12:16 pm
حریت کانفرنس کا اتحاد

حریت کانفرنس کا اتحاد

12:16 pm

طویل خاموشی اور تذبذب ختم کرتے ہوئے حریت کانفرنس کے گروپوں کے درمیان بالآخر متحد ہو کر جدوجہد کرنے پر اتفاق ہو گیا ۔ کافی عرصہ سے اتحاد کی ضرورت محسوس کی جا رہی تھی۔اس کے بارے میں مشاورت ہوئی۔تجاویز پر غور کیا گیا۔یہ طے پایا کہ بھارتی زنداں میں محبوس ایک مخلص رہنما مسرت عالم بٹ اس اتحاد کے سربراہ ہوں گے ۔ حریت کانفرنس کے پاکستان اور آزاد کشمیر چیپٹرکے کنوینئر کے لئے عید کے بعد انتخاب ہو گا۔ تب تک محمد فاروق رحمانی  کارگزار کنوینئر کے فرائض انجام دیتے رہیں گے۔ بھارت نے جب سے مقبوضہ کشمیر کو اپنے دو یونین علاقے قرار دے کر ریاستی درجہ ختم کیا ہے، تب سے حریت کانفرنس کی سینئرقیادت سمیت لاتعداد رہنما اور کارکن بھارتی جیلوں میں قید ہیں یا گھروں میں نظر بند رکھے گئے ہیں۔ہر طرف سے تجاویز سامنے آ رہی تھیں کہ جدوجہد آزادی میں متحرک تمام سیاسی رہنما اور کارکنان حریت کانفرنس کے ایک ہی بینر تلے کام کریں اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق حق خودارادیت کے حصول کے لیے جدوجہد جاری رکھیں ۔
 حریت کانفرنس کے ترجمان نے گزشتہ روز سرینگر میں جاری کردہ بیان میں حریت کے اتحاد کا اعلان کیا اور کہا کہ بھارت نے جموں وکشمیر کی بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ متنازعہ اورریاستی حیثیت کو یکسر نظر انداز کرتے ہوئے یکطرفہ اور غیر قانونی طور پر اس کو  جبری اور غیرقانونی طور پرضم کردیا ، حریت کانفرنس کے رہنمائوں اور کارکنوں کو گرفتار کیا گیا اور ان کے خلاف کالے قوانین کے تحت مقدمات درج کئے گئے۔ بھارت نے منظم قتل و غارت کے علاوہ اسرائیل کے نقش قدم پر چلتے ہوئے غیر ریاستی بھارتی باشندوں کوکشمیر میں آباد کرکے اس مسلم اکثریتی علاقے میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ اس صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے حریت کانفرنس کے مختلف دھڑوں کی تمامم تنظیموں اور رہنمائوں نے حق خودارادیت کے لئے جاری تحریک کو اس کے منطقی انجام تک پہنچانے کے لیے اتحاد قائم کرنے کافیصلہ کیا۔ یہ نہ صرف جموں و کشمیر کے عوام کا مطالبہ اور خواہش تھی بلکہ قائد تحریک شہید سید علی شاہ گیلانی نے بھی اپنی زندگی میں تمام دھڑوں اور فورمز کے درمیان اتحاد کی تلقین کی ۔ اس سے نہ صرف تحریک کو تقویت ملے گی بلکہ یہ سید علی شاہ گیلانی، میر واعظ مولوی محمد فاروق، خواجہ عبد الغنی لون سمیت شہید قائدین کو خراج عقیدت بھی ہو گا جو تحریک کے وسیع تر مفاد میں اتحادکی خواہش رکھتے تھے۔ اس تجویز پر اتفاق کیا گیا کہ کل جماعتی حریت کانفرنس کے عہدیداروں کا انتخاب جمہوری طریقے سے کیا جائے گا اور تقسیم سے بچنے کے لیے تمام احتیاطی تدابیر اختیار کی جائیں گی تاکہ قابض بھارت کی سازشوں کا شکارنہ ہوبن سکیں۔ بھارت کی طرف سے 5 اگست 2019 اور اس کے بعد اٹھائے گئے اقدامات کل جماعتی حریت کانفرنس کے اتحاد کا تقاضاکرتے ہیں۔ حریت کے دونوں دھڑوں نے دیگر تمام تنظیموں کے ساتھ اتحاد کو ممکن بنایا اورکل جماعتی حریت کانفرنس کے اتحاد کو مزید مضبوط، جموں اور لداخ سمیت تمام خطوں تک پھیلایا جائے گا۔ تمام خواتین تنظیموں کو اکٹھا کر کے الگ سے شعبہ خواتین تشکیل دیا گیا ہے۔ تمام جماعتوں اورتنظیموں کے ہر ضلع میں اپنے اپنے یوتھ ونگ ہوں گے۔ اگر ضرورت پڑی تو ضروری ترامیم کے لئے کل جماعتی حریت کانفرنس کے آئین کا جائزہ لیا جائے گا اور اس کے لئے جلد ہی ایک کمیٹی تشکیل دی جائے گی۔ترجمان کا کہنا تھا کہ حریت کانفرنس کے چیئرمین مسرت عالم بٹ، وائس چیئرمین شبیر احمد شاہ اور غلام احمد گلزار نے سب کو مبارکباد دی ہے اور تمام لوگوںپر زور دیا کہ وہ حریت پسند عوام کے ساتھ مل کر اپنے اپنے علاقوں میں اپنے سیٹ اپ کو مضبوط کریں۔ حریت کانفرنس کے چیئرمین نے گرفتار نوجوانوں اور بھارت کی ریاستی دہشت گردی/جنگی جرائم کا شکار افراد کی مدد پر بھی زوردیا۔مختلف کمیٹیوں کی تشکیل پر بھی اتفاق کیا گیا اور قیادت نے عوام سے ثابت قدم اور متحد رہنے کی اپیل کی۔حریت پسند عوام سمجھتے ہیں کہ کشمیری عوام کی قربانیوں پر کبھی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔ 16اپریل 2022کو حریت کانفرنس کی آزادکشمیر شاخ کی تمام جماعتوں نے متفقہ طور پر اتحاد کی حمایت کی تھی۔ حریت کانفرنس کی آزادکشمیر شاخ کے تمام رہنمائوں نے کشمیری عوام سے اپیل کی کہ وہ بھارت کے بڑھتے ہوئے مظالم خاص طور پر نوجوانوں پر مظالم اور کشمیر دشمن سازشوں کے خلاف متحد رہیں۔ترجمان نے حریت قیادت پر بھروسہ کرنے اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق تحریک کو اس کے منطقی انجام تک پہنچانے کے لئے بھرپور حمایت کرنے پر عوام کا شکریہ ادا کیا۔
حریت کانفرنس کو یہ کریڈٹ جاتا ہے کہ جب مسلح جدوجہد کے آغاز پر مسلح جہادی تنظیموں کے درمیان کشیدگی بڑھنے لگی اور کراس فائرنگ کے واقعات میں تیزی آئی تو سیاسی طور پر سرگرم شخصیات کے تعاون سے فائر بندی اور اتحاد کے لئے کوششیں شروع ہوئیں۔ 1993میں حریت کانفرنس قائم ہوئی اور اس کے بینر تلے تحریک کوسیاسی اور سفارتی طور پر اجاگر کرنے پر اتفاق کیا گیا۔ لا تعداد گروپ اس میں شامل ہوئے۔ اسی طرح مسلح جہادی تنظیموں کے درمیان ہم آہنگی اور اتحاد کے لئے شوریٰ جہاد کے بعد متحدہ جہاد کونسل کا قیام عمل میں آیا۔ سیاسی اور عسکری طور پر متحرک تنظیموں کے نظریات الحاق اور خود مختاری پر مبنی تھی۔ مگر بھارت کے قبضے کے خلاف مل کر کام کرنے پر سب کا اتفاق تھا اور آج بھی یہی کم از کم مشترگہ پروگرام ہے جس پر عمل کرتے ہوئے اتحاد اور اتفاق کا پرچم سر بلند رکھا جا سکتا ہے۔ اگر اختلافی نکات کو زیر التوا رکھتے ہوئے مشترکہ مقصد کو مدنظر رکھا جائے تو یہ تحریک کی بہترین خدمت ہو گی۔ گزشتہ تین دہائیوں میں سبھی سٹیک ہولڈرز نے بہت کچھ سیکھ اور سمجھ لیا ہے۔ افہام و تفہیم اور معاملہ فہمی سے ہی اتحاد کو قائم و دائم رکھا جا سکتا ہے۔ جب بعض لوگ قومی اور اجتماعی مفاد پر ذاتی مفادات کو ترجیح دیتے ہیں تو معاملات بگڑ جاتے ہیں۔ حریت کانفرنس، جہاد کونسل سمیت ہر کشمیری اور اس کے ہمدرد کے لئے بڑا چیلنج ہے کہ وہ کس طرح بھارت کے قبضے کے خلاف جدوجہد آزادی میں اپنا مثبت کردارادا کرنے کے لئے متحرک ہوتا ہے۔ 

تازہ ترین خبریں

وہ نوجوان لڑکی جس نے وراثت میں ملنے والی 7ہزار کروڑ مالیت کی فرم چلانے سے ہی انکار کردیا

وہ نوجوان لڑکی جس نے وراثت میں ملنے والی 7ہزار کروڑ مالیت کی فرم چلانے سے ہی انکار کردیا

پڑوسی ملک میں انتہائی حیران کن چوری کی واردات، چور سرنگ کھود کر ٹرین کا انجن ہی چرا لے گئے

پڑوسی ملک میں انتہائی حیران کن چوری کی واردات، چور سرنگ کھود کر ٹرین کا انجن ہی چرا لے گئے

دلہن کی انتہائی معصومانہ خواہش جسے پورا کرنے کے لیے پولیس کو بلانا پڑگیا

دلہن کی انتہائی معصومانہ خواہش جسے پورا کرنے کے لیے پولیس کو بلانا پڑگیا

بورہونے کی وجہ سے کمپنی نے اپنے ملازم کو نکال دیا، عدالت کا دروازہ کھٹکھٹایا تو کیا فیصلہ ہوا؟ جانیں

بورہونے کی وجہ سے کمپنی نے اپنے ملازم کو نکال دیا، عدالت کا دروازہ کھٹکھٹایا تو کیا فیصلہ ہوا؟ جانیں

مدینہ سے آئے تو قرآن پاک کا ترجمہ کر لیا ۔۔ کوریا کے اس لیکچرار کے ساتھ کیا ہوا جو یہ دین اسلام کی ہی خدمت میں مصررف ہو گئے

مدینہ سے آئے تو قرآن پاک کا ترجمہ کر لیا ۔۔ کوریا کے اس لیکچرار کے ساتھ کیا ہوا جو یہ دین اسلام کی ہی خدمت میں مصررف ہو گئے

خاتون جج کو آن لائن میٹنگ کے دوران سگریٹ نوشی مہنگی پڑگئی، بڑی سزا مل گئی

خاتون جج کو آن لائن میٹنگ کے دوران سگریٹ نوشی مہنگی پڑگئی، بڑی سزا مل گئی

اسمبلیوں سے استعفوں کا معاملہ ، پی ٹی آئی کے اہم رہنما کا پارٹی چھوڑنے کا عندیہ

اسمبلیوں سے استعفوں کا معاملہ ، پی ٹی آئی کے اہم رہنما کا پارٹی چھوڑنے کا عندیہ

بینکوں میں رقوم رکھوانے والوں کیلئے بڑی خوشخبری آگئی

بینکوں میں رقوم رکھوانے والوں کیلئے بڑی خوشخبری آگئی

یکم سے چاردسمبرتک چھٹیاں۔۔سرکاری ملازمین کی توموجیں لگ گئیں

یکم سے چاردسمبرتک چھٹیاں۔۔سرکاری ملازمین کی توموجیں لگ گئیں

حکمراں اتحاد کےلیے بری خبر۔۔پی ٹی آئی نے پنجاب اور کے پی اسمبلی تحلیل کرنے کی توثیق کردی

حکمراں اتحاد کےلیے بری خبر۔۔پی ٹی آئی نے پنجاب اور کے پی اسمبلی تحلیل کرنے کی توثیق کردی

کریتی سینن بالی وڈ کے کس معروف اداکار کو ڈیٹ کر رہی ہیں؟ ورون دھون نے بتا دیا

کریتی سینن بالی وڈ کے کس معروف اداکار کو ڈیٹ کر رہی ہیں؟ ورون دھون نے بتا دیا

’تحریک عدم اعتماد کا جسے شوق وہ لے آئے‘

’تحریک عدم اعتماد کا جسے شوق وہ لے آئے‘

ہم آخری حد تک جائیں گے ،اسمبلیاں تحلیل کرنے کے کپتان کے اعلان کے بعد ن لیگ بھی میدان میں آگئی

ہم آخری حد تک جائیں گے ،اسمبلیاں تحلیل کرنے کے کپتان کے اعلان کے بعد ن لیگ بھی میدان میں آگئی

سیلاب متاثرین سے متعلق بین اسٹوکس کے اعلان پر وزیراعظم شہباز شریف بھی بول پڑے،کیاکہا،جانیں

سیلاب متاثرین سے متعلق بین اسٹوکس کے اعلان پر وزیراعظم شہباز شریف بھی بول پڑے،کیاکہا،جانیں