12:56 pm
حکومت نہیںگرائیں گے:پیپلزپارٹی

حکومت نہیںگرائیں گے:پیپلزپارٹی

12:56 pm

٭بھارت کو پھر مشروط مذاکرات کی پیش کش، پہلے مقبوضہ کشمیر کی پوزیشن بحال کی جائےO حکومت نہیں گرائیں گے، رائے ونڈ کے ’مجرم‘ وزیراعظم کو بھگا دیا گیا: بلاولO ریلوے: ایک لاکھ 90 ہزار پنشنروں کی پنشن معطل O دنیا بھر میں سکھ قوم کی گولڈن ٹمپل سانحہ 1984ء کی تقریباتO پنجاب اسمبلی نئی عمارت میں بجٹ اجلاسO بھارت مزید 6.3 کلو یورینیم کی سمگلنگ پکڑی گئیO افغانستان صرف جمہوری حکومت سے بات ہو گی، عمران خانO سٹاک ایکس چینج: غیر معمولی تیزیO ملالہ کا ناجائز بچوں کی حمائت کا بیان پشاور اسمبلی میں، والد کی گول مول وضاحت!O امریکی صدر نے سائیکل چلائی۔
٭بلاول زرداری کی کچھ سخت مگر مبنی برحقائق باتیں، کسی تبصرہ کے بغیر: بلاول نے کہا…’’وزیراعظم کے خلاف یا اس کی بہن کے خلاف الزامات پر کوئی کارروائی نہیں، پنجاب کا اپوزیشن لیڈر، ضمانت پر رہا! سندھی صدر آصف زرداری اور بہن پر الزامات ہوں تو جیلیں، عدالتیں، سندھی اپوزیشن لیڈر جیل میں! رائے ونڈ کے ’جُرم زدہ‘ وزیراعظم (نوازشریف) کو باہر بھگا دیا گیا!‘‘ بلاول نے سچ بولا ہے، سچی باتیں کی ہیں اس لئے تبصرہ کی ضرورت نہیں۔ البتہ رائے ونڈ کے ’مجرم‘ وزیراعظم والی بات کی وضاحت کی جا سکتی ہے کہ نوازشریف کو قومی مجرم قرار دے کر جیل میں بند اور پھر علاج کے لئے چھ ہفتے ضمانت پر رہائی کی اجازت ملی تھی اور ’مجرم، ملک سے ایسے بھاگا کہ ڈیڑھ سال سے زیادہ عرصہ گزر گیا، واپس نہیں آیا، لندن سے پارٹی چلا رہا ہے۔
٭قارئین اندازہ لگا سکتے ہیں کہ کبھی بلاول کے بہت نزدیک، اکٹھے بیٹھنے والی ’بہن‘ کا تقریباً سگا بن جانے والے ’بھائی‘ کی اس طوطا چشمی پر کیا حال ہوا ہو گا؟ یہ ایک خاتون کا معاملہ ہے، زیادہ حاشیہ آرائی مناسب نہیں مگر سیاست کتنی ظالم ہے، مفادات کا تحفظ سامنے آیا تو ’’بھائی‘‘ نے کیسے آنکھیں پھیر لیں!! میں نے اکثر لکھا کہ پیپلزپارٹی اور ن لیگ کبھی ایک دوسرے سے مخلص نہیں ہو سکتیں، بلاول نے انتخابی مہم کے دوران واضح کہا کہ ’’میاں صاحب! آپ کو جیل جانا ہو گا‘‘ اور اب ’’مجرم قرار پانے والا رائے ونڈ کا وزیراعظم!‘‘ دوسری طرف سے بھی پیٹ پھاڑنے اور اب پیپلزپارٹی کو بدنیت قرار دینے کی باتیں!! چلیں ان لوگوں کو جھگڑنے دیں تاہم بلاول کی اس بات کا کیا جواب ہے کہ وزیراعظم کی اپنی ذات اور بہن پر کروڑوں کا ٹیکس بچانے کے الزام کا کیا بنا؟ چلتے چلتے پھر خیال آ گیا ہے کہ بلاول کی اس صاف گوئی پر مریم نواز کیا جواب دیں گی؟ شائد اب تک جواب آ بھی گیا ہو، البتہ اپنی ’بُری‘ عادت کہ ایسے مواقع پر شاعری اُمڈ پڑتی ہے۔ میر حسن کی مشہور مثنوی ’سحرالبیان‘ کا صرف ایک شعر کہ وہ زیرِ زنخدان رکھ کر چَھڑی…ابھی نرگس آسا کھڑی کی کھڑی!!‘‘ (زنخدان: تھوڑی، نرگس: کھڑا پھول)۔
٭بہن بھائی کا ذکر زیادہ ہو گیا۔ اب سنجیدہ باتیں! وزیراعظم عمران خاں نے دہرایا ہے کہ افغانستان کی صرف جمہوری (عوامی) حکومت سے ہی بات چیت ہو گی۔ اس پر صدارتی محل میں بند موجودہ بے بس صدر اشرف غنی کا سیخ پا ہونا قدرتی بات ہے! امریکی فوج تیزی سے نکل رہی ہے، ستمبر تک ساری امریکی فوج افغانستان سے نکل جائے گی۔ وہ اپنا کروڑوں اربوں کی فوجی سامان و فوجی تنصیبات افغان فوج کے حوالے کرنے کی بجائے انہیں تباہ کر رہی ہے! اشرف غنی کو بھارت سے ’’بھائی چارے‘‘ کی امید تھی وہ خود ناقابل بیان شدید بدحالی سے دوچار ہے۔ امریکہ آنے والی نئی حکومت سے بھی شِیروشکر ہو جائے گا، اشرف غنی ملک سے بھاگ جائے گا یا پھر!!! افغانستان کی اپنی روایات بھی ہیں!!
٭بیچ میں ایک بات: مولانا فضل الرحمان نے وفاقی وزرا کو حکومت کے باغ کی گاجریں قرار دیا ہے۔ ایک نکتہ بین قاری نے تصحیح کی ہے کہ محاورہ ’باغ کی مُولیوں‘ کا ہے، گاجروں کا نہیں! اس عزیز کو سمجھایا ہے کہ گاجروں سے حلوہ بنتا ہے، مولیوں سے نہیں بن سکتا!
٭ناجائز بچوں کی حمائت کرنے والی نوبل انعام یافتہ پاکستانی لڑکی (اب برطانوی شہری) ملالہ کے بیان کا کچھ ذکر! اس نے مبینہ طور پرکہا ہے کہ معاشرے میں شادی اور نکاح کی بجائے مردوں اور عورتوں کو اکٹھے رہنے اور ہر قسم کے ’’میل جول‘‘ کی اجازت ہونی چاہئے!! پشتون عوام اور ان کے علاقے کی روایات اور مذہبی احکام کی شدید خلاف ورزی کا یہ بیان ایک بم کی طرح پھٹا۔ اس پر سخت ردعمل قدرتی بات تھی۔ پشاور سے جناب مولانا شہاب الدین پوپلزئی نے ملالہ کے والد ضیاء الدین کو پیغام بھیجا کہ ملالہ کے اس بیان سے ملک بھر میں شدید اضطراب اور غصہ پیدا ہو رہا ہے، اس کی وضاحت کی جائے! اس پر والد ضیاء الدین نے عذرِ گناہ، بدتر از گناہ والی وضاحت بھیجی ہے کہ ملالہ کے بیان کو سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیا گیا ہے۔ والد نے سیاق و سباق کی وضاحت نہیں کی نہ ہی بتایا ہے کہ اصل بیان کیا تھا؟ ملالہ نے واضح کہا کہ عورت اور مرد کے اکٹھے رہنے کے لئے شادی کی ضرورت نہیں! میں شادی نہیں کر رہی۔ ملالہ نے سوچ سمجھ کر ہی یہ بات کہی ہو گی۔ وہ خاموش ہے البتہ پاکستان میں اس کے ’ہم خیال‘ حلقے (مرد و خواتین) اس بیان کی بڑھ چڑھ کر حمائت کر رہے ہیں اور فیس بک پر ملالہ کو شاباش دے رہے ہیں۔ مجھے یقین نہیں آ رہا تھا کہ ملالہ اس قسم کا مادر پدر آزاد بیان دے سکتی ہے مگر اس کے والد کے گول مول بیان نے اس بیان کی تصدیق کر دی ہے کہ بات تو ٹھیک کہی ہے مگر سیاق و سباق سے ہٹ کر تاویل کی جا رہی ہے۔ ملالہ کے اس غیر متوقع بیان مذہبی اور غیر مذہبی حلقوں میں متوقع مذمت ہو رہی ہے۔ میں ایک دوسرے زاویے سے بات کر رہا ہوں۔ عورت اور مرد کی شادی صرف اسلام میں ہی نہیں، دنیا کے تمام مذاہب بلکہ روس اور چین جیسے لامذہب معاشروں میں بھی لازمی شرط کی حیثیت رکھتی ہے۔ اس کے بغیر زندگی آگے نہیں بڑھ سکتی۔ یہ ایک عہد نامے کے تحت وجود میں آتی ہے جس پر عورت اور مرد دونوں دستخط کرتے اور باقاعدہ حاضرین کی ایک تعداد کے سامنے اعتراف اور اعلان کرتے اور آئندہ پیدا ہونے والے بچوںکی کفالت، پرورش، تعلیم و تربیت اور صحت وغیرہ کی ذمہ داری قبول کرتے ہیں۔ نکاح اور شادی کے بغیر پیدا ہونے والے بچوں کی پرورش مسئلہ بن جاتی ہے۔ اکثر ذمہ دار مرد یا عورتیں اولاد کو بے آسرا چھوڑ کر چلے جاتے ہیں۔ مغربی معاشرے میں ایسے ان گنت بچے رُل رہے ہیں جن کا کوئی والی وارث نہیں۔ ہالی وڈ کی مشہور اداکارہ ’مارلین منرو‘ نے اس بنا پر خودکشی کر لی کہ اسے کوئی شخص باپ کے طور پر اپنا نام دینے کو تیار نہیں تھا! ایسی اور بھی مثالیں موجود ہیں۔ ملالہ نے نہائت فضول اور بے ہودہ بات کی ہے! کیا اس کے ماں باپ نے شادی نہیں کی تھی! شہرت اور دولت کے غیر متوقع حصول نے دماغ خراب کر دیئے!
ایک اور قابل ذکر بات، ملالہ نے ویب سائٹ پر اس بات پر گہری مسرت کااظہار کیا کہ لندن کے مشہور فیشن میگزین Vogue (ووگ) میں سرورق پراس کی پورے صفحہ کی تصویر اور اندر انٹرویو شائع کیا جا رہا ہے۔ ملالہ (سابق گل مکئی) نے بڑے فخر کے ساتھ بتایا ہے کہ اس کا انٹرویو اور تصویروں کے لئے میک اپ کے 13 مشہور ماہرین نے کام کیا ہے۔ ان میں ہاتھوںکے ناخنوں پرپالش انگلیوں میں انگوٹھیاں پہنانے، دوپٹہ ٹھیک کرنے والے بالوں کے مختلف سٹائل بنانے، چہرے پر آنکھوں اور گالوں پر مختلف کاسمیٹکس، ہونٹوں پر لپ سٹک لگانے اور قمیض اور دوپٹے پر سنہری جھالریں لگانے کے لئے الگ الگ ماہرین نے کئی گھنٹے کام کیا ہے۔ ایک آدھ خاتون کے سوا باقی ماہرین مرد تھے!!
٭ایف اے ٹی ایف کا اس ماہ کے آخر میں اجلاس ہونے والا ہے۔ پاکستان کے معاشی بزرجمہر حسب معمول ’خوش خبریاں‘ دے رہے ہیں کہ اس بار پاکستان ’’گرے فہرست‘‘ سے نکل جائے گا۔ اجلاس میں تھوڑا سا وقت رہ گیا ہے۔ حکومتی بیانات کے مطابق ایف اے ٹی ایف کی 40 شرائط میں سے 31 کی تعمیل ہو چکی ہے، باقی 9 بھی پوری ہو جائیں گی۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایف اے ٹی ایف نے ن لیگ کی حکومت کے دوران پاکستان کو گرے فہرست میں ڈالا تھا۔ اس حکومت نے بمشکل 40 میں سے آٹھ شرائط پوری کی تھیں یہ لوگ اس موضوع پر خاموش رہتے ہیں۔ خدا تعالیٰ پاکستان کو محفوظ رکھے!
٭امریکہ کے صدر بائیڈن نے اپنی اہلیہ جِل بائیڈن کی سالگرہ اس کے ساتھ ایک پارک میں سائیکل چلا کر منائی۔ حفاظتی عملہ موجود تھا۔ یہ تو خیر ایک لطیف سی بات تھی۔ اس پر 1982ء کی سائیکل یاد آ گئی جو ضیاء الحق نے راولپنڈی میںچلائی تھی۔ ایک روز اعلان ہوا کہ ملک میں سادگی کو فروغ دینے کے لئے صدر جنرل ضیاء الحق سائیکل پر دفتر (جی ایچ کیو) جایا کریں گے۔ پہلے دن ضیاء الحق مال روڈ پر آرمی ہائوس سے جی ایچ کیو کے لئے روانہ ہو گیا۔ آگے پیچھے فوجی سکیورٹی، سڑک پر دو طرفہ تمام مارکیٹیں، دکانیں، دفاتر بند، سڑک پر دونوں طرف کثیر تعداد میں فوجی مستعد کھڑے!! اگلے روز سائیکل نہیں چلی!! ضیاء الحق بہت تھک گیا تھا۔

تازہ ترین خبریں

محرم الحرام میں مجالس اور جلوسوں کیلئے ایس او پیز جاری

محرم الحرام میں مجالس اور جلوسوں کیلئے ایس او پیز جاری

پاکستان کے اہم شہر میں 15 سے زائد شادیاں کرنے والافراڈیا ، پولیس حرکت میں آگئی

پاکستان کے اہم شہر میں 15 سے زائد شادیاں کرنے والافراڈیا ، پولیس حرکت میں آگئی

پینٹاگون کے نزدیک فائرنگ ، کئی افرادکے زخمی ہونے کی اطلاعات

پینٹاگون کے نزدیک فائرنگ ، کئی افرادکے زخمی ہونے کی اطلاعات

قومی اسمبلی ملازمین کیلئے نیا ہدایت نامہ جاری ۔۔۔ کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پارلیمنٹ ہاؤس میں داخلہ ممنوع قرار

قومی اسمبلی ملازمین کیلئے نیا ہدایت نامہ جاری ۔۔۔ کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پارلیمنٹ ہاؤس میں داخلہ ممنوع قرار

الیکشن کمیشن کی عمارت کے دوسرے فلور پر آگ لگ گئی 

الیکشن کمیشن کی عمارت کے دوسرے فلور پر آگ لگ گئی 

 قائد اعظم پورٹریٹ کے سامنے غیر اخلاقی تصاویر بنوانے کے واقعے پر مقدمہ در ج

قائد اعظم پورٹریٹ کے سامنے غیر اخلاقی تصاویر بنوانے کے واقعے پر مقدمہ در ج

15 سے زائد شادیاں کرنے والے فراڈئے کے بیٹے کو ساہیوال پولیس نے گرفتار کرلیا 

15 سے زائد شادیاں کرنے والے فراڈئے کے بیٹے کو ساہیوال پولیس نے گرفتار کرلیا 

قومی اسمبلی میں حکومتی جماعت کے دوارکان کے مابین شدید تلخ کلامی

قومی اسمبلی میں حکومتی جماعت کے دوارکان کے مابین شدید تلخ کلامی

شہبازشریف نےانٹرویودےدیالیکن ہمیں اب جواب دیناپڑتاہے۔ شاہد خاقان عباسی 

شہبازشریف نےانٹرویودےدیالیکن ہمیں اب جواب دیناپڑتاہے۔ شاہد خاقان عباسی 

عمران صاحب صبح اٹھتے ہی آپ کا کام صرف عوام کا آٹا چینی بجلی گیس دوائی مہنگی کرنا ہوتا ہے۔ مریم اورنگزیب

عمران صاحب صبح اٹھتے ہی آپ کا کام صرف عوام کا آٹا چینی بجلی گیس دوائی مہنگی کرنا ہوتا ہے۔ مریم اورنگزیب

عمران خان سیاسی بصیرت سے تاحال محروم ہیں اور جمہوریت سے نفرت کرنے والی سوچ کے مہرے کے سوا کچھ نہیں۔ فیصل کریم کنڈی

عمران خان سیاسی بصیرت سے تاحال محروم ہیں اور جمہوریت سے نفرت کرنے والی سوچ کے مہرے کے سوا کچھ نہیں۔ فیصل کریم کنڈی

 چئیرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ کا اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان

چئیرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ کا اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان

ن لیگی رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کانیا کارنامہ ۔۔۔ اپنی جگہ دوسرے بندے کو امتحانی ہال میں بٹھا دیا

ن لیگی رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کانیا کارنامہ ۔۔۔ اپنی جگہ دوسرے بندے کو امتحانی ہال میں بٹھا دیا

نوازشریف کوکرکٹ کاشوق تھاوہ بائی چانس وزیراعظم بن گئے۔ عمران خان 

نوازشریف کوکرکٹ کاشوق تھاوہ بائی چانس وزیراعظم بن گئے۔ عمران خان