02:28 pm
پشاوراسمبلی:ارکان اسمبلی کو عمر بھرموجودہ مراعات کی قرارداد

پشاوراسمبلی:ارکان اسمبلی کو عمر بھرموجودہ مراعات کی قرارداد

02:28 pm

٭بھارت ہولناک معاشی تباہی کے کنارے پر، بھارتی وزیرخارجہ امداد کے لئے بیرون ممالک کے دورے پرO فوج کو گالیاں دینے والے ہم خیال ’صحافیوں‘ کا اجتماع O ’’بجٹ منظور نہیں ہونے دیں گے‘‘ شہباز شریف، بلاول زرداریO دریائوں میں پانی کی صورت حال بہتر O ’’چیزیں سستی ہو رہی ہیں‘‘ عثمان بزدار…’’چیزیں کئی گنا مہنگی ہو گئی ہیں‘‘ وزارت شماریات!!O موجودہ مراعات، زندگی بھر جاری رکھی جائیں…خیبرپختونخوا اسمبلی کی قرارداد!O سپریم کورٹ: شہباز شریف کبھی کہیں چند گھنٹوں میں فیصلہ کی سماعت!!O تاجکستان کے صدر پاکستان میں!
٭خیبرپختونخوا اسمبلی میں حکومت اور اس کی جان کی دشمن اپوزیشن میں محبت پیار، اخوت، یک جہتی کا بے مثال مظاہرہ! قوم کے انتہائی غم گسار، خیر خواہ اور انسانیت کے ’’محافظوں‘‘ نے ایک دوسرے کے گلے میں بانہیں ڈال کر متفقہ قرارداد منظور کر لی کہ خیبرپختونخوا میں دودھ اور شہد کی نہریں بہانے، غربت کا مکمل خاتمہ کرنے کے عظیم احسان اور خدمت کے اعتراف کے طور پر سپیکر، وزیراعلیٰ، وزیروں مشیروں اور تمام ارکان اسمبلی کو عمر بھر کے لئے وہ ساری مراعات، عیش و عشرت کے سارے وسائل جاری رکھے جائیں جو اس وقت عوام کی دن رات خدمت کے عوض انہیں اور ان کے خاندانوں کو دیئے جا رہے ہیں۔ یہ مراعات کیا ہیں؟ اسمبلی میں صرف حاضری لگوا کر کوئی کام نہ کرنے بلکہ حسب توفیق لڑنے جھگڑنے پر تاحیات بھاری تنخواہیں، بھاری الائونس، پُورے خاندان کا ملکی وغیر ملکی سفر و ہر قسم کا علاج معالجہ مفت، گھریلو اور سکیورٹی کا عملہ، بجلی، پانی، گیس، ٹیلی فون کی ادائیگیاں سرکاری خزانے سے ادا کی جائیں۔
٭میں نہ صرف خیبرپختونخوا بلکہ پنجاب، سندھ، بلوچستان اسمبلیوں اور پارلیمنٹ میں ان کے کرائے کے چھوٹے چھوٹے گھروں میں رہنے والے بے حد مفلس اور بے سہارا (ہر رکن کروڑ پتی!) قوم کے خادموں کی حالت زار پر بے حد غمگین ہو رہا ہوں! ان کی دکھ بھری داستانوں نے بے حد جذباتی کر دیا ہے! ہائے! لمبی لمبی کاروں میں گھومنے عالی شان محل نما بنگلوں میں غریبانہ زندگی گزارنے والے یہ بے چارے لوگ ہر وقت قوم کے غم میں دُبلے ہوتے رہتے ہیں۔ اسی غم کے بیان پرمجبوراً ایک دوسرے سے لڑنے لگتے ہیں۔ سات سات ماہ اسمبلی سے غیر حاضر رہ کر قوم کے غم میں نعرے لگانے کے بعد پھر کسی مزاحمت کا اظہار کئے بغیر پھر اسمبلی میں آ دھمکتے ہیں اور رعب کے ساتھ سات ماہ کی تنخواہیں وصول کر لیتے ہیں (تحریک انصاف 2017ء)۔ میں، پختونخوا اسمبلی کے ارکان کی طرف سے عمر بھر انہیں موجودہ ساری مراعات جاری رکھنے کی معمولی سی ’قراردادِ کفالت‘ کی بھرپور حمائت کرتا ہوں!! بلکہ یہ مطالبہ بھی کرتا ہوں کہ ان معمولی مراعات سے ان کے ہمسایوں کو بھی نوازا جائے…! عجیب بات ہے کہ ان لوگوں کی حالت زار پر آنکھیں نم آلود ہونے کی بجائے شرم سے جُھک رہی ہیں، ڈاکہ اور کیا ہوتا ہے؟
٭لاہور ہائی کورٹ نے شہباز شریف کی باہر جانے کی درخواست پر جس طرح ایک ہی دن میں فوری سماعت، فوری فیصلہ دیا، اور شہباز شریف کو باہر جانے کی اجازت دی۔ اس فیصلہ کے خلاف حکومت نے سپریم کورٹ میں اپیل دائر کر دی۔ اس کی گزشتہ روز سماعت کی کچھ روداد ہائی کورٹ کے رجسٹرار نے فاضل عدالت کو بتایا کہ ’’شہباز شریف کی درخواست جمعہ کے روز ساڑھے نو بجے (9:30) آئی تھی۔ اس پر ہائی کورٹ میں ساڑھے گیارہ بجے سماعت شروع ہو گئی۔ حکومت کی طرف سے سرکاری وکیل پیش ہوئے مختصر سماعت کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا گیا اور سہ پہر کے وقت درخواست منظور کرنے کا فیصلہ سنا دیا گیا۔ یہاں پر فاضل سپریم کورٹ کے جج حضرات کے ریمارکس پڑھئے: ’’سرکاری وکیل کو بات کرنے کے لئے صرف 30 منٹ دیئے گئے اور ملک کی تاریخ میں کوئی مثال ہے کہ جمعہ کے دن بارہ بجے کیس سنا گیا ہو؟ کیا وفاقی حکومت کو کوئی نوٹس بھیجا گیا؟‘‘
٭چار روز کے بعد بھی اسلام آباد میں ایک صحافی پر مبینہ تشدد کے ملزموں کی نشاندہی نہ ہو سکی۔
٭فوج کو سرعام ننگی گالیاں دینے والے صحافی کو اس کے اخباری مالکان نے وقتی طور پر صحافتی ذمہ داریوں سے چھٹی دے دی۔ اس صحافی نے براہ راست آئی ایس آئی کو حملہ آور قرار دے کر انتقام کی دھمکیاں دیں اور یہاں تک کہا کہ ’’مجھے ملازمت سے نکالا گیا تو میں آزاد ہوکر ان ’’بے غیرت‘‘ لوگوں (؟) کے چہروں سے نقاب نوچوں گا‘‘ یہ کالم لکھنے تک ایسی کوئی خبر سامنے نہیں آ سکی۔ میں نے گزشتہ کالم میں کچھ خاص حقائق بیان کئے ہیں، بہت سی باتیں اور بھی ہیں، چلتی رہیں گی۔ اس وقت ایک اہم بات کہ ’’اسد طور‘‘ نامی صحافی نے تھانے میں بیان دیا کہ وہ فلیٹ میں اکیلا رہتا ہے۔ اس میں تین نقاب پوش افراد نے داخل ہو کر اسے سخت زدوکوب کیا اور ’پاکستان زندہ باد‘ کا نعرہ لگانے پرمجبور کیا (مجبوری!؟) اس صحافی نے ہاتھوں کی انگلیوں سے کہنیوں کے اوپر تک بھاری پٹیاں باندھی ہوئی تھیں۔ کسی ڈاکٹر کی کوئی میڈیکل رپورٹ یا نسخہ وغیرہ نہیں تھا۔ اس نے کسی حملہ آور کی نشاندہی نہیں البتہ کسی خاص ایجنسی کا اشارا دیا۔ اس کے اس بیان کی سوشل میڈیا خاص طور پر بھارتی میڈیا پر طوفان مچ گیا اور بھرپور تشہیر شروع ہوگئی کہ پاکستان میں آزادی اظہار رائے پر زبردست حملہ ہوا ہے۔ فوری طور پر سپریم کورٹ کے ایک جج اپنی اہلیہ کے ساتھ اس کی خبر گیری کے لئے پہنچ گئے، اس وقت تک بازوئوں کی پٹیاں صرف کہنیوں تک محدود رہ گئی تھیں۔ آزادی صحافت کے یوں ’الم ناک‘ خاتمہ پر اپوزیشن اتحاد کو بہت پریشانی ہوئی۔ فوراً مولانا فضل الرحمان، شہباز شریف اور دوسرے قائدین اس صحافی کی عیادت کے لئے جا پہنچے۔ اس وقت تک بازوئوں کی پٹیاں بالکل غائب ہو چکی تھیں۔ بازوئوں پر کوئی زخم وغیرہ دکھائی نہیں دے رہا تھا۔ اپوزیشن اتحاد والے اچانک آ گئے تھے، اسے دوبارہ پٹیاں لپیٹنے کا موقع نہیں ملا۔ اپوزیشن اتحاد کو ننگے بازو دیکھ کر بہت صدمہ ہوا…میں یہ فضولیات بند کر رہا ہوں صرف یہ بات کہ بھارتی اخبارات، ٹائمز آف انڈیا، انڈین ایکسپریس، ہندوستان ٹائمز نے اس خبر کو نمایاں شائع کیا ہے کہ پاکستان میں آزادی صحافت کا مطالبہ کرنے والے صحافی کو ملازمت سے الگ کر دیا گیا ہے!
٭ایک خبر چھپی کہ وزیراعظم کے چہیتے مشیر سید ذوالفقار عباس بخاری، المعروف ’زلفی بخاری‘ ایک چارٹرڈ طیارے میں تین دوستوں کے ہمراہ سیروتفریح کے لئے دبئی گئے ہیں۔ یہ عام سی بات تھی۔ زلفی بخاری برطانیہ کے شہری اور بے انتہا دولت مند ہیں۔ ان کے لئے چارٹرڈ طیارے پر سفر کسی رکشے پر عام سفر کی طرح ہے۔ مگر ایک ٹیلی ویژن نے ایک سوال تو یہ کیا کہ یہ لوگ اچانک دبئی کسی خاص مقصد کے لئے گئے وہ بھی ایک نہائت مہنگے چارٹرڈ طیارے میں؟، اس ٹیلی ویژن نے خاص طور پر ایک تفصیل چھاپی ہے کہ زلفی بخاری نے یہ سفر اپنے برطانوی پاسپورٹ نمبر 518157071 پر 28 مئی کو کیا۔ اس کے ساتھ تین دوست ظفر اکرام شیخ، عمران سعید چودھری، فخر عالم بھی ہم سفر تھے۔ انہوں نے پیر کے روز واپس آ جانا تھا۔ ٹیلی ویژنوں کا اینکر پرسن کسی اہم انکشاف کی طرف اشارہ کر رہا ہے۔ پتہ نہیں یہ انکشاف کیا ہو سکتا ہے؟ ٹیلی ویژن نے کچھ عجیب سے اشارے کئے ہیں۔ مگریہ چارٹرڈ طیارے تو اب رئیسوں، وڈیروں کے کھیل کھلونے بن گئے ہیں۔ آصف زرداری، بلاول، نوازشریف وغیرہ ان پر اڑتے پھرتے ہیں۔ دو وقت فاقہ کش قوم کے غم خواررہنما! جہانگیر ترین کا معاملہ دوسرا ہے، بے حد و حساب دولت کے انبار! (23 ارب ٹیکس) مگر زلفی بخاری کی خبر کو خاص رنگ دینے والے اینکر پرسن کے پاس اپنا طیارہ ہے!! پھر!؟

تازہ ترین خبریں

نئے مون سون سسٹم کی پاکستان میں دھماکے دار انٹری۔۔ کراچی سے خیبر تک بارشیں ہی بارشیں ؟محکمہ موسمیات نے الرٹ جاری کردیا 

نئے مون سون سسٹم کی پاکستان میں دھماکے دار انٹری۔۔ کراچی سے خیبر تک بارشیں ہی بارشیں ؟محکمہ موسمیات نے الرٹ جاری کردیا 

بچوں کے مستقبل سے کھلواڑ۔۔پاکستان کی بڑی سرکاری یونیورسٹی نے جعلی ڈگریاں جاری کردیں، گندے دھندے میں کون کون ملوث ہے؟والدین اور طلبا یہ ضرور

بچوں کے مستقبل سے کھلواڑ۔۔پاکستان کی بڑی سرکاری یونیورسٹی نے جعلی ڈگریاں جاری کردیں، گندے دھندے میں کون کون ملوث ہے؟والدین اور طلبا یہ ضرور

ہمیں دور دراز علاقوں میں پٹرول پمپ کی فراہمی  کو یقینی بنانا چاہیے۔عارف علوی

ہمیں دور دراز علاقوں میں پٹرول پمپ کی فراہمی کو یقینی بنانا چاہیے۔عارف علوی

 ماسک صحیح طریقے سے نہ پہننے کامعاملہ ۔۔۔ پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان کو امریکی ائیرلائن  اتاردیاگیا 

 ماسک صحیح طریقے سے نہ پہننے کامعاملہ ۔۔۔ پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان کو امریکی ائیرلائن  اتاردیاگیا 

ویلکم ۔۔خوش آمدید۔۔ڈاکٹر ذاکر نائیک کب پاکستان آ رہے ہیں۔۔؟ دشمنوں کی نیندیں حرام کردینےوالی خبر

ویلکم ۔۔خوش آمدید۔۔ڈاکٹر ذاکر نائیک کب پاکستان آ رہے ہیں۔۔؟ دشمنوں کی نیندیں حرام کردینےوالی خبر

ظلم کی انتہائی ، بااثرملزمان نے لڑکی کا نازک اعضا کات دیا، افسوسناک واقعہ پاکستان کے کون سے شہر میں پیش آیا؟جانیے

ظلم کی انتہائی ، بااثرملزمان نے لڑکی کا نازک اعضا کات دیا، افسوسناک واقعہ پاکستان کے کون سے شہر میں پیش آیا؟جانیے

شہباز شریف اور بلاول بھٹو ٹھپہ مافیا کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں، فرخ حبیب

شہباز شریف اور بلاول بھٹو ٹھپہ مافیا کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں، فرخ حبیب

 سندھ میں کورونا ویکسینیشن نہ کروانے والوں کو گرفتار کرنے کا فیصلہ

سندھ میں کورونا ویکسینیشن نہ کروانے والوں کو گرفتار کرنے کا فیصلہ

 لاہور  ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے والے جہاز پر نا معلوم شخص کی جانب سے  لیزر لائٹ  مارنے کا واقعہ،  مقدمہ درج

لاہور ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے والے جہاز پر نا معلوم شخص کی جانب سے لیزر لائٹ مارنے کا واقعہ، مقدمہ درج

صوابی یونیورسٹی سے جعلی ڈگریاں جاری ہونے کا انکشاف،یونیورسٹی کے چار اہلکاروں کے ملوث ہونے کی تصدیق

صوابی یونیورسٹی سے جعلی ڈگریاں جاری ہونے کا انکشاف،یونیورسٹی کے چار اہلکاروں کے ملوث ہونے کی تصدیق

خیبر پختونخوامیں کل شام سے بارشوں اور تیز ہواؤں کا نیاسلسلہ شروع ہونے کاامکان

خیبر پختونخوامیں کل شام سے بارشوں اور تیز ہواؤں کا نیاسلسلہ شروع ہونے کاامکان

تحریک انصاف سے لوٹے اور آزاد امیدوار نکا ل دیں توباقی کون بچتاہے؟عظمیٰ بخاری نے ایسی بات کہہ دی جس سے کھلاڑی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

تحریک انصاف سے لوٹے اور آزاد امیدوار نکا ل دیں توباقی کون بچتاہے؟عظمیٰ بخاری نے ایسی بات کہہ دی جس سے کھلاڑی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

 مسلم لیگ (ن) نے  الیکشن کمیشن سے وفاقی وزراء کو سزا دینے کا مطالبہ کر دیا

مسلم لیگ (ن) نے الیکشن کمیشن سے وفاقی وزراء کو سزا دینے کا مطالبہ کر دیا

 انتخابات میں الیکٹرونک ووٹنگ مشین کا استعمال ناگزیر ہے کوئی ‏بھی الیکشن ہوں دھاندلی کےالزامات لگائےجاتےہیں۔سینیٹر فیصل جاوید 

 انتخابات میں الیکٹرونک ووٹنگ مشین کا استعمال ناگزیر ہے کوئی ‏بھی الیکشن ہوں دھاندلی کےالزامات لگائےجاتےہیں۔سینیٹر فیصل جاوید