01:20 pm
آر ایس ایس اور مقبوضہ جموںوکشمیر

آر ایس ایس اور مقبوضہ جموںوکشمیر

01:20 pm

  بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیر میںکشمیریوں کی نسل کشی اور ان کی آبادی کے تناسب میں تبدیلی کے لئے جہاں بھارتی حکومت اسی لاکھ کشمیری بچوں ،عورتوں اور نوجوانوں کے مقابلے میں تقریبا ً  دس لاکھ باوردی دہشت گردوں کی طاقت سے ان کا قتل عام کررہا ہے ،وہ جدید تاریخ کاسیاہ ترین داغ اور انسانیت کے نام پر بدنما دھبہ ہے ،جو بھارت کے نصیب میں آیا ۔ نریندر مودی گینگ کی موجودہ حکومت کشمیریوں کی نسل کشی کے لئے بھارتی فوج کے ساتھ ساتھ خفیہ اور اعلانیہ طور پر  20سے 25ہزار انتہا پسند ہندوتوا کی تنظیم  آر ایس ایس کے کارکنوں کے ساتھ کارروائیاں کررہی ہے ۔ بھارتی حکومت کالے قوانین کی آڑ میںان کارکنوں کو وہاں کے ڈومیسائل دے کر حساس اور اہم ترین مقامات پر رہائش دے رہی ہے ۔ قابض انتظامیہ ریاستی قوانین کے خلاف سرکاری ملازمین ، خاص طور پر اساتذہ کو مجبور کررہی ہے کہ وہ  آر ایس ایس میں شمولیت اختیار کریںاور اسے ایک فلاحی تنظیم کے طور پر پیش کریں ۔ جس پر مختلف کالجز کے انتظامی بورڈ نے کارروائی کرتے ہوئے اساتذہ سے وضاحت مانگی ہے کہ وہ حلفا ً بتائیں گے کہ  وہ   آر ایس ایس کے کارکن  ہمدرد ہیں یا نہیں ۔
ٹی وی رپورٹ کے مطابق مختلف سرکاری اور پرائیویٹ کا لجز نے اپنے ملازمین اور اساتذہ سے ایک حلف نامہ طلب کیا ہے جس کے مطابق  ’’وہ اپنے اداروں کو بتائیں گے کہ ان کا کسی بھی صورت   آر ایس ایس بجرنگ دل یا کسی بھی انتہا پسند تنظیم سے کوئی انتظامی یا غیر انتظامی تعلق ہے یا نہیں وہ اس کی سرگرمیوںمیں کوئی کردار ادا کررہے ہیں یا اس کے ممبر ہیں ؟ اگر حلف نامے کے بعد کسی بھی قسم کا تعلق ثابت ہوا تو محکمانہ کارروائی ہوگی ۔‘‘ 
لیکن زمینی حقائق اس کے بالکل الٹ ہیں ریاستی قانون میں تو باقاعد ہ  آر ایس ایس کا نام شامل ہے ۔وہ اساتذہ اور سرکاری ملازمین جو ان تنظیموں سے تعاون نہیں کرتے انہیں ملک دشمن سرگرمیوں میں شامل ہونے کا الزام لگا کر نوکری سے برطرف کردیا جاتا ہے ایک درجن سے زائد سینئر افسران اور اساتذہ کو آج کی تاریخ تک نوکری سے نکالا گیا ۔ان کی جگہ (مشرقی پاکستان کی طرح)  ہندو اساتذہ کو شامل کیا جارہا ہے ۔
  آر ایس ایس  جسے عرف عام میں سنگھ پریوار کے نام سے بھی جانا جاتا ہے نے کشمیر میں مسلم اکثریت کو تبدیل کرنے کے لئے دیگر منصوبوں کے ساتھ ساتھ بھارتی دلتوں کو وہاں کی شہریت دینا شروع کردی ہے یاد رہے یہ وہی دلت ہیںجنہیںبھارتی ہندوتوا کے ذات پات کے نظام میں ہندوئوں کے مندر میں داخل ہونے اور ان کی پوجا پاٹ سننے کی اجازت نہیں ،جبکہ کشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت ختم کرنے کے لئے انہیں ہندو کے طورپر پیش کیا جارہا ہے ، سوال پیدا ہوتا  ہے کہ پورے بھارت میں کہیں بھی ان دلت کو جائیدا د خریدنے کا حق کیوں نہیں دیا جارہا صرف مقبوضہ جموں کشمیر میں کیوں ؟    آر ایس ایس کا میڈیا ونگ کس طرح اس کی تشہیر اور کشمیریوں کی توہین کرتا ہے ۔
 ووک سری واسطہ ،تجزیہ نگار ، کے ساتھ ایک پروگرام میں  آر ایس ایس کی حمایتی ٹی وی میزبان نے انتہائی بدتمیزی سے اس ہندو تنظیم کی وکالت کی کہ دلتوں کو کشمیر کی شہریت دینا کشمیر دشمنی ہے ان کو شہریت دینے کا مطلب امبانی اور جندال گروپ کے لئے راستہ ہموار کرنا ہے ان کے پاس تو زمین خریدناتو دور کی بات دو وقت کی روٹی کے لئے بھی گنجائش نہیں   آر ایس ایس تو اونچی ذات کے ہندوئوں کی تنظیم ہے وہ تنظیم جو کسی دلت کو ہندومندروں میں داخل ہونے یا ان کے پوجا پاٹ میں شامل ہونے کی اجازت نہیں نہ ہی انہیں کسی عام مندر میں جانے کی اجازت ہے ۔اگر ہندوستان کے باقی علاقوں میںان پر ذات پات کے نظام کے تحت سخت پابندیوں جن میں زمین خریدنے سمیت دیگر کا سامنا ہے تو مقبوضہ جموں وکشمیر میں انہیںکیوں اجازت دی جارہی ہے جس پراینکر سٹپٹا گئی اور بات بات میں مداخلت کرنے لگی اس پر بھارت کے سینئر ترین انسانی حقوق کے کارکنوں میںایک جان دیا ل نے اسے ایسا آئینہ دکھایا جس کی وہ حقدار تھی   انسانی حقوق کے عالمی شہرت یافتہ کارکن جان دیا ل کی بات پر بی جے پی کے ممبرزاور ٹی وی میزبان مداخلت شروع کی تو انہوںنے نہایت ہی پروقار لہجے میں اس کی بولتی بند کردی۔ انہوںنے کہا۔ ترجمہ ؛   ’’تم نے نوٹ کیا کہ میںنے کسی کے بولنے کے دوران مداخلت نہیں کی ، کیا اب میں بول سکتا ہوں  ؟ جاری رکھیں،  آج تمہارے پروگرام میں مجھے بہت دکھ ہوا کہ جموں وکشمیر میں اب بھی جانبدارانہ امتیازی قانون موجود ہیں ریاستی  قوانین کو تباہ کردیا گیا ہے۔وہ دلت جنہیںبھارت میں زمین خریدنے اورمندروں میں عبادت کا حق نہیںانہیںکشمیر میں نہیں ، پورے ملک میں زمین خریدنے کاحق ہوناچاہیے ، ایسا کیوں نہیں ؟
 ایک طرف بی جے پی اور آر ایس ایس کے کارکن اور میڈیا ونگ غلیظ پروپیگنڈے اور قتل عام میں مصروف ہیں دوسری طرف جنگی جنون میں مبتلا ان کے ہمدرد بھارتی فوجی جرنیل چیخے چلاتے ، پاکستان کو جنگ کے لئے للکار رہے ہیں جس کا جواب پاکستان کے موجودہ  وزیر اطلاعات فواد چوہدری  نے جنرل بخشی کو بھرپور  انداز میںدیا ۔ 
جنرل بخشی نے  فواد چوہدری کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ ’’  میرے دوست مجھے کہنے دو  تم جموں وکشمیر چاہتے ہو  آئو اور اسے حاصل کرلو  جو تم نہیںکرسکتے  تم اسے بھول جائو کیسے حاصل کروگے  ؟ ارے بات سن لیجئے  آپ کے لگاتار چلانے سے کشمیر آپ کو مل نہیں جائے گا  آپ کو لینا ہے تو  آپ آکر لے کر دکھا دیجئے  اس پر  فواد چوہدری نے اسے کہاکہ  آپ کشمیر کے ماموں نہ بنیں کشمیری عوام کو اس کا فیصلہ ک

تازہ ترین خبریں

 ن لیگ کے بجلی کے منصوبے موجودہ حکومت سے نہیں چل رہے، مہنگائی اور بجلی بلوں میں اضافہ سے عوام تنگ آ چکی ہے۔احسن اقبال

ن لیگ کے بجلی کے منصوبے موجودہ حکومت سے نہیں چل رہے، مہنگائی اور بجلی بلوں میں اضافہ سے عوام تنگ آ چکی ہے۔احسن اقبال

 حکومت کی جانب سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین انتخابات میں دھاندلی کے لئے استعمال کرنے کی کوشش ہے ۔ فرحت اللہ بابر

حکومت کی جانب سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین انتخابات میں دھاندلی کے لئے استعمال کرنے کی کوشش ہے ۔ فرحت اللہ بابر

سندھ حکومت نے تھر کے 200گائوں کےلئے 28کروڑروپے مختص کردیے

سندھ حکومت نے تھر کے 200گائوں کےلئے 28کروڑروپے مختص کردیے

سندھ کے اندر جمہوریت کے نام پر ڈکٹیٹرشپ موجود ہے۔ سندھ میں اگلی حکومت پاکستان تحریک انصاف کی ہوگی۔فواد چوہدری

سندھ کے اندر جمہوریت کے نام پر ڈکٹیٹرشپ موجود ہے۔ سندھ میں اگلی حکومت پاکستان تحریک انصاف کی ہوگی۔فواد چوہدری

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

چشتیاں میں کنویںکی دیوار بناتے ہوئے زمین بیٹھ گئی ۔۔۔ 3 مزدور جاں بحق

چشتیاں میں کنویںکی دیوار بناتے ہوئے زمین بیٹھ گئی ۔۔۔ 3 مزدور جاں بحق

لاہور میں تیز آندھی اور گرد آلود ہواؤں کے باعث 120 فیڈرز پر بجلی معطل ہو گئی۔

لاہور میں تیز آندھی اور گرد آلود ہواؤں کے باعث 120 فیڈرز پر بجلی معطل ہو گئی۔

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

آندھی کےباعث مکان کی چھت گر گئی ۔۔5 افراد دب گئے

 پی ‏ٹی آئی کی حکومت نےگالم گلوچ کی سیاست کی بنیادڈالی ہے۔وزیراطلاعات سید ناصرحسین شاہ

پی ‏ٹی آئی کی حکومت نےگالم گلوچ کی سیاست کی بنیادڈالی ہے۔وزیراطلاعات سید ناصرحسین شاہ

 پاکستان ایک پرامن، خود مختار اور مستحکم افغانستان کا خواہاں ہے۔شاہ محمود قریشی

پاکستان ایک پرامن، خود مختار اور مستحکم افغانستان کا خواہاں ہے۔شاہ محمود قریشی

 ہر طرح کی کرپشن کے خاتمے پر یقین رکھتے ہیں، معصوم پاکستانیوں کے اربوں لوٹنے والوں سے قانون کے مطابق نمٹیں گے۔ چیئرمین نیب

ہر طرح کی کرپشن کے خاتمے پر یقین رکھتے ہیں، معصوم پاکستانیوں کے اربوں لوٹنے والوں سے قانون کے مطابق نمٹیں گے۔ چیئرمین نیب

 محترمہ بینظیر بھٹو شہید نے جس نظریے کے لئے اپنی جان کا نذرانہ دیا وہ نظریہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ آصف علی ذرداری 

 محترمہ بینظیر بھٹو شہید نے جس نظریے کے لئے اپنی جان کا نذرانہ دیا وہ نظریہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ آصف علی ذرداری 

محلےکے لڑکوں سے ناجائز تعلقات پر 14سالہ لڑکی کو مار ڈالا گیا

محلےکے لڑکوں سے ناجائز تعلقات پر 14سالہ لڑکی کو مار ڈالا گیا

 الیکشن سے پہلے عوام کو بڑے بڑے خواب دکھائے گئے مگر نہ معیشت بہتری ہوئی اور نہ ہی ایک کروڑ نوکریاں دی گئیں ۔مفتاح اسماعیل

الیکشن سے پہلے عوام کو بڑے بڑے خواب دکھائے گئے مگر نہ معیشت بہتری ہوئی اور نہ ہی ایک کروڑ نوکریاں دی گئیں ۔مفتاح اسماعیل