12:31 pm
امریکی نائب وزیر خارجہ اور امریکی پٹاری کے راتب خور

امریکی نائب وزیر خارجہ اور امریکی پٹاری کے راتب خور

12:31 pm

امریکہ کی نائب وزیر خارجہ ونیڈی شرمین کہتی ہیں کہ ’’ہم پاکستان کے ساتھ انسداد دہشت گردی کے حوالے سے مضبوط شراکت چاہتے ہیں اور ہم امید رکھتے ہیں کہ پاکستان بغیر کسی فرق کے تمام عسکریت پسندوں اور دہشت گرد گروپوں کے خلاف کارروائی کرے گا‘‘ یاد رہے  کہ امریکی نائب وزیر خارجہ کا یہ بیان اس وقت آیا ہے کہ جب پاکستان ٹی ٹی پی سمیت دیگر عسکریت پسند گروپوں سے مفاہمت کی کوششیں کررہا ہے، امریکی نائب وزیرخارجہ کا یہ بیان ، پاکستان کے حوالے سے امریکہ کے حکمرانوں کی بدنیتی کو واضح کر رہا ہے۔سوال یہ ہے کہ اگر امریکہ اپنے دشمن افغان طالبان سے مفاہمت کرسکتا ہے، اگر امریکہ افغان طالبان سے مذاکرات کے ذریعے افغانستان سے جان چھڑا کر فرار ہوسکتا ہےتو وہ ’’پاکستان‘‘ کو یہ حق دینے کے لئے کیوں تیار نہیں ہے کہ پاکستان بھی ملک سے دہشت گردی کے خاتمے کو ممکن بنانے کے لئے ٹی ٹی پی کے جنگجوئوں سے مذاکرات کرسکے؟

کیا پاکستان امریکہ کا غلام ملک ہے؟ کہ امریکہ جو کہتا چلاجائے گا پاکستان اس کے سامنے سرتسلیم خم کرتا رہے گا ؟ اگر امریکہ کے افغان طالبان سے مذاکرات حلال ہیں تو پاکستان کے ٹی ٹی پی سے حرام کیوں؟ اگرامریکہ کی افغان طالبان سے مفاہمت جائزہے تو پاکستان کی ٹی ٹی پی سے مفاہمت کی کوششیں ناجائز کیوں؟ کیا امریکی فوجیوں کی جانیں پاکستانی فوجیوں کی جانوں سے زیادہ قیمتی ہیں کہ امریکی فوجی توجانیں بچاکرامریکہ پدھاریں اور پاکستانی فوجی امریکہ کی بھڑکائی ہوئی کروسیڈی جنگ لڑتے رہیں؟پاکستان صرف کالعدم تحریک طالبان پاکستان سے ہی مذاکرات نہیں کر رہا بلکہ وزیراعظم عمران خان کے بقول، پاکستان بلوچ عسکریت پسندوں کے ساتھ بھی بات چیت کررہا ہے۔
دلچسپ بات یہ ہے کہ ’’امریکہ‘‘ اور پاکستان میں موجود امریکی پٹاری کے راتب خور سیکولر شدت پسندوں کے مٹھی بھرگروہ کو بلوچ عسکریت پسندوں سے مذاکرات اورمعافی،تلافی پرتو کوئی اعتراض نہیں ہے، ہاں ان سب کو اگر اعتراض ہے تو صرف اور صرف ’’کالعدم تحریک طالبان‘‘ سے بات چیت یامفاہمت  پراعتراض ہے،امریکی پٹاری کے کالم نگار اوردانشور جب سے ٹی  ٹی پی سے حکومتی بات چیت  کی خبریں منظر عام پر آئیں ہیں، تب سے کبھی اے پی ایس کی دہشت گردی اور کبھی خودکش حملوں کے حوالے دیتے ہوئے نظر آرہے ہیں،سیکولر شدت پسند کبھی کالعدم تحریک طالبان سے خوفزدہ ہوئے اورکبھی انہیں این آر او دینے کا پروپیگنڈہ کررہے ہیں،لیکن بلوچ عسکریت پسندوں نے بلوچستان میں جو چن چن کر پنجابی ڈاکٹر، پنجابی پروفیسر، پولیس آفیسر،پنجابی مزدوروں  کا قتل عام کیاانہیں نہ کوئی یاد کررہا ہے اورنہ ان کے حوالے دے رہا ہےحالانکہ ٹی ٹی پی ہو یابلوچ عسکریت پسند،ان دونوں میں بظاہر فرق بس اتنا ہے کہ ٹی ٹی پی والے اپنے آپ کو ’’اسلام‘‘ کی طرف منسوب کرتے ہیں(غلط یا صحیح؟یہ ان کا دعویٰ ہے) جبکہ بلوچ عسکریت پسند سیکولر شدت پسند سمجھے جاتے ہیں،میری رائے میں دہشت گرد نہ سیکولر ہوتا ہے اورنہ مذہبی،مگر بدقسمتی سے ہمارے ہاں ’’دانشوری‘‘پرقابض شعبدہ بازوں نے’’دہشت گردی‘‘ کو بھی مختلف خانوں میں تقسیم کر رکھا ہے،یہی وجہ ہے کہ بلوچ عسکریت پسندوں کو معاف کردیاجائے،ان سے حکومت مفاہمت کرے ،تو نہ کسی کو بے گناہ  پنجابیوں کی تڑپتی لاشیں نظر آئیں گی،نہ پٹھانوں کا بہتا ہوا لہو نظر آئے گا،نہ ٹرینوں پرہونے والےحملے نظر آئیں گے، نہ ہی ریلوے کی اکھاڑی جانے والی پٹڑیوں پرنگاہ پڑے گی اور نہ ہی کوئی ’’را‘‘ کے ٹریننگ کیمپوں سے ٹریننگ لےکر کوئٹہ سے کراچی تک دہشت گردی کے واقعات کا تذکرہ کرتا نظر آئے گا،ہاں البتہ وزیراعظم اگرٹی ٹی پی سے مذاکرات یا مفاہمت کا اعلان کریں گے تو پھر یہاں سے نیو یارک تک گھنٹیاں کھڑکنا شروع ہوجائیں گی،بڑے بڑے لکھاری،این آراو  کی دہائیاں دیتے نظر آئیں گے، صرف امریکہ ہی منافق نہیں ہے بلکہ امریکی اور بھارتی پٹاری کے کالم نگار اور دانشور بھی پرلے درجے کے بدترین منافق ہیں، میرا یہ کہنا ہے کہ اگر بلوچ عسکریت پسندوں سے مذاکرات اور مفاہمت ہوسکتی ہے تو پھر ٹی ٹی پی سے مذاکرات اور مفاہمت بھی ہونی چاہیےتاکہ وطن عزیز سے دہشت گردی کا مکمل خاتمہ ہوسکے۔
امریکی پٹاری کے راتب خور گڈعسکریت پسند(بلوچ عسکریت پسند)اور بیڈعسکریت پسند(ٹی ٹی پی) کی بحث سے باہرنکلیں، حکومت اگر ملک کے معروضی حالات کے پیش نظر عسکریت پسندوں سے مذاکرات کرناچاہتی ہے تو اس کے راستے میں روڑے اٹکا کر ملک کو مزید بدنام کرنے کی کوشش مت کریں،امریکی اور بھارتی دسترخوان کے راتب خوروں نے اپنے آقا جوبائیڈن سے پوچھاکہ جن طالبان مجاہدین نے تمہارے ہزاروں امریکی افغانستان  میں مارے تھے تم نے ان طالبان سے مفاہمت کیوں کی؟
جن افغان طالبان نے اربوں روپے کے امریکی اسلحے پرقبضہ کرلیا،امریکہ نے ان سے صلح کیوں کی؟ جن طالبان مجاہدین نےامریکی فرعونیت کے بتوں کو پاش پاش کرڈالا،امریکہ نے ان سے مذاکرات کیوں کئے؟ امریکہ نے افغان طالبان سے بھکاریوں کی طرح این آراو کیوں حاصل کیا؟ بجائے اس کے کہ دانشوروں کا یہ گروہ اپنے بھگوڑے ؑآقا سے سوالات پوچھتا،الٹا پاکستان کو عسکریت پسندوں کو این آر او دینے کے طعنے دے رہاہے ؟ حالانکہ ابھی تک ٹی ٹی پی سے مذاکرات یا مفاہمت کی کوئی عملی صورت حال بھی واضح نہیں ہوئی۔

تازہ ترین خبریں

 فروری 2024قومی بچت بینک نے بہبود سیونگ سرٹیفکیٹس کے لیے منافع کی شرح کا اعلان کردیا گیا

 فروری 2024قومی بچت بینک نے بہبود سیونگ سرٹیفکیٹس کے لیے منافع کی شرح کا اعلان کردیا گیا

صدر مملکت  کی جانب سے قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کی سمری مسترد ،دیکھیں 

صدر مملکت  کی جانب سے قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کی سمری مسترد ،دیکھیں 

پنجاب کی نئی وزیراعلیٰ مریم نواز شریف کے بارے میں وہ سب تمام معلومات جو آپ نہیں جانتے ،دیکھیں

پنجاب کی نئی وزیراعلیٰ مریم نواز شریف کے بارے میں وہ سب تمام معلومات جو آپ نہیں جانتے ،دیکھیں

ن لیگ نے ایم کیو ایم کے مطالبوں سے اصولی اتفاق کر لیا ، دیکھیں تفصیل خبر میں

ن لیگ نے ایم کیو ایم کے مطالبوں سے اصولی اتفاق کر لیا ، دیکھیں تفصیل خبر میں

پاکستان کی آئی ایم ایف سے بنگلہ دیش طرز کے معاہدے کی کوشش، دیکھیں تفصیل 

پاکستان کی آئی ایم ایف سے بنگلہ دیش طرز کے معاہدے کی کوشش، دیکھیں تفصیل 

 2 فرشتوں کے بغیربانیٔ پی ٹی آئی سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی ، شیر افضل مروت کا بیان سامنے آ گیا 

 2 فرشتوں کے بغیربانیٔ پی ٹی آئی سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی ، شیر افضل مروت کا بیان سامنے آ گیا 

مرتضیٰ بھٹو قتل کیس میں 4 ملزمان کے وارنٹ گرفتاری جاری 

مرتضیٰ بھٹو قتل کیس میں 4 ملزمان کے وارنٹ گرفتاری جاری 

مریم نواز پنجاب کی پہلی خاتون  وزیر اعلیٰ منتخب،دیکھیں خبر

مریم نواز پنجاب کی پہلی خاتون وزیر اعلیٰ منتخب،دیکھیں خبر

سنی اتحاد کونسل ارکان کابائیکاٹ، مریم نواز بھی بول اٹھیں

سنی اتحاد کونسل ارکان کابائیکاٹ، مریم نواز بھی بول اٹھیں

وزیراعلیٰ کے انتخاب کے لیے پنجاب اسمبلی کا اجلاس، سنی اتحاد کونسل اراکین احتجاجا واک آؤٹ کر گئے  

وزیراعلیٰ کے انتخاب کے لیے پنجاب اسمبلی کا اجلاس، سنی اتحاد کونسل اراکین احتجاجا واک آؤٹ کر گئے  

تمام  مستند معلومات کے لیے بینظیر انکم سپورٹ  کا  واٹس ایپ چینل شروع، دیکھیں

تمام  مستند معلومات کے لیے بینظیر انکم سپورٹ کا واٹس ایپ چینل شروع، دیکھیں

اہم خبر ،اسد عمر لانگ مارچ توڑ پھوڑ کیس میں بری ہو گئے 

اہم خبر ،اسد عمر لانگ مارچ توڑ پھوڑ کیس میں بری ہو گئے 

وزیراعلیٰ پنجاب اور سندھ کا انتخاب آج،دیکھیں تفصیل 

وزیراعلیٰ پنجاب اور سندھ کا انتخاب آج،دیکھیں تفصیل 

پاک فوج اور رائل سعودی لینڈ فورسز کی مشترکہ فوجی تربیتی مشقوں کا انعقاد

پاک فوج اور رائل سعودی لینڈ فورسز کی مشترکہ فوجی تربیتی مشقوں کا انعقاد