12:46 pm
 پاک فوج کا سیاست دانوںکو ایک اور انتباہ

 پاک فوج کا سیاست دانوںکو ایک اور انتباہ

12:46 pm

٭ پاک فوج کی طرف سے سیاست دانوںکے قابل اعتراض بیانات پر سخت انتباہO ملک میں ریکارڈ مہنگائی، کوئٹہ مرغی کا گوشت 650 روپے کلو، لاہور لیموں600 سے 1000 روپے کلو، آٹا 20 کلو 1400 روپے، پشاور مرغی 600 روپے کلوO جب تک خادم پاکستان ہوں،جھوٹ نہیں بولوں گا: شہباز شریف (پہلے بولتا تھا، بعد میں پھر بولوں گا!!)O سیاسی مردوں و خواتین کی ایک دوسرے کے خلاف بدزبانی، ہرزہ سرائی کی انتہا!O جلسوں کی بھرمار، تحریک انصاف، ن لیگ، جے یو آئی، پیپلزپارٹی کے جلسےO انتخابات اکتوبر میں ہوں گے: اسحاق ڈارO نسرین جلیل، سندھ کی نئی گورنر!O عمران خان، شہباز شریف، ایک دوسرے پر’سازش‘ کے الزاماتO شہباز شریف کا اپنے کپڑے فروخت کرنے کا بیان مسئلہ بن گیا…مختلف ردعمل۔

٭پاک فوج کے تعلقات عامہ کے شعبہ، آئی ایس پی آر،  کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل بابر افتخار نے ایک بار پھر سخت تشویش اور غصے کا اظہار کیا ہے کہ مختلف پارٹیوں کے سیاست دان اپنے سیاسی مفادات کے لئے فوج کو کھلے عام بدنام کر رہے ہیں اس مقصدکے لئے سوشل میڈیا کو استعمال کر رہے ہیں، اور جلسوں میں فوج کے خلاف کھلی تقریر بھی کی جا رہی ہیں۔ ڈائریکٹر جنرل حسب معمول فوج کے خلاف کی جانے والی باتوں کی تردید اور سیاست دانوں اور صحافیوں کو محتاط رہنے کی تلقین کر کے خاموش ہوگئے۔ یہ نہیں بتایا کہ مذکورہ حلقوں کا رویہ نہ بدلا تو فوج کیا کرے گی؟ یہ سوال بے معنی ہے، ظاہر ہے کہ فوج پھر خاموش رہے گی! میں ایک عرصے سے بار بار اس قسم کے تشویش ناک بیانات اور تردیدیں سُنتا آ رہا ہوں۔ بدقسمتی کہ  ہر بار ایسے انتباہ کے بعد فوج کے خلاف بدزبانی اور یاوہ گوئی بڑھ جاتی ہے۔ میں دُکھ کے ساتھ چند مثالیں پیش کر رہا ہوں…آصف زرداری نے ٹیلی ویژنوں پر پورا مُنہ کھول کر دہاڑتے ہوئے بعض جرنیلوں کی اینٹ سے اینٹ بجا دینے اور ملک کو کراچی سے طورخم تک بند کرنے کا سخت بیان جاری کیا۔ فوج خاموش رہی۔ بلاول زرداری اور مریم نواز وغیرہ صبح اُٹھتے ہی عمران خان  کی حکومت کو ’سلیکٹڈ سلیکٹڈ، پکارنا شروع کر دیتے تھے۔ یہ فوج پر سلیکشن کا کھلا الزام تھا جِسے ان لوگوں کے ہرجلسے، ہر پریس کانفرنس کے مرکزی نعرہ کا درجہ حاصل تھا۔ سلیکشن کے علاوہ، غیبی طاقت، فرشتوں، پشت پناہوں کے الفاظ بھی مہینوں بلکہ برسوں تک استعمال ہوئے۔ کسی نے نوٹس نہ لیا۔ ایک ’’جانباز‘‘ صحافی نے کھلے عام انتہائی اشتعال میںجرنیلوں کے منہ نوچنے کا اعلان کیا! اس کے بارے میں کیا کارروائی ہوئی؟ وہ بدستور اسی حیثیت میں اسی جگہ کام کر رہا ہے اور وہی باتیں دہرا رہا ہے۔ کسی نے اس کے بارے میں کیا کارروائی کی؟ اور…اور، ’’عدالتی بھگوڑے‘‘ اور ’’اشتہاری مفرور‘‘ قرار پانے والے نواززشریف نے براہ راست ٹیلی ویژنوں پر کھلے عام آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا بار بار نام لے کر اور براہ راست مخاطب کر کے شدید قسم کے سخت الفاظ استعمال کئے۔ (’فرد جرم!‘) سب خاموش رہے!! اب بھی یہی کچھ ہو گا! کچھ عرصے بعد اسی طرح کی ایک اور پریس کانفرنس، ایک اور تشویش ناک انتباہ اور بس!!
٭مجھے ایک بات کی سمجھ نہیں آتی کہ مختلف سیاسی رہنما اتنی آسانی سے فوج کے ہیڈ کوارٹر ’جی ایچ کیو‘ میں کس طرح سب سے اوپر کی سطح پر پہنچ جاتے ہیں، پھر آئے دن آرمی چیف کے نام پر خطوط بھیجے جا رہے ہیں۔ شیخ رشید کو  حکومت سے جان کا خطرہ، پنجاب کے چند روزکے گورنر میں اتنی جرأت کیسے پیدا ہوئی کہ براہ راست آرمی چیف کو خط بھیج کر داد رسی کا مطالبہ کرے! اس کی تو یہ جرأت کہ براہ راست ہائیکورٹ پر تحریری حملہ اور ایک سینئر جج کے خلاف ریفرنس کا اعلان کر دیا! پھر فوج یا عدلیہ کی اس کے بارے میں کوئی کارروائی؟؟ ہرطرف خاموشی! ہاں سپریم کورٹ، لاہور ہائی کورٹ کی بار ایسوسی ایشنوں اور وکلا کی دوسری تنظیموں نے چند روزہ گورنر (رانا ثناء اللہ کے بقول تین دن باقی) کی ان حرکتوں کا سخت نوٹس لیا ہے۔ اس کالم کی تحریرکے وقت وکلا کے قائدین کا اجلاس جاری تھا۔
٭اور اب، تازہ ترین!! میں کالم لکھ رہاہوں اور سامنے ٹیلی ویژن پر آرمی چیف کو اپنی جان بچانے کا خط لکھنے والا سابق وزیر داخلہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں اپنے مخالف حنیف عباسی کو سزا دلانے کی درخواست کی پیروی کے لئے حاضر ہوتا ہے تو چیف جسٹس سوال کرتے ہیں کہ تم لوگوں کو عدالتوں پر اعتماد نہیں تو پھر یہاں کیوں آتے ہیں؟ فاضل چیف جسٹس نے عمران خاں کی بار بار تقریروں کا حوالہ دیا کہ پی ٹی آئی کے خلاف رات کو عدالتیں کھولی گئیں اور عدلیہ پی ٹی آئی کے خلاف فریق بن گئی ہے!! ایسے بیانات کے بعد پھر انہی عدالتوں میں آنے کی کیا ضرورت ہے؟ شیخ رشید نے کہا کہ اسے عدالت پر پورا اعتماد ہے اور وہ عمران خاں سے بھی بات کرے گا!!
٭میں نے تین روز قبل لکھا تھا کہ ستمبر اکتوبر میں عام انتخابات ہو رہے ہیں۔ اس بات کی لندن نشین اسحاق ڈار نے بھی تصدیق کر دی ہے۔ اسحاق ڈار، نوازشریف کے قریب ترین ساتھی اور سمدھی بھی ہیں۔ ان کی اس بات کو اس رشتے کے لحاظ سے اہمیت دی جا سکتی ہے۔ اکتوبر میں انتخابات کے بارے میں میرا تجزیہ بہت سادہ ہے کہ لاہور کے بارہ دروازے اور ایک موری (سیوریج والا موری دروازہ) ہیں۔ اسی طرح حکومتی اتحاد میں بارہ دروازوں والی پارٹیاں اور ن لیگی کا موری دروازہ ہے۔ آصف زرداری نے انتہائی چالاکی اور سیاسی ذہانت کے ساتھ مہنگائی اور دوسری شدید مشکلات کا سامنا کرنے کے لئے شہباز شریف کو بطور وزیراعظم آگے کر دیا اور اپنے برخوردار بلاول کو دوسرے ملکوں کی سیر سپاہٹ اور تفریح کے لئے وزیرخارجہ نامزد کر دیا۔ ن لیگ کو تخت پر بیٹھنے کی اتنی جلدی تھی کہ فوراً چال میں آ گئے۔ آصف زرداری نے ایک سے زیادہ بار برخوردار ولی عہد کو وزیراعظم بنانے کا فرمان جاری کیا مگر دیکھا کہ خزانہ بالکل خالی ہے، مہنگائی ناقابل کنٹرول ہو رہی ہے، قرضوں کی بھرمار ہو چکی ہے، ادائیگی کے لئے کشکول لے کر دربدر پھرنا پڑے گا، برخوردار کو ان معاملات کی الف ب کا بھی پتہ نہیں اُسے اٹھتے بیٹھتے عمران خاں کو گالیاں دینے کے سوا اور کچھ نہیں آتا (پوری حکومت کا یہی حال ہے)، تو بڑی آسانی سے پرانے جانی دشمن شہباز شریف کو یہ کہتے ہوئے وزیراعظم کے عہدے پر چڑھا دیا کہ ’’چڑھ جا بچہ سولی پر، رام بھلی کرے گا!‘‘ مزید یہ کہ بلاول وزیراعظم ہوتا تو مختلف اتحادیوں کی وزارتوں، گورنروں اور دوسرے عہدوں کے مطالبات کی بلیک میلنگ میں پھنس جاتا۔ اب پیپلزپارٹی یہ کارخیر خود انجام دے رہی ہے۔ پیپلزپارٹی نے 40 وزارتوں اور مشاورتی عہدوں کا ڈھیر سارا حصہ لینے کے بعد مزید چار وزارتوں، دو مشیروں اور قائمہ کمیٹیوں کے چیئرمینوں اورپارلیمانی سیکرٹریوں کے عہدوںکا مطالبہ کر دیا ہے!! شہباز شریف کی حکومت صرف 2 ووٹوں کی اکثریت (173) پر لرز رہی ہے، اوپر سے پیپلزپارٹی کے عشق و عاشقی کے معاوضہ کے مطالبات! بھگتو، ن لیگ والو!
٭شہباز شریف نے اعلان کیا کہ آٹا سستا کرنے کے لئے اپنے کپڑے فروخت کر دوں گا! ظاہر ہے پانچ دس کپڑوں کی بات تو نہیں ہو سکتی، یوسف رضا گیلانی کے پانچ پانچ لاکھ والے 120 سوٹوں کی طرح شہباز شریف کے پاس بھی ایسے سینکڑوں سوٹ ہوں گے! پہلا خیال تو یہ آتا ہے کہ سارے کپڑے فروخت کرنے کے بعد شہباز شریف لباس کے بغیر باہر کیسے نکلیں گے؟ ان کے دیرینہ حاشیہ بردار رانا ثناء اللہ نے تالی بجاتے ہوئے قصیدہ پڑھا ہے کہ ماشاء اللہ کتنے خوشبودار کپڑے ہوں گے! مگر ہمیشہ کی جلاپے والی سوتن، شیخ رشید نے کیا بدشگونی کر دی ہے کہ عزیزی بلاول اتنے بدبودار کپڑے کیوں خریدے گا!
 

تازہ ترین خبریں

ضمنی الیکشن سے قبل پنجاب میں عمران خان کو بڑی کامیابی مل گئی

ضمنی الیکشن سے قبل پنجاب میں عمران خان کو بڑی کامیابی مل گئی

عید الاضحی کے موقع پر قومی ائیرلائن نے مسافروں کو بڑی خوشخبری سنا دی

عید الاضحی کے موقع پر قومی ائیرلائن نے مسافروں کو بڑی خوشخبری سنا دی

عوام کیلئے بجلی کا ایک اور زوردار جھٹکا، فی یونٹ قیمت میں ہوشربا اضافے کی منظوری دیدی گئی

عوام کیلئے بجلی کا ایک اور زوردار جھٹکا، فی یونٹ قیمت میں ہوشربا اضافے کی منظوری دیدی گئی

بنی گالہ میں عمران خان کی رہاشگاہ میں فائرنگ، کس کو گرفتارکر لیا گیا؟ ہلچل مچ گئی

بنی گالہ میں عمران خان کی رہاشگاہ میں فائرنگ، کس کو گرفتارکر لیا گیا؟ ہلچل مچ گئی

مریم نواز کے بعدآصفہ زرداری کو بھی میدان میں اتارنے کا فیصلہ ، بڑی خبر آگئی

مریم نواز کے بعدآصفہ زرداری کو بھی میدان میں اتارنے کا فیصلہ ، بڑی خبر آگئی

آگئی وہ خبر جس کا انتظارتھا،وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے پوری قوم کو بڑی خوشخبری سنا دی

آگئی وہ خبر جس کا انتظارتھا،وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے پوری قوم کو بڑی خوشخبری سنا دی

خام تیل کتنا سستا ہونیوالا ہے؟ ماہرین کی پیشنگوئی نے ہلچل مچا دی

خام تیل کتنا سستا ہونیوالا ہے؟ ماہرین کی پیشنگوئی نے ہلچل مچا دی

5مخصوص نشستیں ملتے ہی تحریک انصاف کوبڑا جھٹکا لگ گیا

5مخصوص نشستیں ملتے ہی تحریک انصاف کوبڑا جھٹکا لگ گیا

دعا زہرہ کیس، عدالت نے نکاح خواں اور گواہ کو بڑا جھٹکادیدیا

دعا زہرہ کیس، عدالت نے نکاح خواں اور گواہ کو بڑا جھٹکادیدیا

برطانوی وزیراعظم مستعفی ؟ سیاسی صورتحال مزید کشیدہ ہو گئی

برطانوی وزیراعظم مستعفی ؟ سیاسی صورتحال مزید کشیدہ ہو گئی

مون سون بارشوں کا طاقتور سلسلہ ،محکمہ موسمیات نے ہلکی تیز بارشوں کی پیشنگوئی کر دی

مون سون بارشوں کا طاقتور سلسلہ ،محکمہ موسمیات نے ہلکی تیز بارشوں کی پیشنگوئی کر دی

26مئی کو عمران خان کو کنٹینر پر کیا پیغام ملا کہ عمران خان ڈی چوک کی بجائے بنی گالہ چلے گئے ؟رانا ثنا اللہ کا تہلکہ خیز دعویٰ

26مئی کو عمران خان کو کنٹینر پر کیا پیغام ملا کہ عمران خان ڈی چوک کی بجائے بنی گالہ چلے گئے ؟رانا ثنا اللہ کا تہلکہ خیز دعویٰ

عید الاضحی سے قبل بڑے شہر میں د ھ م ا ک ہ ، جانی نقصان ہو گیا، انتہائی افسوسناک خبرآگئی

عید الاضحی سے قبل بڑے شہر میں د ھ م ا ک ہ ، جانی نقصان ہو گیا، انتہائی افسوسناک خبرآگئی

عمران ریاض نے میرے ساتھ یہ گھٹیا حرکت کی ، خاتون صحافی ناجیہ اشعر نے سنگین الزام عائد کر دیا

عمران ریاض نے میرے ساتھ یہ گھٹیا حرکت کی ، خاتون صحافی ناجیہ اشعر نے سنگین الزام عائد کر دیا