12:47 pm
کھوکھلی باتیں

کھوکھلی باتیں

12:47 pm

ہمارے شاہ جی کتنی سرعت سے اپنی کانسپریسی تھیوریاں بدلتے ہیں اس پر ہم سب نے حیران ہونا چھوڑ دیا ہے۔ ایک طرح سے ہم سب ان کے مشکور ہیں کہ و ہ اپنی
ہمارے شاہ جی کتنی سرعت سے اپنی کانسپریسی تھیوریاں بدلتے ہیں اس پر ہم سب نے حیران ہونا چھوڑ دیا ہے۔ ایک طرح سے ہم سب ان کے مشکور ہیں کہ و ہ اپنی تھیوریاں تبدیل کرکے ہمیں نہ صرف تفریح مہیا کرتے ہیں بلکہ کبھی کبھی وہ بڑے پتے کی بات بھی کہہ جاتے ہیں۔ اس کے علاوہ یہ بات بھی ہے کہ وہ ہمیں اپنی تھیوریاں سنانے کی قیمت سموسوں ، پکوڑوں اور کیک کی شکل میں ادا  بھی کرتے ہیں۔ کل بھی انہوں نے عشاء اور تراویح کے بعد ایک تقریب رکھی تھی جہاں انہوں نے کمال مہارت کے ساتھ یہ اعلان فرمایا کہ پی ٹی آئی کی حکومت جانے کے متعلق ان کی تمام تھیوریاں غلط ہیں ان کی نئی تھیوری یہ ہے کہ عمران خان جب بھی گرے گا اپنے ہی بوجھ سے گرے گا، اس کو گرانے کے لئے کسی سیاسی جماعت ،محکمہ زراعت یا سازش کی ضرورت نہیں پڑے گی۔
’’مگر شاہ جی یہ تو فرمائیں کیا عمران خان پانچ سال مکمل کر پائیں گے‘‘ ملک صاحب نے پوچھا۔
’’تقریباً مکمل کرلیں گے‘‘ شاہ جی نے عالمانہ انداز میں کہا ’’اس بات کا بھی امکان ہے کہ اگلے انتخابات2023 ء کے وسط میں نہ ہوں بلکہ اوائل میں ہوں‘‘
’’وہ کیوں‘‘ ملک صاحب نے استفسار کیا۔
’’کیوں کی کیا بات ہے‘‘ شاہ جی نے فرمایا ’’بھئی نئی حکومت کو بجٹ بنانے کے لئے وقت تو ملناچاہیے‘‘
’’ہاں یہ بات تو ہے‘‘ چوہدری فضل خان نے دخل دیا’’مگر نئی حکومت آپ کون سی دیکھتے ہیں‘‘
’’اس کے بارے میں ، میں نے ایک تھیوری قائم کی ہے‘‘ شاہ جی اس طرح مسکرائے جیسے وہ اس سوال کا انتظار کررہے تھے۔
’’اب کیا ہے آپ کی نئی تھیوری‘‘ ملک صاحب نے بظاہر بڑے اشتیاق سے پوچھا۔
’’عمران خان اور اس کے لانے والوں کو بخوبی اندازہ ہوگیا ہے کہ وہ اگلا الیکشن نہیں جیت پائیں گے‘‘ شاہ جی نے سٹارٹ لیا ’’لہٰذا وہ فرار کی راہ تلاش کررہا ہے۔ اس نے دھمکی دی ہے کہ اسے کام نہ کرنے دیا گیا تو وہ اسمبلیاں توڑ دے گا۔ا بھی تک یہ وضاحت تو نہیں ہے کہ وہ کون سا کام کررہا ہے جو اسے نہیں کرنے دیا جارہا ۔ ’’بہرحال اس دھمکی کے ساتھ ساتھ ایک شوشہ اور بھی چھوڑ گیا ہے‘‘
’’وہ کیا‘‘ اب میں نے پوچھا۔
’’الیکٹرونک ووٹنگ والا ‘‘ شاہ جی مسکرائے ’’وہ پاکستان میں الیکٹرونک ووٹنگ کا نظام لانا چاہتا ہے جہاں تقریباً ستر فیصد لوگ انگریزی پڑھ بھی نہیں سکتے۔ کمپیوٹر پر ووٹنگ کا تصور بھی ناقابل یقین ہے مگر آپ دیکھیں گے کہ تمام میڈیا اس بات کو بہت اچھالے گا۔ اس پر بے تحاشا ٹی وی ٹاک شوز ہوں گے ، لاتعداد کالم لکھے جائیں گے ، فیس بک اور ٹویٹر پر پیغامات کی یلغار ہوگی‘‘
’’وہ کیوں شاہ جی؟‘‘ میں نے تعجب سے پوچھا۔
’’ارے بھئی کسی نان ایشو کو ایشو ایسے ہی بنایا جاتا ہے‘‘ شاہ جی کی مسکراہٹ برقرار تھی ’’عوام کو یقین دلایا جائے گا کہ پاکستان کی ترقی تب ہی ہوسکتی ہے جب ملک کے ہر پولنگ سٹیشن پرEVM نصب ہو جائے، دوسری صرف اس بات پر زور دیا جائے گا کہ EVM ہمارے ملک کے لئے موزوں نہیں ہے‘‘
’’میں سمجھا نہیں‘‘ ملک صاحب بول پڑے۔
’’ارے بھئی جب تک کسی چیز کی مخالفت نہ ہو وہ عوامی ایشو نہیں بنتی۔ اگر ہماری اپوزیشن جماعتوں کو تھوڑی سی بھی عقل ہو اور وہ عمران خان کی اس چال کو سمجھ جائیں تو فوراًEVM کی مخالفت بند کر دیں تاکہ یہ موضوع اپنی موت آپ مر جائے‘‘ شاہ جی نے گویا ترپ کا پتہ کھیل دیا۔
’’شاہ جی۔ اپوزیشن جماعتوں کا تو پتہ نہیں مگر میری عقل میں یہ بات ابھی تک نہیں آئی ہے‘‘ فضل خان بے بسی سے بولے۔
شاہ جی پہلے تو مسکرائے پھر میری طرف اشارہ کرکے بولے ’’ڈاکٹر صاحب آپ تشریح کر دیں‘‘
’’اس سے پہلے کہ میں تشریح کروں۔ مجھے یہ بتا دیں کیا عمران خان حقیقت میںEVM میں کوئی دلچسپی نہیں رکھتے۔ وہ صرف اسے فرار کا بہانہ بنانا چاہتے ہیں‘‘ میں نے ڈرتے ڈرتے پوچھا۔
’’ارے واہ ڈاکٹر صاحب ’’شاہ جی نے خوشی کا اظہار کیا‘‘ آپ کے سوال نے ساری بات واضح کر دی ہے ۔ عمران خانEVM کو ایک تنازعہ بنانا چاہتا ہے۔ اپوزیشن پارٹیاں اس کی مخالفت کریں گی ۔ عمران خان یہ الزام لگائے گا کہ انتخابات میں دھاندلی کا جامع منصوبہ بنالیا گیا ہے اور اگلے انتخابات کا بائیکاٹ کر دے گا‘‘
’’واہ کیا شاندار پلان ہے ‘‘ ملک صاحب بولے ’’ویسے بھی پی ٹی آئی کو اگلے انتخابات کے لئے امیدوار ہی دستیاب نہیں ہوں گے۔ اس بار تو آزاد امیدواروں کو خریدنے والی ATM  بھی ان کے پاس نہیں ہوگی۔ لہٰذا انتخابات کا بائیکاٹ سیاسی شہید بننے کا بہترین طریقہ ہے‘‘
’’جی صاحبوں۔ یہ پلان کا پہلا حصہ ہے‘‘ شاہ جی اطمینان سے بولے۔
’’اچھا اس پلان کے اور بھی حصے ہیں‘‘ چوہدری فضل خان نے پوچھا۔
’’جی بالکل‘‘ شاہ جی نے سامعین کے تجسس سے لطف اندوز ہوتے ہوئے فرمایا ’’عمران خان کا متبادل تلا ش کرلیا گیا ہے۔ بلاول کو نئے ہیرو کے طور پر پیش کیا جائے گا۔ اس کی مدد جہانگیر ترین کا ٹولہ کرے گا‘‘
’’مقصد کیا ہے اس پلان کا؟‘‘ میں نے بے چینی سے پوچھا۔
’’پہلا مقصد عمران خان کو سیاسی طور پر زندہ رکھنا ہے تاکہ اسے آئندہ بھی استعمال کیا جاسکے۔ بالکل ویسے ہی جیسے اب زرداری کی ضرورت پڑ گئی ہے۔ دوسری اہم وجہ یا مقصد نواز شریف کو اقتدار سے دور رکھنا ہے‘‘شاہ جی نے ایک ایک لفظ کو چبا چبا کر ادا کیا۔
’’یعنی پی ٹی آئی مقابلے سے باہر ہو۔ جہانگیر ترین گرو پ پی پی پی سے مل کر مرکز میں حکومت بنالے ‘‘ ملک صاحب نے پوچھا۔
’’بالکل ‘‘ شاہ جی بولے ’’سندھ میں ویسے ہی پی پی پی کی حکومت ہے۔ کے پی کے میں بھی ایک مخلوط حکومت ابھرے گی مگر اصل مسئلہ پنجاب کا ہے‘‘
’’پنجاب کا کیا مسئلہ ہے‘‘ چوہدری فضل خان بولے۔
’’کچھ بھی کرلیں پنجاب میں نواز شریف کی واپسی کو نہیں روکا جاسکتا‘‘ شاہ جی نے بے بسی سے کہا۔
’’مجھے تو خوف آرہا ہے‘‘ میں نے ڈرتے ڈرتے عرض کیا ’’اگر مرکز میں ایک کمزور سی مخلوط حکومت بنی اور پنجاب ن لیگ کے پاس چلا گیا تو ملک تو ایک مسلسل ہیجان کا شکار رہے گا۔ آخر ایسے منصوبے کون بنا رہا ہے اور کیوں بنا رہا ہے‘‘
شا ہ جی خلاف توقع خاموش رہے تو ملک صاحب بولے ’’جن لوگوں پر عام طور پر شک کیا جاتاہے ان کا سربراہ تو2022 ء  نومبر میں ریٹائر ہو جائے گا اور اب اس کو مزید ایکس ٹینشن بھی نہیں مل سکتی تو پھریہ سارا کھڑاک کیا‘‘
’’میں کسی فرد واحد کی بات نہیں کررہا‘‘ شاہ جی بے چینی سے بولے ’’ میرا مطلب تھا کچھ اداروں کی ذمہ داری ہوتی ہے کہ وہ مکمل حالات کو قابو میں  رکھیں۔ انہیں تو پلاننگ کرنی پڑتی ہے‘‘
خلاف توقع شاہ جی نے خاموشی اختیار کرلی۔ غالباً وہ نئی تھیوری کی تخلیق میں مصروف ہوگئے تھے۔



 

تازہ ترین خبریں

یا اللہ رحم۔۔کراچی میں شدید بارشیں اور آندھی۔۔کتنے افراد جاں کی بازی ہار گئے۔۔ خبر نے دل چیر دیئے

یا اللہ رحم۔۔کراچی میں شدید بارشیں اور آندھی۔۔کتنے افراد جاں کی بازی ہار گئے۔۔ خبر نے دل چیر دیئے

نفیسہ شاہ اور شیریں مزاری آمنے سامنے۔۔۔۔  ایک دوسرے پر نقل کرنے کا الزام لگادیا

نفیسہ شاہ اور شیریں مزاری آمنے سامنے۔۔۔۔  ایک دوسرے پر نقل کرنے کا الزام لگادیا

عمران خان نے ریحام خان سے جان چھڑوانے کےلئے جہانگیر ترین سے مدد مانگی تھی

عمران خان نے ریحام خان سے جان چھڑوانے کےلئے جہانگیر ترین سے مدد مانگی تھی

 سندھ سے انتہائی بری خبر ۔۔۔۔۔ 11 افراد جاں بحق ہوگئے 

 سندھ سے انتہائی بری خبر ۔۔۔۔۔ 11 افراد جاں بحق ہوگئے 

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

ذاتی رنجش پر مخالفین نے زمیندار کی بھینس کر زہردے کر مار ڈالا

ذاتی رنجش پر مخالفین نے زمیندار کی بھینس کر زہردے کر مار ڈالا

ماروی سرمد کے حیران کن ماضی سے پردہ اٹھا دینے والی تحریر

ماروی سرمد کے حیران کن ماضی سے پردہ اٹھا دینے والی تحریر

پی ڈی ایم کو دوبارہ فعال کرنے کی تیاریاں

پی ڈی ایم کو دوبارہ فعال کرنے کی تیاریاں

پاکستانیوں کیلئے ایک اوربڑی خوشخبری۔۔صوبہ بلوچستان میں گیس کے نئے ذخائر دریافت کرلیے گئے۔

پاکستانیوں کیلئے ایک اوربڑی خوشخبری۔۔صوبہ بلوچستان میں گیس کے نئے ذخائر دریافت کرلیے گئے۔

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ 

امتحانات دینے والے طلبا کیلئے خوشخبری ۔۔۔۔ تعلیمی بورڈز کا اہم فیصلہ 

رنگ روڈ میگا سیکنڈل پر پیپلزپارٹی نے وزیراعظم سمیت اسکینڈل میں ملوث وزراء سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کر دیا

رنگ روڈ میگا سیکنڈل پر پیپلزپارٹی نے وزیراعظم سمیت اسکینڈل میں ملوث وزراء سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کر دیا

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

جہانگیر ترین ایک مرتبہ پھر سرگرم ۔۔۔۔۔ہم خیال اراکین پارلیمنٹ کیلئے عشائیہ کا اہتمام ۔۔ پی ٹی آئی اراکین کی آمد کا سلسلہ جاری

سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضبط شدہ جائیدادوں کو نیلام کرنے کا فیصلہ۔۔۔بولی کی تاریخ بھی مقر ر 

سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضبط شدہ جائیدادوں کو نیلام کرنے کا فیصلہ۔۔۔بولی کی تاریخ بھی مقر ر