01:35 pm
پاکستان، عالمی سفارتی سرگرمیوں کا مرکز! 

پاکستان، عالمی سفارتی سرگرمیوں کا مرکز! 

01:35 pm

٭پاکستان عالمی سفارتی سرگرمیوں کا مرکز بن گیا، متعدد ممالک کے نمائندوں کی آمد!O افغانستان: پابندیاں شروع، موسیقی کے بعد خواتین کی کرکٹ اور دوسری کھیلوں پر پابندیO بھارت، پاکستان و افغانستان کے خلاف مہم مزید تیزO پاکستان: اپوزیشن پارٹیاں آپس میں گتھم گتھا، سخت الزاماتO اسلام آباد، نیشنل ایکشن پلان پھر زندہ!Oقطر میں عالمی فٹ بال مقابلے، پاکستان کی سکیورٹی کی پیش کشO کابل: حامد کرزئی ہوائی اڈے کا نام تبدیل صرف کابل انٹرنیشنل ایئرپورٹO کوئٹہ 700 افغان باشندے ملک بدرO افغانستان کو پاکستان اور چین کی امدادی ترسیلO کراچی میں ایک اور فیکٹری میں آتشزدگی!
٭رات گئے لاہور میں بارش شروع ہوئی، بجلی کے مسلسل کڑاکے دار دھماکے، کئی گھنٹے سے بجلی بند (کراچی میں بھی یہی حال) بارش میں اخبارات بھی نہیں آئے۔ گزشتہ رات کی خبروں پر کالم لکھ رہا ہوں۔ ادبی طور پر، کبھی دل کی روشنی کام دے جاتی تھی اب بقول غالب ’’جوانی کے ساتھ دیوانگی بھی گئی اور دِل! عرض نیاز مشق کے قابل نہیں رہا‘‘ معذرت کہ شاعری کی آہ و بکا شروع ہو گئی۔ چلئے واپس چلتے ہیں۔ سوشل میڈیا کی مدد سے کچھ نہ کچھ دال دلیا! ویسے پورا کالم تو صرف ایک بات پر  بھی لکھا جا سکتا ہے کہ انقلاب تو افغانستان میں آیا اور پاکستان عالمی سیاسی و غیر ملکی سفارتی سرگرمیوں کا مرکز بن گیا ہے۔ اب تک برطانیہ، قطر، اٹلی، جرمنی کے وزرائے خارجہ، اور امریکہ کی بدنام زمانہ ’سی آئی اے‘ کا وزیر کے عہدہ کا ڈائریکٹر ’جوزف برنز‘ پاکستان آ چکے ہیں۔ سی آئی اے کبھی اتنی طاقتور تھی کہ ناپسندیدہ حکومتیں اُلٹا دیا کرتی تھی، اب یہ حالت کہ طالبان نے سی آئی اے کو اُلٹا دیا ہے۔ عجیب بات ہے کہ انقلاب تو افغانستان میں آیا اور پاکستان کی عالمی سطح پر ساکھ بڑھ گئی ہے، وہ اہم بین الاقوامی سفارتی مرکز بن گیا ہے۔ افغانستان میں 15 اگست کے انقلاب کے بعد پاکستان نے جس طرح وہاں پھنسے ہوئے ہزاروں غیر ملکی سفارت کاروں اور دوسرے باشندوں کو وہاں سے نکالا، اسلام آباد میں ان کی میزبانی کی اور ان سب کو بحفاظت ان کے ملکوں کو روانہ کر دیا، اس سے بین الاقوامی سطح پر پاکستان کی ساکھ بڑھ گئی اور دوسرے ملکوں کے اہم وزیر اور سفارتی نمائندے پاکستان آ کر تشکر کا اظہار کر رہے ہیں۔ اب تک برطانیہ، جرمنی، اٹلی، قطر کے وزرائے خارجہ اور امریکہ سے سی آئی اے کا ڈائریکٹر جوزف برنز پاکستان آ چکے ہیں۔ جوزف برنز کابل بھی جا چکا ہے، اب بھارت سے ہو کر اسلام آباد آیا۔ وہ ڈیڑھ ماہ پہلے بھی پاکستان آیا تھا۔ اس وقت اشرف غنی افغانستان کا صدر تھا۔ جوزف برنز نے پاکستانی حکام کو دھمکیاں دیں کہ اشرف غنی کی مخالفت اور طالبان کی حمائت بند کرو،  ورنہ اسے سخت کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔ اب وہ پاکستان آ کر اس کی ’عالمی خدمات‘ پر شکریہ ادا کر رہا ہے اور پاکستان سے اپیلیں کر رہا ہے کہ افغانستان میں رہ جانے والے کچھ امریکی باشندو ںکو نکالنے میں مدد دے! زمانے کا کیا الٹ پھیر ہے کہ امریکہ واحد سپر طاقت بن گیا تھا، اب طالبان کے ہاتھوں بھیگی بلی بن گیا ہے!
٭قارئین کرام، غیروں کی باتیں چلتی رہیں گی۔ اس وقت تو پاکستان میں اپوزیشن کی پارٹیوں میں ہونے والی ’لپاڈگی‘ سے بہت سے محاورے اور کہانیاں یاد آ گئی ہیں۔ پرائمری سکول کی کلاس میں ایک باتصویر کہانی پڑھی تھی۔ بہت سے سفید اور کالے کبوتر ایک شکاری کے جال میں پھنس گئے۔ انہوں نے باہم مشورہ سے اتحاد کیا اور سب مل کر جال کو اُٹھا کر اُڑنے لگے۔ تھوڑی دیر بعد سیاہ کبوتروں نے شور مچایا کہ جال اڑانے میں سارا زور تو ہم لگا رہے ہیں، سفید کبوتر کچھ بھی نہیں کر رہے ہماری محنت کا لطف اٹھا رہے ہیں۔ سفید کبوتر برہم ہو گئے کہ ہم پر اُلٹا الزام لگایا جا رہا ہے، سارا زور تو ہم لگا رہے ہیں۔ لڑائی اتنی بڑھی کہ دونوں فریقوں نے زور لگانا بند کر دیا اور جال دھڑام سے نیچے جا گرا۔ شکاری کو زیادہ نہیں دوڑنا پڑا!! اب ذرا منظر نامہ! اک دم اکٹھا پڑھنے سے لطف نہیں آئے گا، الگ الگ پڑھئے:۔
٭بلاول زرداری: ’’پی ڈی ایم ہم نے بنائی اس کو مولانا اور ن لیگ نے تباہ کیا۔ خود اسمبلیوں سے استعفے دیتے نہیں، جم کر بیٹھے ہیں، حکومت کا مکمل ساتھ دے رہے ہیں اور الزام ہم پر! ہم نے کہا کہ پنجاب کے وزیراعلیٰ کے خلاف عدم اعتماد کرو، عمران خاں خود ہی بھاگ جائے گا۔ یہ لوگ اسمبلیوں کے مفادات کیسے چھوڑ سکتے ہیں؟‘‘ (ہم بھی کیسے چھوڑ سکتے ہیں؟)
مولانا فضل الرحمن: ’’بلاول اور اے این پی پی ڈی ایم کے ’میر جعفر اور ’میر صادق‘ ہیں (غدار!) بلاول نے پی ڈی ایم کی پُشت میں چھرا گھونپا ہے۔ وزیراعظم بننے کے لئے اسٹیبلشمنٹ سے معاہدہ کر لیا ہے۔ اب ن لیگ کو توڑ رہا ہے…‘‘
٭فیصل کریم کنڈی سیکرٹری اطلاعات، پیپلزپارٹی اور ڈی آئی خاں میں مولانا کا حریف: ’’مولانا یہ بتایئے کہ آپ نے کس کے ساتھ (اسٹیبلشمنٹ) معاہدہ کر کے اسلام آباد میں اپنا نام نہاد دھرنا ختم کیا تھا؟ اب نیب سے بچنے کے لئے پھر وہی معاہدہ کیا پی ڈی ایم کو تباہ کر دیا اور نیب سے جان چھوٹ گئی ہے‘‘
٭مریم نواز:’’میں پیپلزپارٹی کے بارے میں کچھ نہیں کہوں گی! نواز شریف نے شہباز شریف کو وزیراعظم نامزد کیا تو ان کی حمائت کروں گی (ورنہ نہیں)…اور…اور چودھری نثار علی کو اس قابل نہیں سمجھتی کہ اس کی کسی بات پر تبصرہ کروں! (چودھری نثار نے ن لیگ سے استعفا ہی اس لئے دیا تھا کہ نواز شریف ان کی بجائے ن لیگ کا سارا کنٹرول مریم کے حوالے کر دیا تھا)
٭شاہد خاقان عباسی: ’’بلاول کی باتوں پر توجہ دینے کی ضرورت نہیں، محض جنوبی پنجاب کو ورغلا رہا ہے! پی ڈی ایم کو پیپلزپارٹی کی کوئی ضرورت نہیں۔‘‘ پریس کانفرنس
٭محترم خواتین و حضرات: اپوزیشن میں دال بٹ رہی ہے (میں نے ’جوتیوں میں دال‘ نہیں کہا یہ بری بات ہے) اور محاورے کے مطابق ’بی جمالو‘ بُھس میں چنگاری ڈال کر دُور کھڑی تماشا دیکھ رہی ہے۔ قارئین کرام! ’بی جمالو‘ کون ہے؟ پلیز مجھے بھی بتا دیں!
ایک دلچسپ منظر نامہ: پنجاب حکومت کے وزیر اور ترجمان فیاض الحسن چوہان نے ن لیگ پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری کو عین اس وقت فون کیا جب وہ لاہور میں صحافیوں کو خوش رنگ چائے پلا رہی تھیں (پیسٹریاں بھی تھیں) وہ رواں دواں پرجوش باتیں کر رہی تھیں کہ اچانک فون کی گھنٹی بجی، عظمیٰ نے دیکھا۔ سکرین پر فیاض الحسن کی شکل ابھری ہوئی تھی۔ عظمیٰ نے فون بند کرتے ہوئے صحافیوں سے کہا کہ ’’فیاض الحسن کا فون تھا۔ ہائے! کِتنی بری شکل تھی!؟‘‘
اس کے بعد عظمیٰ نے فیاض الحسن کو مناظرے کا چیلنج کر دیا۔
اور فیض الحسن کا جواب:’’لوجی! نیکی برباد! میں تو محترمہ عظمیٰ صاحبہ سے ہمدردی کا اظہار کرنا چاہتا تھاکہ ن لیگ کے قائدین نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔ اس میں بی بی عظمیٰ کو شریک نہیں کیا، مجھے اس پر دکھ تھا۔ اس کے اظہار کے لئے بی بی کو فون کیا تھا مگر انہیں میری شکل ہی پسند نہیں آئی!…اور اب اسی شکل کے ساتھ مناظرے کی دعوت!! کل جُگ ہے یاں کَل جُگ! (برا زمانہ)‘‘
٭ قارئین کرام! فیاض الحسن کے ساتھ ایک ’’صِنف نازک‘‘ نے جو سلوک کیا، وہ تو ہمیشہ سے ہوتا آیا ہے۔ ایک قاری نے مشورہ دیا ہے کہ اب مناظرے میں فیاض الحسن کی شکل توتبدیل نہیں ہو سکے گی، وہ اپنی جگہ فردوس عاشق اعوان کو بھیج دیں! پتہ نہیں کہاں ہیں؟‘‘
٭شیخ رشید، طالبان کو مشورہ دیا گیا تھا کہ حامد کرزئی اور عبداللہ عبداللہ کو ساتھ ملائیں۔ طالبان نے سوال کیا ہے کہ کیا آپ نے نوازشریف اور آصف زرداری کو اپنی کابینہ میں شامل کر لیا ہے؟                                                                                                                                                                
 

تازہ ترین خبریں

نوازشریف پاکستان واپس آئیں گے اور ملک کے چوتھی بار وزیراعظم بنیں گے، لائیو پروگرام میں بڑا دعویٰ کر دیا گیا

نوازشریف پاکستان واپس آئیں گے اور ملک کے چوتھی بار وزیراعظم بنیں گے، لائیو پروگرام میں بڑا دعویٰ کر دیا گیا

خطرناک ترین دفان نے سر اٹھا لیا ۔۔ بارشیں اور برفباری تو کچھ نہیں،آئندہ کچھ دنوں میں کیا  تباہ پھرنےوالی ہے؟محکمہ موسمیات نے خطرناک الرٹ جا

خطرناک ترین دفان نے سر اٹھا لیا ۔۔ بارشیں اور برفباری تو کچھ نہیں،آئندہ کچھ دنوں میں کیا تباہ پھرنےوالی ہے؟محکمہ موسمیات نے خطرناک الرٹ جا

نئی آفت نے پاکستان کو گھیر لیا۔۔ خبر دار گھروں سے باہر نہ نکلیں ،پاکستانیوں کیلئے الرٹ جاری کردیاگیا

نئی آفت نے پاکستان کو گھیر لیا۔۔ خبر دار گھروں سے باہر نہ نکلیں ،پاکستانیوں کیلئے الرٹ جاری کردیاگیا

انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی میں ہاسٹل میں مقیم طالبات کواجتماعی ز ی ا د ت ی  کا نشانہ بنا دیا گیا،رکن قومی سمبلی کے انکشافات نے پوری قوم کو لر

انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی میں ہاسٹل میں مقیم طالبات کواجتماعی ز ی ا د ت ی کا نشانہ بنا دیا گیا،رکن قومی سمبلی کے انکشافات نے پوری قوم کو لر

سوئی گیس کی قیمتوں میں اضافہ، سوئی سدرن نے عوام پر بجلیاں گر ادیں

سوئی گیس کی قیمتوں میں اضافہ، سوئی سدرن نے عوام پر بجلیاں گر ادیں

سموگ اور دُھند سے جان کب چھوٹے گی؟ محکمہ موسمیات نے پیشنگوئی کر دی

سموگ اور دُھند سے جان کب چھوٹے گی؟ محکمہ موسمیات نے پیشنگوئی کر دی

اسے کہتے ہیں ریلیف دینا،پیٹرول کی قیمتوں میں19 روپے کی بڑی کمی

اسے کہتے ہیں ریلیف دینا،پیٹرول کی قیمتوں میں19 روپے کی بڑی کمی

سرکاری ملازمین کی موجیں،گریڈ 1سے 4کی تنخواہوں میں 20جبکہ گریڈ 5 سے اوپر ملازمین کی تنخواہوں میں 10فیصد اضافے کا فیصلہ

سرکاری ملازمین کی موجیں،گریڈ 1سے 4کی تنخواہوں میں 20جبکہ گریڈ 5 سے اوپر ملازمین کی تنخواہوں میں 10فیصد اضافے کا فیصلہ

عمران خان ملک چھوڑنے والے ہیں،پیشنگوئی نے اقتدار کے ایوانوں میں ہلچل مچادی

عمران خان ملک چھوڑنے والے ہیں،پیشنگوئی نے اقتدار کے ایوانوں میں ہلچل مچادی

ایسا گائوں جہاں گھر میں جتنے بیٹے ہوں بہوایک ہی آتی ہے،حیران کن اور شرمناک تفصیلات آگئیں

ایسا گائوں جہاں گھر میں جتنے بیٹے ہوں بہوایک ہی آتی ہے،حیران کن اور شرمناک تفصیلات آگئیں

سرکاری آئل کمپنی نے پیٹرول اور ڈیزل بطور تحفہ دینے کا اعلان کر دیا،شہری سیخ پا ہو گئے

سرکاری آئل کمپنی نے پیٹرول اور ڈیزل بطور تحفہ دینے کا اعلان کر دیا،شہری سیخ پا ہو گئے

دعائیں قبول ،ابررحمت برسنے کو تیار۔۔رواں ہفتے کون کون سے علاقوں میں بارشیں برسنے والی ہیں ۔۔؟ پاکستانیوں کو دل خوش کر دینےوالی پیش گوئی

دعائیں قبول ،ابررحمت برسنے کو تیار۔۔رواں ہفتے کون کون سے علاقوں میں بارشیں برسنے والی ہیں ۔۔؟ پاکستانیوں کو دل خوش کر دینےوالی پیش گوئی

بغیر ڈرائیور ٹیکسیاں سڑکوں پر۔۔ ان ٹیکسیوں میں ایک وقت میں کتنے مسافر سوار ہو سکیں گے؟عوام کیلئے خوشخبری

بغیر ڈرائیور ٹیکسیاں سڑکوں پر۔۔ ان ٹیکسیوں میں ایک وقت میں کتنے مسافر سوار ہو سکیں گے؟عوام کیلئے خوشخبری

گاڑیوں کے شوقین افراد کیلئے بُری خبر،وہ گاڑیاں جن کی درآمد پر پابندی لگا دی گئی

گاڑیوں کے شوقین افراد کیلئے بُری خبر،وہ گاڑیاں جن کی درآمد پر پابندی لگا دی گئی