12:59 pm
موجودہ شام، ایران، سعودی عرب

موجودہ شام، ایران، سعودی عرب

12:59 pm

مغربی ممالک نے شام میں 26مئی کو انعقاد پذیر صدارتی انتخابات کو غیر منصفانہ قرار دے دیا ہے۔ جرمنی، فرانس، اٹلی،برطانیہ اور امریکہ نے شام میں ہونے والے صدارتی انتخابات کو غیر منصفانہ، غیر شفاف قرار دیتے ہوئے انہیں رد کر دیا ہے۔ ان ممالک کے وزرائے خارجہ کی طرف سے جاری ہونے والے ایک مشترکہ بیان میں شام میں ہونے والے ’’دھوکہ دہی پر مبنی‘‘ انتخابات کو ملک شام میں جاری تنازعے کے کسی سیاسی حل کی طرف پیش رفت کی نمائندگی نہیں کرتے۔ حکمران حافظ الاسد اور ان کے بیٹے بشارالاسد مکمل نسلی عرب ہیں۔ ان سے اختلاف صرف یہ ہے کہ وہ مکمل نسلی عرب ہونے کے باوجود سماجی، معاشرتی طور پر اپنی حکومت کو انسان دوست عرب حکومت نہیں بنا سکے، بلکہ عرب دشمن انہوں نے خود کو بنائے رکھا ہے۔ 1963ء سے شامی عرب انسان حافظ الاسد اور ان کے بیٹے بشارالاسد کے تخلیق کردہ جہنم میں زندہ ہیں جو اختلافی آواز اٹھانے کی جرات کرتے رہے انہیں موت کی وادی میں دھکیل دیا گیا۔ حافظ الاسد نے جب مظلوم شامی عربوں کا قتل عام کیا اور ان مظلوم شامیوں کے لئے سعودی عرب اور خلیجی ریاستوں میں کچھ پناہ گاہیں موجود تھیں مگر اب سعودی عرب اور خلیجی ریاستوں میں ان کے لئے کوئی پناہ گاہیں موجود ہی نہیں جبکہ بشارالاسد کے لئے ایرانی انقلابی حکومت کی تاحال سایہ دار اور جنت نما پناہ گاہ موجود ہے۔
داعش کی تخلیق سے اسرائیل اور امریکہ نے خلیجی ریاستوں اور سعودی عرب کو جس طرح خوف زدہ کیا، القاعدہ سے خوف زدہ سعودی و خلیجی ذہن کو اس سے بھی زیادہ ابوبکر البغدادی کی خلافت سے ڈرایا جاتا رہا، حیرت اور تعجب ہے کہ اسرائیل اور امریکہ نے داعش کی تخلیق سے عملاً ایران کو سب سے زیادہ فائدہ فراہم کیا کہ داعش کو کچلنے کے نام پر ایرانی عسکری سیاسی حکمت عملی کو عربوں کو عراق اور شام میں کھل کر کچلنے کا نادر موقعہ ملا، امریکہ نے قدم قدم پر عرب دشمنی ایرانی ذہن اورحکمت عملی کو مددفراہم کی۔ بشارالاسد کے شام اور آیت اللہ علی خامینائی کے انقلابی ایران میں، دونوں عرب مخالف آواز کو اپنانے، ان سے مکالمے کے ذریعے مفاہمت، کچھ ان کے حقوق دے کر انہیں راضی کرنے کے ’’گر‘‘ سے آشنا ہی نہیں بلکہ صرف مخالف عرب آواز کو کچلنا ہی سب سے عمدہ حکمت عملی رہی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ جب بشارالاسد نے ایران کا خفیہ دورہ کیا تھا تو صدر حسن روحانی اور وزیر خارجہ جواد ظریف کو اس کی خبر ہی نہ تھی جبکہ بشارالاسد جنرل قاسم سلیمانی کے ایسے مہمان تھے جو صرف آیت اللہ علی خامینائی سے ملے تھے۔ کیا جواد ظریف کا اس طرز عمل پر احتجاج درست نہ تھا؟
 آیت اللہ علی خامینائی کے ہوتے ہوئے شاہ عبداللہ کی ایران کے لئے تالیف قلب کی ہر کوشش ماضی میں تہران  نے ناکام بنا دی تھی اگر ’’نیا‘‘ ایرانی صدر بھی آیت اللہ علی خامینائی جیسا ہی سخت گیر، قدامت پسند فروغ انقلاب کا شاہکار ہوا تو شہزادہ محمد بن سلمان نے جو تالیف قلب کی شاخ زیتوں تہران کو پیش کی ہے وہ تو اسی طرح ناکام ہو جائے گی جیسے شاہ عبداللہ کی تہران کے لئے ہر تالیف قلب کو اہل انقلاب  نے ناکام اور سرد مہری سے دوچار کیا تھا، لہٰذاایران و سعودی عرب میں مکمل، بقائے باہمی کی بنیاد پر، نئی دوستانہ روش کو اپنایا جانا ممکن نظر نہیں آرہا۔ خدا کرے ان دونوں میں مفاہمت ہو، تاکہ مسلمان آپس میں پرامن طور پر امت مسلمہ سے امیدیں وابستہ کئے کمزور مسلمانوں کو ’’خیر‘‘ کی نعمت ملے۔
ریاض سے بہت مدت بعد ٹھنڈی ہوا کا جھونکا آیا ہے۔ محمد بن سلمان جو قدیم جامد سخت گیر شیوخ اور قبائلی رسم و رواج کے صنم خانے کو توڑنے کا عزم رکھتا تھا مگر اسے نظرلگ گئی۔ ’’نظر بد‘‘ یہ حقیقت ہے، یہ ’’نظر بد‘‘ جمال خاشقجی کا قتل ہے اور پھر وہ بھی ترکی کے سعودی سفارخانے میں۔ اس بہت بڑی غلطی کے بعد محمد بن سلمان اور امارتی ولی عہد محمد بن زید الہنیان نے بہت بڑی اور فاش غلطی مگر غیر ضروری نیتن یاہو سے دوستانہ کرلیا، ’’ابراہیم معاہدے‘‘ اسرائیل کو تسلیم کرتی روش میں محمد بن سلمان کی رضا مندی شامل حال تھی۔ یہ سب کچھ صہیونی محبت میں نہیں بلکہ بغض ایران کے طور پر ہوا تھا۔دونوں شہزادےسرپٹ دورتے رہے تاآنکہ صدر ٹرمپ ہار گئے اور سعودی و اماراتی خواب بکھر گئے۔ نیتن یاہو بے یارو مددگار ہوگیا۔ اس نے مگر غزہ پر بارہ روزہ جنگ صرف ذاتی سیاسی فوائد کے لئے مسلط کی تھی تاکہ عرب اسرائیلیوں کے ساتھ اپوزیشن مل کر جو مفاہمانہ قومی اسرائیلی حکومت چند دنوں بعد بننے والی تھی اس کو ناکام کر دیا جائے۔ نیتن یاہو اپنے مقصد میں کامیاب ہوچکا ہے۔ عرب اسرائیلی اب اپوزیشن کے ساتھ مل کر نئی قومی حکومت نہیں بنا سکیں گے۔ اہل فلسطین اور اسرائیلیوں میں مفاہمت ناممکن بنا دی گئی ہے۔ ریاض سے ٹھنڈی ہوا کا جھونکا یہ ہے کہ سعودی کابینہ نے فلسطینیوں پر نیتن یاہو مظالم کی شدید مذمت کی ہے۔ سعودی عرب اسرائیل کی پرتشدد کارروائیوں کی روک تھام کی کوششیں جاری رکھے گا۔ سعودی عرب کے اوپر سے دوبئی جانے والی اسرائیلی طیارے کی پرواز کو روک دیا گیا ہے۔ کیا شہزادہ محمد بن سلمان واپس شاہ عبداللہ اور شاہ فیصل کے عہد کی طرف لوٹ جانا پسند کریں گے؟ سعودی عرب کے اندر شیعہ سعودیوں کو محبت، شفقت کے ’’عطیے‘‘دینا پسند کریں گے؟جو اعتراض بشارالاسد پر ہے کہ وہ مخالف آواز کو شامل اقتدار کیوں نہیں کرتے یہی اعتراض نہایت محبت سے میں شہزادہ محمد بن سلمان پر کر رہا ہوں۔
شہزادہ محمد بن سلمان کی عسکریت پسندی پر مبنی ساری پالیسیاں ناکام ہوچکیں، جبکہ اب شہزادہ تہذیب و تمدن، شاخ زیتون، نرم مزاجی، تالیف قلب اپنا چکا ہے۔ یہی تالیف سعودی شیعہ کو بھی ملنی چاہیے، محض عسکریت پسندی پر اب مزید انحصار کا عمل نقصان دہ ہوگا۔ وزیراعظم عمران خان سے کافی بڑی لڑائی کے بعد دونوں میں پیارو محبت کی فضاء ہے۔ کیا یہ مناسب ہوگا کہ شہزادہ سلمان اسلام آباد میں متعین شاہ عبداللہ کے عہد کے نابغہ، محنتی، ہمیشہ مسکراتے رہنے والے جفاکش، مدبر، سعودی سفیرکے عہد ذریں کو اپنے لئے اپنا لیں، اسلام آباد کے لئے بھی اور ریاض کے لئے بھی۔ یوں ولی عہد شہزادے کی شخصیت نئے اسلوب، نئی پہچان، نئے انداز سے سامنے آجائے گی۔ بالکل تازگی کے ساتھ، نئی خوشبو کے ساتھ، ’’عسکریت‘‘ پر مبنی ذہن ہو، حکمران ہو یا سفارت کاری، یہ پانی کا ’’بلبلہ‘‘ ہوتی ہے جبکہ ابلاغ، تہذیب و تمدن، ثقافت، اقلیت دوستی کی عظیم انسانی قدریں شہزادہ کے لئے دائمی نعمت الٰہی ثابت ہو جائیں گی۔ انشاء اللہ

تازہ ترین خبریں

ان دو خاندانوں کو این آر او دینا ملک سے سب سے بڑی غداری ہے، وزیراعظم پھٹ پڑے

ان دو خاندانوں کو این آر او دینا ملک سے سب سے بڑی غداری ہے، وزیراعظم پھٹ پڑے

جوتوں سے پہچانا گیا   اللہ تعالیٰ کا نظام بھی کیسا عجیب ہے‘  وہ جب کسی ظالم سے نفرت کرتا ہے  تو اس کی قبر کی بھی بخشش نہیں ہوتی...

جوتوں سے پہچانا گیا اللہ تعالیٰ کا نظام بھی کیسا عجیب ہے‘ وہ جب کسی ظالم سے نفرت کرتا ہے تو اس کی قبر کی بھی بخشش نہیں ہوتی...

ناریل کے گرم پانی کے معجزات، ماہرین نے حیران کن تحقیق بیان کر دی

ناریل کے گرم پانی کے معجزات، ماہرین نے حیران کن تحقیق بیان کر دی

محمد رضوان کو محنت کا صِلہ مل گیا، آئی سی سی نے بڑی خوشخبری سنا دی

محمد رضوان کو محنت کا صِلہ مل گیا، آئی سی سی نے بڑی خوشخبری سنا دی

ایک ہفتے میں ڈالر ، سعودی ریال اور برطانوی پائونڈ کی قدر میں کتنی کمی ہوئی؟ مکمل تفصیلات آگئیں

ایک ہفتے میں ڈالر ، سعودی ریال اور برطانوی پائونڈ کی قدر میں کتنی کمی ہوئی؟ مکمل تفصیلات آگئیں

بارشیں مزید کب تک جاری رہیں گی؟ محکمہ موسمیات نے ٹھنڈی ٹھنڈی پیشنگوئی کر دی

بارشیں مزید کب تک جاری رہیں گی؟ محکمہ موسمیات نے ٹھنڈی ٹھنڈی پیشنگوئی کر دی

نیوزی لینڈکی وزیراعظم جیسنڈرا آرڈرن کی شادی سے پہلے ہی خوشیاں خاک میں مل گئیں

نیوزی لینڈکی وزیراعظم جیسنڈرا آرڈرن کی شادی سے پہلے ہی خوشیاں خاک میں مل گئیں

عمران خان کی چھٹی ۔۔اگلا وزیراعظم کون ہو گا؟سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے بڑا دعویٰ کر دیا

عمران خان کی چھٹی ۔۔اگلا وزیراعظم کون ہو گا؟سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے بڑا دعویٰ کر دیا

بارشوں اور برفباری نے تباہی مچادی، اب تک کتنی ہلاکتیں ہو گئیں؟ افسوسناک تفصیلات جاری

بارشوں اور برفباری نے تباہی مچادی، اب تک کتنی ہلاکتیں ہو گئیں؟ افسوسناک تفصیلات جاری

سستےگھروں کی الاٹمنٹ کیلئے قرعہ اندازی شروع، ساڑھے 3 مرلہ گھر کی ماہانہ قسط کیا ہوگی؟ خوشخبری سنا دی گئی

سستےگھروں کی الاٹمنٹ کیلئے قرعہ اندازی شروع، ساڑھے 3 مرلہ گھر کی ماہانہ قسط کیا ہوگی؟ خوشخبری سنا دی گئی

خبردار!!احتیاط کیجئے  موٹروے پر سفر کرنے سے پہلے یہ خبر پڑھ لیں ، موٹروےپولیس نے ہدایات جاری کردیں

خبردار!!احتیاط کیجئے موٹروے پر سفر کرنے سے پہلے یہ خبر پڑھ لیں ، موٹروےپولیس نے ہدایات جاری کردیں

کورونا کیسز میں اضافہ ، کئی علاقوں میں لاک ڈائون نافذ کرنے کا فیصلہ

کورونا کیسز میں اضافہ ، کئی علاقوں میں لاک ڈائون نافذ کرنے کا فیصلہ

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کس تاریخی موقع پر پاکستان آئیں گے؟خوشخبری سنا دی گئی

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کس تاریخی موقع پر پاکستان آئیں گے؟خوشخبری سنا دی گئی

کورونا کیسز میں اضافہ ، صوبائی حکومت جس نے ان ڈور شادیوں اور پبلک ٹرانسپورٹ پر پابندی لگا دی

کورونا کیسز میں اضافہ ، صوبائی حکومت جس نے ان ڈور شادیوں اور پبلک ٹرانسپورٹ پر پابندی لگا دی