12:53 pm
قومی اسمبلی کی متفقہ قرارداد، خوش گوار واقعہ

قومی اسمبلی کی متفقہ قرارداد، خوش گوار واقعہ

12:53 pm

٭فلسطین :شہدا کی تعداد250، سینکڑوں زخمی، اسرائیل کے لئے امریکہ کے 73 کروڑ ڈالرکے ہتھیارO قومی اسمبلی، فلسطین پر متفقہ قرارداد!O وزیرخارجہ نیویارک روانہO جمعہ کو حکومت اور اپوزیشن: یوم القدس منائیں گے!O اسمبلی میں شہبازشریف کی مدبرانہ سنجیدہ تقریرO جاوید ہاشمی کے داماد کا شادی ہال مسمارO اشرف غنی کی پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائیO ’’سندھ کو پانی کم دیا جا رہا ہے‘‘ شیری رحمن…’’دریائوں میں 85 فیصد کم پانی آ رہا ہے‘‘ اِرساO کراچی بحری طوفان سے بچ گیا۔
٭ایک خوش گوار واقعہ: قومی اسمبلی میںپیر کے روز فلسطین پر اسرائیلی بم باری اور خونریزی کے خلاف حکومتی اور اپوزیشن رہنمائوں نے نہائت پرامن اور پرسکون انداز میں اظہار خیال کیا۔ مشترکہ طور پر اتفاق رائے سے اسرائیلی جارحیت کے خلاف مذمتی قرارداد منظور کی۔ یہ اجلاس صرف فلسطین کے موضوع پر بلایا گیا تھا۔ ایک طویل عرصہ کے بعد اس میں تمام فریقوںکے مقررین نے یک جا ہو کر فلسطینی مظلوم عوام کے ساتھ یک جہتی کا اظہار کیا۔ مقررین نے ایک دوسرے کے بارے میں کسی قسم کے منفی بیانات سے گریز کیا اور متفقہ قرارداد منظور کی۔ خاص طور پر اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی تقریر اور انداز بیان کا ذکر کرنا چاہتا ہوں۔ ہر شخص ان کے جوش خطابت سے واقف ہے۔ مگر یہ بھی کہ وہ ن لیگ کے جوشیلے لیڈروں خاص طور پر اپنے بڑے بھائی نوازشریف اور بھتیجی مریم نواز کے بے قابو جوش بیان (خدا پناہ!) کے برعکس بہت ٹھنڈے دماغ میں نجیدگیاور میانہ روی سے کام لیتے ہیں۔ گزشتہ روز انہوں نے قومی اسمبلی میں واقعی ایک ذمہ دار اپوزیشن لیڈر کا کردار ادا کیا۔ بڑی دل سوزی اور درد مندی کے ساتھ فلسطینی عوام پر برسنے والی قیامت پر دکھ کا اظہار کیا، حکومت کو اس مسئلے پر سنجیدہ اور قابل قدر تجاویز دیں، ان پر خود حکومتی بنچوں نے اظہار تحسین کیا بلکہ ان کی تجاویز قبول بھی کر لی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ جمعہ کے روز ملک بھرمیں یوم القدس منانا چاہئے، حکومت نے اسے قبول کر کے اعلان بھی کر دیا۔ میاں صاحب نے کہا کہ پاکستان کے وزیرخارجہ فلسطینی مسئلے پر نہ صرف پاکستان بلکہ پورے عالم اسلام کی قیادت کریں، ہم ان کے ساتھ چلیں گے! یہ انتہائی مثبت اور خوش کن واقعہ تھا۔ اپوزیشن حکومت کے ساتھ چلنے کا پرامن اظہار کر رہی تھی اور پھر اسمبلی میںجس متفقہ پرامن طور پر مشترکہ قرارداد منظور کی گئی، اس سے پوری قوم تو خوش ہوئی، باہر بھی نہائت اہم پیغام گیا کہ پاکستانی لوگ اندر جیسے بھی آپس میں الجھتے رہیں، اہم قومی معاملات پر مجسم یک جا ہو جاتے ہیں۔ یہ پیغام خاص طور پر بھارت تک پہنچنا بہت ضروری تھا۔ میں اس قوم یک جائی اور یک جہتی پر حکومت اور اپوزیشن، دونوںکومبارک باد دیتا ہوں اور اس خواہش کا اظہار بھی کہ کاش اپنے اندرونی ملکی معاملات پر بھی اسی میانہ روی اور سنجیدگی کا مظاہرہ کیا جائے…کاش!! ایک اہم نکتہ کہ بالآخر اپوزیشن نے قومی اسمبلی اور عمران خاں کی حکومت کو تسلیم کر لیا!! مگر عمران خاں اجلاس میں کیوں نہیںآئے؟ وہی مزاج کا اکھڑ پن!!
اس واقعہ پرمیرا اظہار مسرت اور جذباتی خوش گواریت اپنی جگہ! مگر کیا یہ خوش گوار تاثر کچھ دوسرے لوگوں، نوازشریف، مریم نواز، اوار مولانا فضل الرحمان کو بھی خوش گوار محسوس ہوا؟ عالم یہ کہ جس وقت مریم نواز وزیراعظم پر سنگین الزامات (گالیاں!) کی بوچھاڑ کر رہی تھیں، قومی اسمبلی میں شہباز شریف کے واقعی شریفانہ اور حکومت کے ساتھ معتدل مفاہمانہ انداز بیان پر حکومتی بنچ تالیاں بجا رہے تھے! یہ بات ہر وقت آتش زیر پا، شعلہ بدمست لوگوں کوکیسے پسند آ سکتی ہے! مگر یہ تو ہُوا ہے اور شائد آئندہ بھی ہوتا رہے! پتہ نہیں قومی اسمبلی میں شہباز شریف کی تقریر اور تالیوں کی آوازیں لندن تک پہنچیں یا نہیں؟ یہ لوگ تو اسمبلی اور عمران خاں کی حکومت کو تسلیم ہی نہیں کرتے اور شہبازشریف!!
٭فلسطین پر اسرائیلی فضائی حملوں اور بم باری میں مزید اضافہ ہو گیا۔ فلسطینی شہدا کی تعداد250 سے بڑھ گئی، 85 بچے،34 خواتین شہید! اسرائیل کو تسلیم کرنے والے تمام مسلم ممالک خاموش، کسی نے اپنا سفیر واپس نہیں بلایا، نہ ہی اپنے ہاں کسی اسرائیلی سفیر یا سفارت کار کو طلب کر کے کوئی احتجاج کیا! اس کے برعکس امریکہ نے فوری طور پر اسرائیل کو 73 کروڑ ڈالر (ایک کھرب12 کروڑ روپے) کے ہتھیار بیچنے کا اعلان کر دیا اور یہ بھی کہا ہے کہ اسرائیل پر جارحیت ہو رہی ہے، امریکہ اسے مکمل تحفظ دے گا! فرانس برطانیہ اور یورپی یونین کے ممالک بھی اسرائیل کو تحفظ کا یقین دلا رہے ہیں۔ تیونس، عرب امارات، بحرین، کویت، اردن، مصر نے مجبوراً اسلامی سربراہی کانفرنس کے مشترکہ اعلامیہ کی حمائت کی ہے، کسی نے اسرائیل سے سفیر واپس نہیںبلایا، نہ ہی اپنے ہاں اسرائیل کے سفیروں یا سفارت کاروں کی کوئی سرزنش کی ہے۔ بھارت درپردہ اسرائیل کی حمائت کر رہا ہے۔ امریکہ نے سلامتی کونسل کا اعلامیہ ہی جاری نہیں ہونے دیا۔ اس پر جنرل اسمبلی کا اجلاس ناگزیر ہو گیا ہے۔ اس میں شرکت کے لئے پاکستان کے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی ترکی پہنچ گئے، جہاں سے وہ ترکی اور سوڈان کے وزرائے خارجہ، اکٹھے نیویارک جانے والے تھے!
٭ایک اہم واقعہ، ملتان کی انتظامیہ نے جاوید ہاشمی کے آبائی سُسرالی گائوں ’مخدوم رشید‘ میں ہاشمی صاحب کے داماد زاہد بہار کا شادی ہال اور کچھ دوسری کمرشل عمارات مسمار کر دیں۔ سرکاری انتظامیہ کا موقف ہے کہ شادی ہال سرکاری زمین پر کسی اجازت کے بغیر غیر قانونی طور پر تعمیر کیا گیا تھا۔ جاوید ہاشمی کا کہنا ہے کہ یہ ان کی زمین ہے اس پر ان کا خاندان جدی پشتی طور پر قابض رہا ہے۔ مجھے ہاشمی صاحب کی جدی پشتی قبضہ والی بات میں وزن دکھائی دیتا ہے۔ آئین، قانون، ضابطوں، قاعدوں، اخلاقیات کو چھوڑیں، کسی جگہ پر، سرکاری یا غیر سرکاری، کسی بڑے بااثر خاندان کی جدی پشتی طاقت کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔ ویسے اس معاملہ کا ایک پہلو اور بھی ہے کہ جاوید ہاشمی ن لیگ سے نکل گئے، خود ہی واپس آ گئے، ن لیگ کو چھوڑتے وقت مرحومہ بیگم کلثوم نواز صاحبہ ہاشمی صاحب کے گھر گئیں، ان کی منت کی کہ وہ ن لیگ نہ چھوڑیں۔ ہاشمی صاحب ہوا کے گھوڑے پر سوار تھے، مرحومہ بیگم صاحبہ کی ایک نہ سنی، بڑے رعب داب کے ساتھ تحریک انصاف کی سربراہی سنبھالی اور ’مَیں ہی مَیں‘ کا نعرہ بلند کیا! وہاں پہلے سے ہی ایک بڑی ’مَیں‘ موجود تھی۔ دو بادشاہ اکٹھے نہ چل سکے۔ ایک روز عمران خاں کی ایسی تیسی پھیر دی۔ ملتان واپس آ کر ضمنی الیکشن لڑا۔ ہوا اکھڑ چکی تھی، الیکشن ہار گئے اور پھر خود ہی دوبارہ ن لیگی بن کر پہلے سے موجود لیگیوں کو ہدایات جاری کرنے لگے۔ ساتھ ہی فوج کی ایسی تیسی شروع کر دی۔ ن لیگ کی قیادت بار بار ان کے فوج دشمن بیانات سے لاتعلقی کا اعلان کرتی رہی اور اب عالم یہ کہ شادی گھر مسمار ہونے پر کوئی ن لیگی کارکن احتجاج یا ہمدردی کے لئے نہ آیا!!

تازہ ترین خبریں

تصویر میں موٹا کیوں دکھایا گیا؟معروف  اداکارہ نے اخبار پر مقدمہ کردیا

تصویر میں موٹا کیوں دکھایا گیا؟معروف اداکارہ نے اخبار پر مقدمہ کردیا

میری نیپیاں بدلنے والے کوئی نہیں،عابد شیر علی نے عمران خان کو بڑا چیلنج کر دیا

میری نیپیاں بدلنے والے کوئی نہیں،عابد شیر علی نے عمران خان کو بڑا چیلنج کر دیا

کرپشن ثابت نہ ہو سکی، عثمان بزدار کو عدالت نے بڑی خوشخبری سنا دی

کرپشن ثابت نہ ہو سکی، عثمان بزدار کو عدالت نے بڑی خوشخبری سنا دی

100اور1500روپے مالیت کے قومی انعامی بانڈزرکھنے والوں کیلئے بڑی خوشخبری آگئی

100اور1500روپے مالیت کے قومی انعامی بانڈزرکھنے والوں کیلئے بڑی خوشخبری آگئی

گارنٹی سے کہتا ہوں یہ حکومت اگلے تیس دن نہیں دیکھے گی ، بڑا دعویٰ آگیا

گارنٹی سے کہتا ہوں یہ حکومت اگلے تیس دن نہیں دیکھے گی ، بڑا دعویٰ آگیا

عمران خان اُڑ رہے تھے اب انہیں زمین پر لایا جائیگا، تحریک انصاف سے مزید گرفتاریوں کی پیشنگوئی کر دی گئی

عمران خان اُڑ رہے تھے اب انہیں زمین پر لایا جائیگا، تحریک انصاف سے مزید گرفتاریوں کی پیشنگوئی کر دی گئی

آسمانی بجلی نے تباہی مچا دی، بڑا جانی نقصان ہو گیا ، افسوسناک خبر

آسمانی بجلی نے تباہی مچا دی، بڑا جانی نقصان ہو گیا ، افسوسناک خبر

ممنوعہ فنڈنگ کیس، ایف آئی اے بھی ایکشن میںآگیا، عمران خان کیخلاف بڑا اقدام اٹھا لیا

ممنوعہ فنڈنگ کیس، ایف آئی اے بھی ایکشن میںآگیا، عمران خان کیخلاف بڑا اقدام اٹھا لیا

وزیراعظم کے معاون خصوصی عطا تارڑ کی گرفتاری کیلئے چھاپہ، گھر اصل میں کس کا نکلا؟

وزیراعظم کے معاون خصوصی عطا تارڑ کی گرفتاری کیلئے چھاپہ، گھر اصل میں کس کا نکلا؟

شدید بارشوں کیلئے ہوجائیں تیار، کہاں کہا ں جم کر بادل برسیں گے؟ گرمی سے پریشان شہریوں کیلئے خوشخبری

شدید بارشوں کیلئے ہوجائیں تیار، کہاں کہا ں جم کر بادل برسیں گے؟ گرمی سے پریشان شہریوں کیلئے خوشخبری

شہباز گل کا جملہ قابل اعتراض تھا، عمران خان نے آخرکار اعتراف کر لیا

شہباز گل کا جملہ قابل اعتراض تھا، عمران خان نے آخرکار اعتراف کر لیا

وزارت داخلہ نے اے آر وائی نیوز کااین او سی منسوخ کردیا

وزارت داخلہ نے اے آر وائی نیوز کااین او سی منسوخ کردیا

دل دل پاکستان۔۔ ملی نغمہ پڑھتے ہوئے شرمیلا فاروقی کی ویڈیو وائرل

دل دل پاکستان۔۔ ملی نغمہ پڑھتے ہوئے شرمیلا فاروقی کی ویڈیو وائرل

سوات میں سکیورٹی ہائی الرٹ، داخلی اور خارجی راستوں پر چیک پوسٹ قائم، چیکنگ شروع

سوات میں سکیورٹی ہائی الرٹ، داخلی اور خارجی راستوں پر چیک پوسٹ قائم، چیکنگ شروع