جائے تو اندازہ ہوتا ہے کہ ان لوگوں نے تو پاکستان میں کچھ چھوڑا ہی نہیں بلکہ معاہدہ کے مطابق پاکستان کے کپڑے بھی اتروا کر باہر لے گئے ہیں! استغفار، استغفار!! ان سب کو میں نے نہیں، عمران خان نے ’غدار‘ کہا ہے! غلط کہا ہے تو عدالت میں کارروائی کریں!!
اب دوسری بات بلکہ اعتراف…!! وزیراعظم عمران خاں نے فرمایا ہے کہ میں نے ٹکٹیں دیتے وقت بہت غلطیاں کیں، اب سوچتا ہوں کہ فلاں وزارت پر اچھا وزیر لانا چاہئے تھا‘‘!! اب ڈھائی سال بعد افسوس کا کیا فائدہ!! جو بات سارے لوگ ڈھائی سال پہلے کہہ رہے تھے وہ اب وزیراعظم کی سمجھ میں آئی ہے۔ ڈھائی برسوں میں وزراء نے کام تو جو کچھ بھی کیا، ان کے تھپڑ اور میز پر جوتے رکھنے کے ناقابل بیان قصے زیادہ مشہور ہوئے! اب یاد آ رہا ہے کہ کابینہ میں بہتر لوگ آنے چاہئیں تھے!! اب تک جو کچھ ہوا ہے اس کا نتیجہ نوشہرہ، ڈسکہ اور کراچی کے ضمنی انتخابات میں سامنے آ چکا ہے! کراچی میں ڈھائی سال قبل تحریک انصاف کا جوتا بردار امیدوار ’بھاری‘ اکثریت سے جیتا تھا،اب ضمنی انتخاب میں اس پارٹی کا امیدوار پانچویں نمبر پر!! میراثی کا بیٹا اوپر کی جماعتوں سے فیل ہوتا ہوتا پہلی جماعت تک آ گیا تو میراثی نے بیوی سے کہا کہ دروازہ کھلا رکھنا، بیٹا مستقل طور پر واپس آ رہا ہے!! ایک چھوٹی سطح کی بات، ایک فلمی گیت کا بول کہ ’’چل ری سجنی، اب کیا سوچے! کجرا نہ بہہ جائے روتے روتے!!‘‘
٭اور اب الیکشن کمیشن کی مختلف آنیاں جانیاں، نت نئے تماشے!! ڈسکہ کے تھیٹر کے قصے ابھی چل رہے تھے کہ کراچی کا تماشا! ملک کا یا شائد دنیا بھر کا واحد تماشا کہ پہلے سارے ہنسے، جشن منائے، پھر سارے رونے لگے کہ یہ کیا ہو گیا؟ دایاں ہاتھ دکھا کر بایاں مار دیا! 29 اور30 اپریل کی درمیانی رات میں 3 بجے تک کراچی کے ضمنی انتخاب کے نتائج نوٹ کرتا رہا۔ 3 بجے تک ن لیگ کا امیدوار بھاری اکثریت کے ساتھ جیت رہا تھا۔ صبح ٹیلی ویژن کھولا تو معلوم ہوا کہ پیپلزپارٹی کا امیدوار 683 ووٹوں کی اکثریت سے جیت چکا ہے۔ اس واقعے کو پیپلزپارٹی کے نوجوان چیئرمین بلاول زرداری نے تاریخی کامیابی قرار دیا ہے۔ بات تو درست ہے کہ 29 کی تاریخ 30 میںبدلتے ہی سب کچھ بدل گیا! تاریخی کامیابی!! اور اب!! پیپلزپارٹی والے واویلا کر رہے ہیں کہ ’’دشمنوں‘‘ (ن) لیگ) کو پیپلزپارٹی کی شاندار کامیابی ہضم نہیں ہو رہی۔ بلاول گئے وقتوں میں کبھی ساتھ مل کر بیٹھنے والی خاتون مریم نواز کو سمجھا رہا ہے کہ بی بی! عزت کے ساتھ ہارنے کی عادت سیکھو!!
 اور محترمہ کا تیز جواب آ رہا ہے کہ کراچی کی یہ سیٹ ہماری ہے، شیر کو کوئی نہیں ہرا سکتا، ہم اس سیٹ پر آ رہے ہیں!‘‘ واپسی کے لئے الیکشن کمیشن سے دوبارہ گنتی کا مطالبہ اور عدالت میں جانے کا اعلان کر دیا گیا ہے۔ زمانہ کیسا ظالم، تاریخ کیسی بے لحاظ ہے! کبھی ایک دوسرے کو مرغ پلائو اور بُھنی مچھلی کھلانے والے اور ایک دوسرے کے ساتھ پھنس کر بیٹھنے والے اب ایک دوسرے کو آنکھیں دکھا رہے ہیں، گھور رہے ہیں!! دنیا کے رنگ! بلاول جس طرح مریم نواز کو طعنے دے رہا اس سے ایسے ہی چلتے چلتے بچوں کا گیت یاد آ گیا ہے کہ ’’نانی! تیری مورنی کو مور لے گئے، باقی جو بچا تھا، کالے چور لے گئے!! قارئین کرام! کالم میں زیادہ گنجائش نہیں، کراچی کے قصے پر صرف دو تین باتیں اور تبصرہ خود کر لیں۔ ن لیگ کی ترجمان مریم اورنگزیب کا بیان: ’’پیپلزپارٹی چوروں ڈاکوئوں کی جماعت ہے، اس نے ن لیگ کے ووٹ چرا لئے ہیں!‘‘ جواب میں پیپلزپارٹی کے ترجمان سعید غنی کی غزل ’’مریم اورنگزیب جھوٹی‘‘ باقی باتیں ناقابل اشاعت!
٭کرونا کا نام سامنے آتے ہی آنکھوںمیں اندھیرا چھانے لگتا ہے۔ پاکستان میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ بھی قیامت ہی ہے مگر بھارت!! قیامت بالائے قیامت! بدھ کو تین لاکھ 79 ہزار، جمعرات کو تین لاکھ 86 ہزار اور جمعہ کے روز تین لاکھ 94 ہزار نئے مریض، 3531  ہلاک، یہ تعداد بڑھ رہی تھی۔ بھارت کو وزیراعظم نریندر مودی کی انتہا پسندی اور شدید نااہلی و نالائقی پر ہر طرف سے الفاظ کے جوتے پڑ رہے ہیں! اس کی شان میں ہر وقت تالیاں بجانے والا میڈیا اس کے خلاف ابل پڑا ہے حتیٰ کہ مسلح افواج کا جائنٹ چیئرمین ’جنرل بپن راوت‘ بھی چیخ پڑا ہے کہ بہت ہو گئی ہے اب مسلح افواج میدان میں بھیج رہا ہوں! اور ستم! نریندر مودی کرونا کی تباہی کے دوران بنگال آسام میں انتخابی تقریریں کرتا رہا، کرونا کی تباہی روکنے پر کوئی دھیان نہ رہا بلکہ قوم پر شدید ظلم کہ بنارس میں ہر بارہ سال بعد ہونے والے کنبھ میلے کو روکنے کی بجائے اس کی عام اجازت دے دی اور عالم یہ کہ دریائے گنگا پر ’بنارس اور ہردوار‘ کے مقامات پر میلوں تک پھیلے 70 لاکھ ہندوئوں نے دس روز تک میلہ رچایا ! ایک دوسرے کے ساتھ مل کر دریا میں  اشنان کیا اور مذہبی گانے گائے! دوسرے ممالک، عالمی ادارہ صحت اور اقوام متحدہ تک چیختے رہ گئے کہ یہ کیا ہو رہا ہے؟ مگر مودی نے ایک نہ سنی! اب صورت حال یہ ہے کہ پورے بھارت میں مودی کے خلاف نفرت کے مظاہرے شروع ہو گئے ہیں۔ ٹیلی ویژنوں کے اینکر پرسن اسے کھلی گالیاں دے رہے ہیں، نااہل، نالائق، دھوکے باز، چائے بیچنے والا کم ذات! اور کیا کیا! اور پھریہ عبرت کہ اس کے بہت ’عزیز‘ امریکہ سے ابھی تک کوئی امداد نہ پہنچی تو اس کے وزیرخارجہ جے شنکرکو اپنے دشمن چین کے وزیرخارجہ ’’یو جنگ‘‘ کو فون کرنا پڑا کہ بھارتی تاجر چین سے ویکسین وغیرہ کا خام مال خرید رہے ہیں، انہیں یہ سامان لانے کے لئے چین کی فضا اور زمینی راستے استعمال کرنے کی اجازت دی جائے۔ چین نے یہ اجازت دینے کے ساتھ بھاری امداد دینے کی پیش کش بھی کر دی ہے۔ چین کے صدر نے کہا ہے کہ مصیبت کا یہ موقع انسان دوستی کا ہے، ہم ہر قسم کی امداد بھیجنے کو تیار ہیں… اور اور دلچسپ بات یہ کہ امداد بھیجنے کی پیش کش کے ساتھ یہ یاد دہانی بھی کہ چین بھارتی سرحدی زمین پر قبضہ نہیں چھوڑ سکتا!!
٭بہت سے قریبی لوگ چلے گئے، جا رہے ہیں، کیا کیا نام لیا جائے؟ روزنامہ اوصاف کے چیف ایڈیٹر جناب مہتاب خاں کے بڑے بھائی محترم راجہ عبارت حسین بھی ابدی سفر پر روانہ ہو گئے! میں نے پہلے روز ہی ویب سائٹ پر تعزیت کر دی تھی۔ بڑے بھائی باپ کی حیثیت رکھتے ہیں۔ چھوٹے بھائی کتنے ہی آگے بڑھ جائیں، بڑے بھائی کا سایہ ہر حال میں  بڑا ہی ہوتا ہے۔ ایک بار پھر جناب مہتاب خاں سے دلی دکھ اور ان کے غم میں شرکت کا اظہار کرتا ہوں۔ خدا تعالیٰ مرحوم پر رحمت برسائے!
 

تازہ ترین خبریں

یا اللہ رحم۔۔کراچی میں شدید بارشیں اور آندھی۔۔کتنے افراد جاں کی بازی ہار گئے۔۔ خبر نے دل چیر دیئے

یا اللہ رحم۔۔کراچی میں شدید بارشیں اور آندھی۔۔کتنے افراد جاں کی بازی ہار گئے۔۔ خبر نے دل چیر دیئے

نفیسہ شاہ اور شیریں مزاری آمنے سامنے۔۔۔۔  ایک دوسرے پر نقل کرنے کا الزام لگادیا

نفیسہ شاہ اور شیریں مزاری آمنے سامنے۔۔۔۔  ایک دوسرے پر نقل کرنے کا الزام لگادیا

عمران خان نے ریحام خان سے جان چھڑوانے کےلئے جہانگیر ترین سے مدد مانگی تھی

عمران خان نے ریحام خان سے جان چھڑوانے کےلئے جہانگیر ترین سے مدد مانگی تھی

 سندھ سے انتہائی بری خبر ۔۔۔۔۔ 11 افراد جاں بحق ہوگئے 

 سندھ سے انتہائی بری خبر ۔۔۔۔۔ 11 افراد جاں بحق ہوگئے 

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

ذاتی رنجش پر مخالفین نے زمیندار کی بھینس کر زہردے کر مار ڈالا

ذاتی رنجش پر مخالفین نے زمیندار کی بھینس کر زہردے کر مار ڈالا

ماروی سرمد کے حیران کن ماضی سے پردہ اٹھا دینے والی تحریر

ماروی سرمد کے حیران کن ماضی سے پردہ اٹھا دینے والی تحریر

پی ڈی ایم کو دوبارہ فعال کرنے کی تیاریاں

پی ڈی ایم کو دوبارہ فعال کرنے کی تیاریاں

پاکستانیوں کیلئے ایک اوربڑی خوشخبری۔۔صوبہ بلوچستان میں گیس کے نئے ذخائر دریافت کرلیے گئے۔

پاکستانیوں کیلئے ایک اوربڑی خوشخبری۔۔صوبہ بلوچستان میں گیس کے نئے ذخائر دریافت کرلیے گئے۔

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ 

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ 

رنگ روڈ میگا سیکنڈل پر پیپلزپارٹی نے وزیراعظم سمیت اسکینڈل میں ملوث وزراء سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کر دیا

رنگ روڈ میگا سیکنڈل پر پیپلزپارٹی نے وزیراعظم سمیت اسکینڈل میں ملوث وزراء سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کر دیا

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضبط شدہ جائیدادوں کو نیلام کرنے کا فیصلہ۔۔۔بولی کی تاریخ بھی مقر ر 

سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضبط شدہ جائیدادوں کو نیلام کرنے کا فیصلہ۔۔۔بولی کی تاریخ بھی مقر ر